سعودی حکومت کا ایسا اصول جس کے سبب 10 لاکھ سے زائد غیر ملکیوں نے ملازمت چھوڑ دی

Source: S.O. News Service | Published on 19th January 2022, 1:44 PM | خلیجی خبریں | عالمی خبریں |

ریاض، 19؍ جنوری (ایس او نیوز؍ایجنسی)  مملکت سعودی عرب میں 2018 کے آغاز سے 2021 کی تیسری سہ ماہی کے اختتام تک 45 ماہ کے اس عرصے کے دوران مجموعی طور پر 10 لاکھ سے زائد غیر ملکی ملازمین اپنی ملازمتیں چھوڑ آئے۔ سعودی میڈیا کے مطابق ملازمین کی یہ تعداد ملک میں غیر ملکی ملازمین کی کل تعداد کا 10 فیصد ہے۔

سعودی میڈیا کے مطابق غیر ملکی ملازمین کا بڑے پیمانے پر اپنی ملازمتیں چھوڑ کر آنے کی بنیادی وجہ 2018 کے دوران شروع ہونے والی ایکسپیٹ فیس کا نفاذ ہے۔ خیال رہے سعودی عرب نے 2018 میں ایک مقررہ ماہانہ فیس متعارف کرائی ہے جسے ایکسپیٹ فیس یا تارکین وطن فیس کہا جاتا ہے ، یہ فیس ورک پرمٹ (اقامہ) میں توسیع ہونے پر کمپنی ادا کرتی ہے جہاں یہ غیر ملکی ملازمین کام کرتے ہیں۔

رپورٹس کے مطابق سال 2018 کے دوران ایکسپیٹ فیس فی غیر ملکی ملازم 400 ریال اور جن کمپنیوں میں سعودی شہریوں اور غیر ملکی ملازمین کی تعداد برابر ہو ان کیلئے 300 ریال فی ورکر مقرر تھی جبکہ یہ رقم 2019 میں 600 اور 2020 سے 800 ریال تک پہنچ گئی۔

سعودی میڈیا کے مطابق ملک میں غیر ملکی ملازمین کی تعداد 2017 کے آخر تک ایک کروڑ سے زیادہ تھی تاہم ایکسپیٹ فیس کےنفاذ کے بعد یہ تعداد ہر سال گزرنے کے ساتھ کم ہونا شروع ہو گئی، 2021 کی تیسری سہ ماہی کے اختتام تک یہ تعداد تقریباً 90 لاکھ تک پہنچ گئی۔

اسی عرصے کے دوران سعودی مرد و خواتین ملازمین کی تعداد میں تقریباً ایک لاکھ 79 ہزار کا اضافہ ہوا جس کے بعد سعودی ملازمین کی کل تعداد 33 لاکھ 40 ہزار تک پہنچ گئی جبکہ 2017 کے آخر میں یہ تعداد 31 لاکھ 60 ہزار تھی۔ اس کے علاوہ جنرل آرگنائزیشن فار سوشل انشورنس (جی او ایس آئی ) میں شمولیت کے بعد سعودی مرد اور عورت ملازمین کی تعداد میں اسی عرصے کے دوران 7.73 فیصد کا اضافہ ہوا۔

ایک نظر اس پر بھی

مسقط کے مطرح میں بھٹکل مسلم اسوسی ایشن کا شاندار گیٹ ٹوگیدر؛ جماعت کی طرف سے پُر تکلف عشائیہ تقریب

بھٹکل مسلم اسوسی ایشن مسقط کی طرف سے  عمان میں مقیم بھٹکلی حضرات  کے لئے عید الفطر کے موقع پر ایک گیٹ ٹوگیدر پروگرام مسقط کے رویل  ہاوس  مطرح کورنیش میں منعقد کیا گیا  جس میں جماعت کے اراکین نے کثیر تعداد میں شرکت کرتے ہوئے  ایک   دوسرے کو عید کی مبارکبادیاں  پیش کیں۔ 

عمان کے سیب میں بھٹکل کمیونٹی کا شاندار سیب ملن ؛ پروگرام میں شریک حضرات نے اُٹھایا خوب لطف

بھٹکل  مسلم  اسوسی ایشن  مسقط کے رکن اور سیب کے معروف  کاروباری عبدالواجد دامودی کی صدارت میں عمان کے سیب  میں  بھٹکلی کمیونٹی کے لئے   پہلی بار عید ملن کا انعقاد کیا گیا  جس میں سیب اور اطراف میں  برسرروزگار بھٹکل کے کثیر لوگوں نے شرکت کرتے ہوئے پروگرام کا بھرپور  لطف ...

