جن اوشدھی مراکز سے غریبوں کو زیادہ سہولت، دیہی علاقوں میں مرکز قائم کرنے پر حکومت زیادہ اہمیت دے رہی ہے: ڈاکٹر سدھا کر

Source: S.O. News Service | Published on 14th November 2022, 12:27 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،14؍نومبر(ایس او  نیوز)ریاستی وزیر برائے صحت وخاندانی بہبود ڈاکٹر کے سدھاکر نے بتا یا کہ ریاست میں غریب،پسماندہ اور درمیانی طبقات کو رعایتی قیمت میں ادویات اور سرجری کے ساز وسامان فراہم کرنے پردھان منتری جن اوشدھی اسکیم بہتر طریقہ سے جاری کی جارہی ہے اور ابتک1,052جن اوشدھی مراکز قائم کئے گئے ہیں۔

یہاں اخباری نمائندوں سے بات کر تے ہو ئے ڈاکٹر سدھا کر نے اس بات کی جانکاری دی اور کہا کہ جن اوشد ھی مراکز قائم کرنے میں ملک میں اتر پردیش کو پہلا مقام اور کرناٹک کو دوسرا مقام حاصل ہے جبکہ کیرلا تیسرے مقام پر ہے۔ انہوں نے کہا کہ دیہی علاقوں میں زیادہ جن اوشدھی مراکز قائم کرنے حکومت اہمیت دے رہی ہے اور ریاست میں مزید500نئے مراکز قائم کر نے کا منصوبہ ہے۔ سرکاری اسپتالوں میں تقریباً40مراکز قائم کرنے کی اجازت دینے پی پی آئی کو پیشکش روانہ کی گئی ہے،امسال فروری کے بعد تقریباً300مراکز قائم کئے گئے ہیں اور حسب ضرورت مراکز ائم کئے جائیں گے۔

ڈاکٹر سدھا کر نے بتا یا کہ ریاست میں جن اوشدھی مراکز بہتر طریقہ سے خدمات انجام دے رہے ہیں،سرکاری اسپتالوں میں تقریباً200مراکز ہیں،شمالی کرناٹک،او لڈ میسور علاقوں میں بھی مراکز قائم کرنے دباؤ ڈالا جارہا ہے،جس کے تحت منڈیا ضلع کے کے ایم دوڈی دیہات میں مرکز قائم کیا گیا ہے۔انہوں نے بتا یا کہ ریاست میں جنرک ادویات برانڈ یڈ ہیں مارکیٹ میں 50تا80فیصد سستے داموں میں دستیاب ہیں، این اے جی ایل لیبا ٹری میں جن اوشدھی کے ادویات کا ٹسٹ کرکے مراکز روانہ کیا جا رہا ہے۔

ڈاکٹر سدھا کر نے بتا یا کہ جن اوشدھی مراکز سے بی پی ایل راشن کارڈ ہو لڈرس اور غریبوں کوزیادہ فائدہ ہو رہا ہے۔ انہوں نے مزید بتا یا کہ سرکاری اسپتالوں کے احاطہ میں جن اوشدھی مراکز قائم کرنے فارمیسی گریجوئیٹس زیادہ دباؤ ڈال رہے ہیں اور بیو رو آف فارمیسی پبلک سکٹر یونٹس آف انڈیا(بی پی پی آئی) کی جانب سے ہر ایک مرکز کیلئے ماہانہ کاروبار کے حساب سے15تا50ہزار روپئے سبسیڈی دی جائے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں بی جے پی حکومت کے دوران ہندوؤں کا سب سے زیادہ قتل ہوا، یہی ان کا اصلی چہرہ ہے: سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا

کرناٹک کے سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس لیڈر ایس سدارامیا نے منگل کے روز ریاست میں برسراقتدار بی جے پی پر زوردار حملہ کیا۔ انھوں نے بی جے پی پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں بی جے پی حکومت میں سب سے زیادہ ہندوؤں کا قتل کیا گیا۔ انھوں نے کہا کہ ہمارے دور میں نہ صرف ہندو، ...

بی جے پی کے ریاستی صدر نلین کمار کٹیل کی بھٹکل آمد؛ آنے والے انتخابات کو لے کر کٹیل نے کہا؛ ساورکر اور ٹیپو نظریات کے درمیان ہوگا الیکشن

اس بار ریاستی انتخابات کانگریس اور بی جے پی کے بجائے ساورکر اور ٹیپو  نظریات کے درمیان ہوں گے۔ یہ بات  بی جے پی ریاستی یونٹ کے صدر نلین کمار کٹیل نے کہی۔ شرالی میں منعقدہ بی جے پی پروگرام میں شریک ہوتے ہوئے  کٹیل نے سوال کیا کہ آپ کو محب وطن ساورکرچاہئے  یا جنونی ٹیپو  چاہئے ...

 اڈانی کمپنی کے خُرد بُرد معاملہ پر کانگریس کا بنگلورو میں احتجاج

ریاست کرناٹک کے دارلحکومت بنگلورو کے میسور بینک سرکل پر کانگریس کی جانب سے اڈانی کمپنی سے جڑے معاملات پراحتتجاج کیاگیا جس میں پارٹی کے رہنما و کارکنان شریک تھے۔ احتجاج کے دوران کانگریس کے رہنماؤں نے کہا کہ راہل گاندھی نے پہلے ہی اس معاملہ سے متعلق پیشن گوئی کی تھی۔

منگلورو: نیشنل ایجوکیشن پالیسی 'ہندوتوا راشٹرا' بنانے کا ٹوُل کِٹ ہے؛ ماہر تعلیم ڈاکٹر نرنجنارادھیا 

کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا کی آل انڈیا یوتھ فیڈریشن (اے آئی وائی ایف) جنوبی کینرا و اڈپی، سمدرشی ویدیکے منگلورو، کرناٹکا تھیولوجیکل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ منگلورو کے اشتراک سے 'نیشنل ایجوکیشن پالیسی (این ای پی) اور اسکولی تعلیم' کے عنوان پر شہر میں منعقدہ  سیمینار میں اپنے خیالات کا ...

پتور: آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کو شکست دینے کے لئے متحد ہوجائیں - کانگریس پارٹی کارکنان سے لیڈروں کی اپیل 

کانگریس پارٹی لیڈران نے  پتور کے نیلیاڈی سے  ملناڈ اور ساحلی علاقے کے لئے اپنی 'پرجا دھونی یاترا' کا دوسرا مرحلہ شروع کرتے ہوئے اپنی کارکنان کو آواز دی کہ وہ آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کی  "بد عنوان، غیر فعال، غیر مخلص، غیر موثر اور عوام سے دور" حکومت کو ہٹانے کے لئے متحد ...