لبیک اللهم لبیک: لگاتار دوسرے سال کورونا اصولوں کی پاسداری کے ساتھ حج بیت اللہ کا آغاز

Source: S.O. News Service | Published on 17th July 2021, 11:46 PM | خلیجی خبریں |

مکہ معظمہ،17؍جولائی (ایس او نیوز؍ایجنسی) سعودی عرب میں ہفتہ کے روز مسلسل دوسرے سال کورونا سے متعلق سخت احتیاطی تدابیر کی پاسداری کے ساتھ حج بیت اللہ کا آغاز ہو گیا۔ عازمین حج نے آج سے مناسک حج کی ادائیگی شروع کر دی۔ العربیہ اردو کے مطابق حجاج کرام کے قافلے حرم مکی میں داخل ہو چکے ہیں اور انہوں نے ’طواف قدوم‘ کا آغاز کر دیا ہے۔ حرم مکی میں داخلے سے قبل النواریہ، الزایدی، الشرائع اور الھدا مراکز میں حجاج کرام کا استقبال کیا گیا، جہاں سے وہ طواف قدوم کے لیے مسجد حرام کی طرف روانہ ہو رہے ہیں۔

حرم مکی میں آمد سے قبل 6 ہزار عازمین پر مشتمل گروپ تشکیل دیئے گئے ہیں جو ہر تین گھنٹے بعد پہلے گروپ کے طواف کے بعد مسجد حرام میں داخل ہوں گے۔ طواف قدوم کا پہلا مرحلہ آج ہفتے کو سات ذی الحج مقامی وقت کے مطابق صبح چھ بجے شروع ہو چکا ہے۔ طواف قدوم 8 ذی الحج کو رات 9 بجے تک جاری رہے گا۔

العربیہ کی رپورٹ کے مطابق، سعودی عرب کی وزارت حج وعمرہ نے حجاج کرام کے استقبال اور ان کے ایک جگہ جمع ہونے کے حوالے سے پلان ترتیب دیا ہے۔ حجاج کرام الزایدی کے مقام پر جمع ہوں گے۔ وہاں سے وہ حرم مکی کی طرف چلیں گے اور الشبیکہ اسکوائر میں اکٹھے ہوں گے۔ اس کے بعد النواریہ مرکز پر آنے والے عازمین حج شاہ عبدالعزیز اسٹیشن کے قریب جمع ہوں گے۔

الشرائع مرکز میں آنے والے عازمین اجیاد الصافی اسٹیشن میں جمع ہوں گے۔ النسیم مرکز میں آنے والے حجاج بھی اجیاد الصافی میں اکھٹے ہوں گے۔ تاہم ان کی آمد ورفت کے راستے الگ الگ ہوں گے۔ ایک دن میں 48 ہزار حجاج کرام مسجد حرام کے قریب جمع ہو سکیں گے۔

طواف قدوم کی تکمیل کے بعد عازمین حج مسجد حرام سے نکلیں گے اور بسوں کے ذریعے باب علی اسٹیشن سے ہوتے ہوئے جمرات پل تک جائیں گے۔ اس موقع پر 200 بسوں کے ذریعے ایک وقت میں 2 ہزار عازمین حج کو ہر تین گھنٹے کے وقفے کے بعد جمرات پل تک پہنچایا جائے گا۔ وہاں سے عازمین حج منیٰ پہنچیں گے۔ منیٰ روانگی کے لیے انہیں الگ لگ رنگوں کے ٹریکس کے ذریعے پہنچایا جائے گا۔

حج کے موقع پر ٹریفک کے امور کے انچارج عبدالرحمن الحربی نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو بتایا کہ حج کے سفر کے دوران عازمین کو لے جانے والی بسوں میں سینیٹائزر کا انتظام کیا گیا ہے۔ اس موقع پر کورونا وبا کے پیش نظر ایس او پیز پر سختی کے ساتھ عمل درآمد کیا جائے گا۔ ماسک کا استعمال اور سماجی فاصلے پر عمل درآمد کرایا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

دبئی کے بعد بحرین میں بھی بھٹکلی طالبہ نے حاصل کی شاندار کامیابی؛ بارہویں میں ملے 98 فیصد مارکس

دبئی میں  بھٹکلی طالبہ کی شاندار کامیابی کے بعد اب بحرین سے خبر موصول ہوئی ہے کہ وہاں بھی بھٹکل سے تعلق رکھنے  والی طالبہ نے بارہویں کے  سینٹرل بورڈ آف سکینڈری ایجوکیشن  (CBSE) میں 98 فیصد مارکس کے ساتھ امتیازی کامیابی درج کی ہے۔

کورونا: 70 فیصد ٹیکہ کاری کے بعد ہی تعلیمی سرگرمیاں بحال ہوں گی، سعودی عرب کا اعلان

 عالمی وبا کورونا وائرس سے روک تھام کے تحت سعودی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ مملکت میں کل آبادی کے ستر فیصد افراد کی مکمل ویکسینیشن کے بعد پرائمری اور نرسری کی تعلیمی سرگرمیاں بحال کی جائیں گی۔

دبئی: 5 اگست سے متحدہ عرب امارات میں داخل ہو سکیں گے ہندوستان ، پاکستان اور دیگر چار ممالک کے باشندے

متحدہ عرب امارات کی حکومت نے ملک میں داخلے کی پابندیوں میں نرمی کا اعلان کرتے ہوئے 5 /اگست سے ہندوستان، پاکستان، نائجیریا، یوگانڈا، نیپال اور سری لنکا کے ان باشندوں کو ملک میں داخل ہونے کی اجازت دی ہے جن کے پاس اقامہ ہو اور ان کے کووڈ ویکسینیشن کے دونوں ڈوز پورے ہوچکے ہوں ۔

سعودی عرب: اب کورونا ویکسین نہ لگوانے والے افراد عوامی مقامات پر نہیں جا سکیں گے

عالمی وبا کورونا سے تحفظ کے سلسلے میں سخت تیور اپناتے ہوئے سعودی عرب نے ویکسن نہ لگوانے والوں کو شاپنگ مالز، پبلک مقامات میں داخل ہونے سے روک دیا ہے۔ اس سلسلے میں سعودی حکومت کی جانب سے دی گئی ویکسینیشن کی ڈیڈ لائن ختم ہوگئی، اب ویکسین نہ لگوانے والوں کو شاپنگ مالز، مارکیٹس اور ...

دبئی میں بھٹکل کی طالبہ فاطمہ امل کی شاندار کامیابی؛ بارہویں میں حاصل کئے 98.2 فیصد مارکس

دبئی میں مقیم بھٹکل سے تعلق رکھنے والی فاطمہ امل نے بارہویں کے   سینٹرل بورڈ آف سکینڈری ایجوکیشن  (CBSE) میں  98.2 فیصد کے ساتھ شاندار کامیابی درج کرتے ہوئے  نہ صرف بھٹکل بلکہ پورے ملک  کا نام روشن کردیا ہے۔

بغیر ویکسی نیشن کے سعودی عرب میں سرکاری جگہوں اور پبلک ٹرانسپورٹ میں داخلہ بند

سعودی عرب میں ویکسین نہ لگوانے والوں کے خلاف سختی کا اعلان کیا ہے۔ سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے اعلان کیا ہے جس کے مطابق مملکت میں مقیم جن غیر ملکیوں اور سعودی شہریوں نے اب تک ویکسین نہیں لگوائی ہے انہیں یکم اگست 2021 سے سرکاری جگہوں میں داخلے، تقریبات میں شرکت اور پبلک ٹرانسپورٹ ...