غزہ کی پٹی: اسرائیلی فضائیہ کے 300 سے زیادہ حملے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th May 2019, 4:49 PM | عالمی خبریں |

 دبئی  6مئی (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) اتوار کے روز غزہ پٹی میں اسرائیل کے شدید فضائی حملوں اور فلسطینی گروپوں کی جانب سے داغے جانے والے راکٹوں کی تازہ لہر کے بعد دو طرفہ جارحیت میں اضافہ ہو گیا ہے۔اسرائیل کے اعلان کے مطابق اس نے غزہ پٹی میں حماس کے ٹھکانوں کے خلاف 300 سے زیادہ حملے کیے۔ دوسری جانب حماس کے زیر انتظام وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اسرائیلی حملوں میں شہریوں کے گھروں کو نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں ہفتے کے روز سے شروع ہونے والی جارحیت میں 25 افراد کی جان جا چکی ہے۔ادھر بعض ذرائع کا کہنا ہے کہ غزہ پٹی میں فلسطینی گروپوں کی جانب سے بیت المقدس کے اطراف 600 کے قریب راکٹ داغے گئے۔ اس کے نتیجے میں 5 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہونے کے علاوہ مادی نقصان بھی ہوا۔اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو کی صدارت میں کابینہ نے غزہ پٹی کے اطراف بکتربند گاڑیوں، توپ خانوں اور پیدل دستوں کی صورت میں مزید کمک تعینات کرنے کے احکامات جاری کیے۔ اسرائیلی کابینہ نے حماس کو تمام تر عسکری کارروائیوں کے نتائج کا ذمے دار ٹھہراتے ہوئے دھمکی دی کہ تنظیم کو اس کی بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔دوسری جانب اردن کا کہنا ہے کہ غزہ پٹی میں تشدد سے صرف کشیدگی اور مسائل میں اضافہ ہوگا۔ اردن نے حالات کو پرسکون بنانے کے سلسلے میں مصر کی کوششوں کے لیے ایک بار پھر اپنی حمایت کا اعلان کیا۔ادھر مصر کا کہنا ہے کہ وہ یکم رمضان سے قبل جارحیت کا سلسلہ روکنے کے لیے تمام فریقوں سے رابطوں میں مصروف ہے۔ اس سے قبل مصر نے اسرائیل سے مطالبہ کیا کہ وہ غزہ پٹی پر فضائی حملے روک دے۔فلسطینی تنظیم اسلامی جہاد کے ترجمان مصعب البریم نے "الحدث" چینل کے ساتھ گفتگو میں بتایا کہ تنظیم نے مصر کو باور کرا دیا ہے کہ واضح قواعد و ضوابط کی موجودگی کی صورت میں ہی حالات کو دوبارہ پرسکون بنانے یا مذاکرات کرنے کا موقع جنم لے سکتا ہے۔ادھر فلسطینی تنظیم فتح موومنٹ کے رہ نما حازم ابو شنب نے الحدث کو دیے گئے انٹرویو میں حماس تنظیم سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ جلد از جلد قومی یک جہتی کے دھارے میں شامل ہو۔ انہوں نے خبردار کیا کہ اسرائیل کی جانب سے آئندہ پیش رفت نہایت شدید نظر آ رہی ہے۔یورپی یونین نے غزہ پٹی سے اسرائیل پر راکٹ باری کا سلسلہ فوری طور پر روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔ یونین نے زور دیا ہے کہ صرف سیاسی حل ہی تشدد پر روک لگا سکتا ہے۔امریکا نے بھی غزہ پٹی سے اسرائیل کی جانب داغے جانے والے راکٹوں کی مذمت کرتے ہوئے اسے فوری طور پر روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔ امریکی وزارت خارجہ نے اعلان کیا ہے کہ واشنگٹن اسرائیل کے اپنے دفاع کے حق کی حمایت کرتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پوری دنیا میں کورونا کا قہر جاری، متاثرین کی تعداد 63 لاکھ سے تجاوز

پوری دنیا میں عالمی وبا کورونا وائرس کا قہر جاری ہے اور ہر روز متاثرین اور اس سے ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد میں مستقل اضافہ ہو رہا ہے۔تازہ اعداد و شمار کے مطابق کورونا متاثرین کی تعداد 63لاکھ سے زیادہ ہوگئی ہے جبکہ اس وبا سے اب تک 3.73لاکھ سے زیادہ لوگوں کی موت ہوچکی ہے۔

عراق: فضائی حملے میں دو فوجی اور دو دہشت گردوں کی موت

عراق کے صوبہ نینوا اور دييالہ میں پیر کو ایک فضائی حملے اور ایک بم دھماکے میں دو فوجی ہلاک ہو گئے جبکہ دو دہشت گرد بھی مارے گئے۔ عراق کے جوائنٹ آپریشن کمانڈ کے میڈیا آفس نے ایک بیان میں بتایا کہ ایک حملہ میں دوعراقی فوجی ہلاک اور دو دیگر زخمی ہو گئے۔

انگلینڈ میں لاک ڈاؤن میں نرمی، 10 ہفتوں بعد کھلے اسکول

10 ہفتوں کے بعد برطانیہ کے انگلینڈ ریجن میں لاک ڈاؤن کے بعد اسکول کھول دیئے گئے، مگر نصف کے قریب والدین نے اپنے بچوں کو اسکول بھیجنے سے گریز کیا ہے۔ برطانوی حکومت نے گزشتہ روز لاک ڈاؤن میں نرمی کرنے کا اعلان کیا تھا جس میں اسکولوں کا کھولا جانا بھی شامل تھا، کچھ علاقوں میں ...

کورونا: جرمنی کو پیچھے چھوڑ ساتویں مقام پر پہنچا ہندوستان، 24 گھنٹے میں 230 اموات

  ملک میں كورونا وائرس کے نئے کیسز میں دن بہ دن ہو رہے اضافہ سے متاثرین کی کل تعداد 1.90 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے اور ہندوستان سب سے زیادہ متاثر ممالک کی فہرست میں فرانس اور جرمنی کو پیچھے چھوڑ کر ساتویں مقام پر پہنچ گیا ہے۔