بہار میں بھی کورونا کی دوسری لہر کا اندیشہ بڑھا، 10 دنوں تک ہائی الرٹ کا اعلان!

Source: S.O. News Service | Published on 24th November 2020, 9:19 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،24؍نومبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) دہلی، اتر پردیش، گجرات اور راجستھان میں کورونا انفیکشن کے بڑھتے معاملوں نے دیگر ریاستوں کو بھی ٹینشن میں مبتلا کر دیا ہے۔ بہار کے حالات بھی بہت اچھے نظر نہیں آ رہے ہیں۔ جس طرح سے بہار میں انفیکشن کی رفتار بڑھ رہی ہے، اس سے یہاں بھی کورونا کی دوسری لہر کا اندیشہ بڑھ گیا ہے۔ اسی اندیشہ کے پیش نظر ریاستی ہیلتھ ہیڈکوارٹر نے بہار کے سبھی اضلاع کو اگلے 10 دنوں تک ہائی الرٹ پر رہنے کا حکم دیا ہے۔ اس کے تحت کئی طرح کی ہدایات بھی جاری کی گئی ہیں۔

خبروں کے مطابق بہار کے سبھی شہروں میں ماسک چیکنگ مہم چلائی جا رہی ہے اور بغیر ماسک کے گاڑی چلانے پر گاڑی قبضہ میں لی جا سکتی ہے، ساتھ ہی جرمانہ اور مقدمہ بھی درج ہو سکتا ہے۔ منڈی، مال، دکان میں بغیر ماسک لوگ پکڑے گئے تو انھیں جیل میں بند بھی کیا جا سکتا ہے۔ پہلی بار بغیر ماسک کے پکڑے گئے لوگوں کو 50 روپے جرمانہ ادا کرنا ہوگا جو پہلے سے طے ہے، لیکن ایک بار سے زیادہ بغیر ماسک پہنے پکڑے گئے تو پولس تعزیرات ہند کی دفعہ 188 یعنی لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے تحت کیس درج کر سکتی ہے۔ ساتھ ہی ڈیزاسٹر مینجمنٹ کی دفعات کے تحت بھی کیس درج کیا جا سکتا ہے۔

ضلع انتظامیہ نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ سینیٹائزر کے ساتھ ہی ماسک ضرور لگائیں۔ اس کے علاوہ محکمہ صحت نے پولس انتظامیہ و میونسپل کارپوریشن کے ساتھ مل کر عوامی مقامات پر کورونا جانچ کے لیے کیمپ لگانے کی تیاری کی ہے۔ قابل ذکر ہے کہ بہار میں کورونا معاملوں کی کل تعداد 2 لاکھ 31 ہزار سے زیادہ ہو گئی ہے۔ حالانکہ اس میں سے ابھی 5115 کیسز ہی ایکٹیو ہیں۔ اب تک کورونا کی وجہ سے بہار میں 1227 لوگوں کی موت ہو چکی ہے۔

بشکریہ: قومی آواز

ایک نظر اس پر بھی

ٹیکہ لگوانا ذاتی فیصلہ، لوگوں کا بھروسہ دھیرے دھیرے بڑھے گا: وزیر صحت ستیندر جین

کووڈ 19 کے حفاظتی ٹیکوں کی مہم کے دو دن میں صحت سے متعلق کارکنوں کی ویکسینیشن کی رفتار میں کمی کے درمیان دہلی کے وزیر صحت ستیندر جین نے منگل کے روز کہا کہ یہ ٹیکہ لگوانا رضاکارانہ اور ذاتی فیصلے سے منسلک ہے جی ہاں یا نہیں؟ تاہم عوام کا اعتماد بڑھانے کے لئے تمام تر کوششیں کی جارہی ...

زراعت کے مالک بن جائیں گے 3-4 سرمایہ دار ، قوانین کو واپس لینا واحد حل : راہل گاندھی

کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے منگل کے روز تین مرکزی زرعی قوانین پر مرکزی حکومت کو نشانہ بنایا اور دعوی کیا کہ ان قوانین کا مقصد زرعی شعبے پر تین چار سرمایہ داروں کی اجارہ داری قائم کرنا ہے جو ملک کے متوسط طبقے کو ادا کرنا پڑتا ہے۔

ستیا پور لوجہادمعاملہ:ملزمین کے خلاف قائم مقدمہ ختم کرنے والی عرضداشت پر الہ آبا د ہائی کورٹ میں کل سماعت ہوگی: گلزار اعظمی

یوپی کے سیتا پور شہر سے لوجہادکے نام پر گرفتار دس ملزمین جس میں دو خاتون بھی شامل ہیں کومقدمہ سے ڈسچارج یعنی کہ ان کے خلاف قائم مقدمہ ختم کرکے انہیں جیل سے فوراً رہا کئے جانے کی عرضداشت پر الہ آبادہائیکورٹ کی لکھنؤ بینچ کل یعنی کے 20 جنوری کو سماعت کریگی، جسٹس راجیو سنہا اور ...

گجرات میں سڑک کنارے سونے والے مزدوروں پر ڈمپر لاری چڑھ گئی، 15 ہلاک

گجرات کے ضلع سورت میں گذشتہ دیر رات ایک بے قابو گاڑی  سڑک کنارے سونے والے 20 افراد پر چڑھ گئی   جس کے نتیجے  میں 15 کی  موت  واقع ہو گئی۔ حادثہ سورت سے تقریباً 50 کلومیٹر دور کِم-مانڈوی روڈ پر کوسنبا کے پلوڈگام کے نزدیک  پیش آیا۔