خطے میں امن و امان کے لئے پاکستان کے ساتھ بات چیت لازمی: فاروق عبداللہ

Source: S.O. News Service | Published on 23rd February 2021, 1:51 PM | ملکی خبریں |

جموں،23؍فروری(ایس او نیوز؍ایجنسی) نیشنل کانفرنس کے صدر و رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا کہ مرکزی حکومت کو چاہیے کہ وہ پاکستان کے ساتھ بات چیت کا سلسلہ شروع کریں، تاکہ خطے میں امن و امان کا ماحول قائم ہوسکے۔ ان باتوں کا اظہار انہوں نے جموں میں رگوناتھ بازار کے دورے کے دوران نامہ نگاروں کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کیا ہے۔ دورے کے دوران انہوں نے لوگوں کے ساتھ بات کی اور مسائل و مشکلات کی بھی آگہی حاصل کی۔ اُن کے ہمراہ صوبائی صدر جموں دیوندر سنگھ رانا، سینئر لیڈران ایس ایس سلاتیہ اور سجاد شاہین بھی تھے۔

نامہ نگاروں کے سوالات کے جوا ب دیتے ہوئے ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا کہ جو لوگ اس بات کے دعوے کر رہے ہیں کہ حالات بالکل ٹھیک ہیں اور ملی ٹنسی ختم ہوگئی ہے وہ سراسر جھوٹ بول رہے ہیں، ملی ٹنسی اس وقت بھی موجود ہے اور یہی سچ ہے۔ اگر ہمیں اس کا خاتمہ کرنا ہے تو اس کے لئے ضروری ہے کہ ہم اپنے پڑوسیوں کے ساتھ بات کریں۔

انہوں نے کہا کہ 'مجھے آنجہانی اٹل بہاری واجپائی کے وہ ریمارکس یاد ہیں جن میں انہوں نے کہا تھا کہ "دوست تبدیل کیے جاسکتے ہیں لیکن پڑوسی نہیں"۔ اس لئے میں مرکزی حکومت سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ پاکستان کے ساتھ مذاکرات کا سلسلہ شروع کریں اور ٹھیک اُسی طرح مسائل کا حل تلاش کریں جس طرح سے چین کے ساتھ سرحد پر فوجیوں کی واپسی کے لئے بات چیت کی گئی'۔

ایک نظر اس پر بھی

کورونا کا خاتمہ جولائی تک نہیں ہوگا: ایکسپرٹ

جس طرح کورونا کے نئے معاملوں کی تعداد میں کمی درج ہو رہی ہے اس سے یہ امید بنی ہے کہ ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کا خاتمہ جلد ہو جائے گا لیکن وبائی بیماریوں کے ماہر شاہد جمیل کا کہنا ہے کہ بھلے ہی ابھی کچھ ریاستوں میں کورونا کے کیس کم ہوتے نظر آ رہے ہوں لیکن دوسری لہر کا ...

سادگی کے ساتھ عید منائیں اور چھوٹی جماعت کے ساتھ عید کی نماز ادا کریں ، سرکردہ مسلم رہنماوں کی مسلمانوں سے اپیل

آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے صدر مولانا رابع حسنی ندوی ۔ جمعیت علماءہند کے صدر مولانا ارشد مدنی ۔ جماعت اسلامی ہند کے امیر سید سعادت اللہ حسینی سمیت دیگر سرکردہ علماء اور مسلم قائدین مسلمانوں نے اپیل کی ہے کہ وہ کرونا کے بڑھتے خطرات کے پیش نظر احتیاط کریں اور مختصر جماعت ...

لاک ڈاؤن پر ہو سختی سے عمل: اشوک گہلوت

راجستھان میں عالمی وبا کورونا کی دوسری لہر کی چین توڑنے کے لئے آج صبح 5بجے سے لے کر 24 مئی تک سخت لاک ڈاؤن نافذ ہوگیا ہے۔ اس مدت کے دوران، ہنگامی اور ضروری خدمات، میڈیکل، دودھ اور دیگر ضروری خدمات کے لئے رعایت رہے گی۔