سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 21st April 2019, 6:41 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

بھٹکل 21/اپریل (ایس او نیوز) اس بار کے انتخابات سب سے  اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ہو یا  کوئی بھی ادارہ ہو، آج محفوظ نہیں ہے۔ملک کی جمہوریت کو بچانا ہے، دستوری پامالیوں کو روکنا ہے تو پھر ملک کے تمام شہریوں کی  ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ آگے آئیں اور ملک کے   آئین  اور جمہوری اقدار کو  بچانے کے لئے کمربستہ ہوجائیں۔ یہ بات ملک کے سابق وزیراعظم اور جنتادل (ایس) کے  سربراہ  شری ایچ ڈی دیوے گوڈا نے بتائی۔ وہ یہاں بھٹکل میں  اُترکنڑا پارلیمانی  حلقہ کے اُمیدوار آنند اسنوٹیکر کی حمایت میں  تشہیر کرنے  پہنچے تھے۔

بھٹکل جے ڈی ایس لیڈر عنایت اللہ شاہ بندری کے ساتھ بھٹکل پہنچنے کے بعد  انہوں نے بھٹکل کے سماجی اداروں کے ذمہ داران کے ساتھ ملاقات کی اور اُنہیں تاکید کی کہ وہ بھٹکل میں سو فیصدی  پولنگ  کو یقینی بنائیں۔ ساحل آن لائن کے ساتھ خصوصی بات چیت میں  دیوے گوڈا نے  بتایا کہ بی جے پی کی بری نیتوں کو بھانپتے ہوئے  آج تمام سیکولر پارٹیاں متحد ہوکر ایک پلیٹ فارم پر آگئی ہیں،  ہر ریاست میں سیکولر ووٹوں کو اکٹھا کیاجارہا ہے تاکہ عوام  بھی متحد ہوکر  ملک کے لئے خطرہ بنی ہوئی پارٹیوں کو شکست دینے میں  اہم رول ادا کرسکیں۔  دیوے گوڈا نے بتایا کہ  چونکہ ہم کرناٹک میں مخلوط حکومت  کے شریک کار ہیں، اسلئے ہماری بھی ذمہ داری بنتی ہے کہ ہم  کانگریس کا بھرپور ساتھ دیں اور مودی کو ہرانے کے لئے ہرممکن کوشش کریں۔ ہم  ملک کی سبھی سیکولر پارٹیوں کو متحد کرنے کی کوششوں میں لگے ہوئے ہیں تاکہ  ملک کے  جمہوری اقدار  کو باقی رکھ سکیں ۔ ملک کا دستور ملک کا آئین اور ملک کا جمہوری اقدار باقی رہے گا تو یہ ملک بھی باقی رہے گا، ہم سب لوگوں کے لئے  ضروری ہے کہ ملک کے  حالات کی سنگینیوں کو دیکھتے ہوئے  سیکولر اُمیدوار کی کامیابی کو یقینی بنانے ہرممکن کوشش کریں۔

شری دیوے گوڈا نے بتایا کہ  کرناٹک کے انتخابات کے بعد جب راجستھان اور مدھیہ پردیش میں انتخابات ہوئے تو  عوام نے  15 اور 20 سالوں سے اقتدار پر راج کرنے والوں کی گدی چھین لی اور کانگریس کو اقتدار سونپا، جس کے ساتھ ہی کانگریس کی ملک میں شاندار واپسی ہوئی ہے  اور یہ سلسلہ آگے بڑھ رہا ہے۔مزید بتایا کہ  کسی نے سوچا بھی نہیں تھا کہ  راہول گاندھی اس طرح آگے آئے گا اور مودی کو ٹکر دے گا، مگر انہوں نے  ثابت کردکھایا ہے کہ وہ   مودی  کا مقابلہ کرسکتے ہیں۔

اُترکنڑا کے بی جے پی  اُمیدوار  اور حالیہ رکن پارلیمان آننت کمار ہیگڈے  کے تعلق سے گفتگو کرتے ہوئے شری دیوے گوڈا نے اُسے غیر ذمہ دار قرار دیا  جس نے ضلع کی ترقی کے لئے کچھ بھی نہیں کیا ہے۔ دیوے گوڈا نے بتایا کہ ہیگڈے صرف  اشتعال دلانے والے  بھاشن دے سکتے ہیں ۔ دیوے گوڈا صاحب نے  توقع ظاہر کی کہ  اس بار ضلع میں آنند اسنوٹیکر کی جیت یقینی ہے اور وہ بھاری اکثریت کے ساتھ جیت درج کرنے والے ہیں۔

اس موقع پر ان کے ہمراہ جے ڈی ایس لیڈر جناب فاروق باوا بھی موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل تعلقہ کے دوپنچایتوں کے جھگڑےمیں  مٹدہتلو اور مرڈیشور کا راستہ یتیم : عوامی نمائندوں پر عوام کی نظر

بھٹکل تعلقہ مرڈیشور کے ماولی -2 اور کائی کنی گرام پنچایتوں کی سرحد کی پیچیدگیوں چلتے مٹدہتلو اور مرڈیشور کے درمیان والی سڑک کا ایک ٹکڑا  یتیم ہوکر راہ گیروں اور بائک سواروں کے لئے مشکلات پیدا کئے ہوئے ہے۔

آئی ایم اے کیس کی ایس آئی ٹی جانچ تقریباً مکمل، 9ستمبر کو چارج شیٹ ممکن

کروڑوں روپے کے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ میں لگی ریاستی پولیس کی خصوصی تحقیقاتی ٹیم(ایس آئی ٹی) اس معاملے میں 9ستمبر کو چارج شیٹ دائر کرنے کی تیاری میں لگی ہے تو دوسری طرف اس کیس کی جانچ ابھی ابھی اپنے ماتحت لینے والی مرکزی تحقیقاتی ایجنسی سی بی آئی کی طرف سے اس کیس میں ایک سابق ...

ایڈی یورپا کو پارٹی ہائی کمان کی تنبیہ۔ وزارتی قلمدان تقسیم کرو یا پھر اسمبلی تحلیل کرو

عتبر ذرائع سے ملنے والی خبر کے مطابق بی جے پی ہائی کمان نے وزیراعلیٰ کرناٹکا ایڈی یورپا کو تنبیہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزارتی قملدانوں سے متعلق الجھن اور وزارت سے محروم اراکین اسمبلی کے خلفشار کو جلد سے جلد دور کرلیں ورنہ پھر اسمبلی کو تحلیل کرتے ہوئے از سرِ نو انتخابات کا سامنا ...

اے پی سی آر نے داخل کی انسداددہشت گردی قانون میں ترمیم کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل

مرکزی حکومت نے انسداد دہشت گردی قانون یو اے پی اے میں جو حالیہ ترمیم کی ہے اور کسی بھی فرد کو محض شبہات کی بنیاد پر دہشت گرد قرار دینے کے لئے تحقیقاتی ایجنسیوں کو جو کھلی چھوٹ دی ہے اسے چیلنج کرتے ہوئے ایسوسی ایشن فار  پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) نے سپریم کورٹ میں اپیل ...