بھٹکل کمیونٹی جدہ کا دلچسپ عید ملن پروگرام؛ سماجی اور جماعتی خدمات کے اعتراف میں فضل الرحمن منیری کی تہنیت؛ رابعہ، عظام اور ہیثم کو ملا تعلیمی ایوارڈ

  حسب سابق اس بار بھی عید الفطر کی شب  سعودی عربیہ کے شہر جدہ میں بھٹکل کمیونٹی جدہ کا عید ملن پروگرام  منعقد ہوا جس میں جدہ اور اطراف میں مقیم بھٹکل  کے احباب نے کثیر تعداد میں شرکت کرتے ہوئے ایک طرف جماعت کے ساتھ جُڑے ہونے کا ثبوت  پیش کیا  وہیں دوسری طرف عید ملن  کے تفریحی ...

مسجد حرام : بچوں کے لئے رہنما علامات کا منصوبہ

حرمین شریفین کی انتظامیہ نے مسجد حرام میں آنے والے بچوں کیلئے ایک رہنما پروگرام شروع کیا ہے۔ اس کے تحت معتمرین یا زائرین کے ہمراہ موجود بچوں (غیر عرب) کو رہنما علامات اور ہاتھ کا کنگن پیش کیا جاتا ہے تا کہ انہیں ہجوم میں گم ہونے سے روکا جا سکے۔

روس-یوکرین جنگ کے سبب عالمی غذائی بحران کا اندیشہ، لاکھوں لوگ نقص تغذیہ کے ہو سکتے ہیں شکار!

بی بی سی کی ایک رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے متنبہ کیا ہے کہ یوکرین پر روس کے حملہ سے جلد ہی عالمی غذائی بحران پیدا ہو سکتا ہے جو سالوں تک بنا رہ سکتا ہے۔ جنرل سکریٹری انٹونیو گٹیرس نے کہا کہ بڑھتی قیمتوں کے سبب غریب ممالک میں جنگ نے غذائی بحران کو بڑھا دیا ہے۔

سری لنکا: سمندر کے ساحل پر دو مہینے سے کھڑا ہے پٹرول سے لدا جہاز، حکومت کے پاس خریدنے کے لئے نہیں ہے پیسے !

سری لنکا  نے بدھ کے روز کہا کہ پٹرول سے لدا جہاز تقریباً دو ماہ سے اس کے ساحل پر کھڑا ہے لیکن اس کے پاس ادائیگی کے لیے غیر ملکی کرنسی نہیں ہے۔ سری لنکا نے اپنے شہریوں سے اپیل کی ہے کہ وہ اس ایندھن کے لیے قطار میں کھڑے ہو کر انتظار نہ کریں۔ تاہم سری لنکا کی حکومت نے کہا کہ ملک کے پاس ...

مہندا راج پکشے اور ان کے 15 ساتھی ملک چھوڑ کر نہیں جا سکتے: عدالت

سری لنکا اب تک کے بدترین معاشی بحران سے گزر رہا ہے۔ اس سے نمٹنے میں حکومت کی ناکامی پر ملک گیر مظاہروں کے درمیان صدر گوٹابایا راج پکشے نے کل قوم سے خطاب میں کہا تھا کہ وہ جلد نئی حکومت اور وزیراعظم کا اعلان کریں گے۔

سری لنکا: صدر گوٹابایا کا قوم سے خطاب، راج پکشے خاندان سے کابینہ میں کوئی نہیں ہوگا

  سری لنکا میں پرتشدد مظاہروں کے درمیان کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے اور تشدد کے مرتکب افراد کو گولی مارنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ اس دوران سری لنکا کے صدر گوٹابایا راج پکشے نے قوم سے دوسرے مرتبہ خطاب کیا، جس میں انہوں نے کہا ہے کہ ایک ہفتے کے اندر نئی حکومت تشکیل دی جائے گی اور نئے ...

بحران میں مبتلا سری لنکائی باشندوں کی ہندوستان میں دراندازی کا اندیشہ، تمل ناڈو پولیس الرٹ

سیاسی اور معاشی بحران میں مبتلا سری لنکا میں ہر طرف تشدد کا ماحول ہے۔ وہاں کے کئی شہریوں کے ذریعہ ہندوستان میں دراندازی کے اندیشے ظاہر کیے جا رہے ہیں۔ اسے روکنے کے لیے تمل ناڈو کی ساحلی پولیس ہائی الرٹ پر ہے۔