پنجاب اور یو پی انتخاب سے قبل واپس ہو سکتے ہیں زرعی قوانین، اکھلیش یادو نے بی جے پی کے منصوبہ کا کیا انکشاف

Source: S.O. News Service | Published on 26th October 2021, 11:43 PM | ملکی خبریں |

لکھنؤ،26؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) سماجوادی پارٹی سربراہ اکھلیش یادو نے اندیشہ ظاہر کیا ہے کہ مودی حکومت آئندہ پنجاب اور یو پی انتخابات کے مدنظر زرعی قوانین کو واپس لے سکتی ہے اور بعد میں انتخاب ختم ہوتے ہی انھیں نئے سرے سے نافذ کر سکتی ہے۔ بی جے پی پر صرف کارپوریٹس کی خدمت کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ بی جے پی حکومت ان صنعت کاروں کی خدمت کے لیے پرعزم ہے جنھوں نے زرعی قوانین کے سبب پہلے سے ہی سائلو اور دیگر بنیادی ڈھانچے کا قیام کیا ہے۔

اکھلیش یادو نے منگل کو ایک غیر رسمی بات چیت میں کہا کہ ’’میں آج کہہ رہا ہوں آپ سے، کہ پنجاب کے الیکشن کو دیکھتے ہوئے اتر پردیش کے انتخاب کو دیکھتے ہوئے ہو سکتا ہے کسانوں کے قوانین رد کر دیے جائیں گے، اور پھر الیکشن کے بعد نیا قانون پھر آ جائے گا۔‘‘ سماجوادی پارٹی سربراہ نے کہا کہ بی جے پی حکومت الیکشن کے بعد زرعی قوانین کو نئے سرے سے نافذ کرے گی کیونکہ یہ ان کارپوریٹس کی مدد کرنے کے لیے پرعزم ہے، جنھوں نے زرعی قوانین نافذ ہونے کے بعد ضروری بنیادی ڈھانچے کے قیام پر پہلے ہی پیسہ خرچ کر دیا ہے۔

اکھلیش یادو نے آگے کہا کہ حکومت جلد ہی کشی نگر میں حال ہی میں افتتاح کیے گئے ہوائی اڈے کو ’فروخت‘ کر سکتی ہے۔ انھوں نے کہا کہ وہ اہم طور پر روزگار میں ریزرویشن جیسے فائدوں سے محروم کرنے کے لیے سب کچھ فروخت کر رہی ہے جو ایک نجی ادارہ کے ذریعہ پروجیکٹ کے حصول کے بعد نافذ نہیں ہوگا۔ انھوں نے کہا کہ کشی نگر ہوائی اڈہ پروجیکٹ کا خواب ان کی حکومت نے دیکھا تھا، اور اس کی تعمیر کے لیے بجٹ میں 260 کروڑ روپے الاٹ کیے گئے تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں ویکسین لینے والوں کی تعداد 129 کروڑ 54 لاکھ سے متجاوز

ملک میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کووڈ سے متاثرہ مریضوں کی تعداد کل کے مقابلہ آج بڑھ کر 8439 ہو گئی ہے جبکہ کل اسی مدت میں یہ تعداد 6822 تھی۔ صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت نے بدھ کو یہاں بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں کووڈ-19 کے 8439 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

مودی حکومت کا تکبر اور دوستوں سے محبت، ہندوستان میں مسائل کے ذمہ دار: راہل گاندھی

پارلیمنٹ میں لگاتار کسانوں اور عوام کے حق میں آواز اٹھا رہے کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے حکومت پر حملہ بولتے ہوئے کہا کہ ملک کو مسائل در پیش ہیں اس کی وجہ مودی حکومت کا تکبر اور دوستوں سے محبت ہے۔ خیال رہے کہ راہل گاندھی اکثر وزیر اعظم نریندر مودی پر الزام عائد کرتے ہیں کہ وہ ...

مدھیہ پردیش کے مشنری اسکول میں توڑ پھوڑ معاملے میں 11 گرفتار

بجرنگ دل، وشو ہندو پریشد سمیت دیگر انتہا پسند ہندو تنظیموں نے مدھیہ پردیش کے شہر ودیشا کے سینٹ جوزف کانوینٹ اسکول میں توڑ پھوڑ کی مشنری اسکول میں مبینہ طور پر تبدیلی مذہب کے معاملے میں پولیس نے 11 ملزمان کو گرفتار کیا ہے،

کانگریس پارلیمانی کمیٹی اجلاس: سونیا گاندھی مودی حکومت پر برہم، ’ارکان پارلیمنٹ کی معطلی غیرمعمولی اور ناقابل قبول‘

پارلیمنٹ کے مرکزی ہال میں کانگریس پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا۔ اس اجلاس میں کانگریس کی موجودہ صدر سونیا گاندھی، سابق صدر راہل گاندھی سمیت پارٹی کے دیگر ارکان پارلیمنٹ شامل ہوئے۔ اجلاس کے دوران شہید کسانوں، حزب اختلاف کے ارکان پارلیمنٹ کی معطلی اور مہنگائی جیسے مسائل ...

سنسیکس میں 886پوائنٹ اور نفٹی میں 264پوائنٹ کی اچھال

عالمی سطح پر ملے مثبت اشاروں کے ساتھ ساتھ ریزرو بینک کی جانب سے گھریلو سطح پر پالیسی ریٹ برقرار رکھنے کی امید اور گزشتہ سیشن کی زبردست گراوٹ کے سبب ہوئی خریداری کے باعث آج اسٹاک مارکٹ میں زبردست تیزی رہی اور اس دوران سنسیکس اور نفٹی 1.56کی سبقت بنانے میں کامیاب رہے لیکن اس کے ...