ایگزٹ پول کے اندازے انتخابی نتائج نہیں ہوسکتے: کانگریس

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 22nd May 2019, 11:31 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،21؍مئی (ایس او نیوز؍یو این آئی) کانگریس نے کہا ہے کہ ایگزٹ پول کو ملک کے عوام اچھی طرح سمجھتے ہیں اور انہیں معلوم ہے کہ پولنگ کے بعد سروے کے اندازے انتخابی نتائج نہیں ہوتے پھر بھی ایسا ماحول پیدا کیا جارہا ہے گویا ایگزٹ پو ل ہی انتخابی نتائج ہوں۔کانگریس کے ترجمان راجیو شکلا نے آج یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں نامہ نگاروں سے کہا کہ ماحول بدلنے کی کوشش کی جارہی ہے اس لئے کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا کو اس سلسلے میں پیغام دینا پڑا کہ ایگزٹ پول کے اندازوں کو انتخابی نتائج کے طور پر مشتہر کرنا اپوزیشن جماعتوں کے کارکنوں کا حوصلہ پست کرنے کی سازش ہے اس لئے افواہوں پر دھیان دینے کے بجائے چوکنا اور ہوشیار رہنے کی ضرورت ہے۔پرینکا گاندھی نے کل دیر رات ایک آڈیو جاری کیا ہے جس میں انہوں نے کانگریس کارکنوں کو ایگزٹ پول سے مایوس نہیں ہونے کا مشورہ دیا ہے اور کہا کہ ایک سازش کے تحت ان کے حوصلے پست کرنے کی کوشش کی جارہی ہے اس لئے ہمت کے ساتھ زیادہ چوکنا ہوکر کام کرنے کی ضرورت ہے۔ترجمان نے کہا کہ ایسا عجیب و غریب ماحول کبھی نہیں بنا تھا۔ پورا ملک جانتا ہے کہ ایگزٹ پول انتخابی نتائج نہیں ہوتے ہیں اور یہ کچھ ایجنسیوں کے ذریعہ کرایا جاتا ہے لیکن اس مرتبہ ایگزٹ پول کے ذریعہ انتخابی نتائج آنے سے پہلے ہی جیت کا ماحول بنانے کی کوشش کی جارہی ہے اس لئے الیکشن ایجنٹوں کو چوکنا رہنے کی ضرور ت ہے۔کانگریس ترجمان نے کہا کہ ڈومریا گنج’غازی پور’سارن’جھانسی’پانی پت’ہریانہ اور پنجاب وغیرہ مقامات سے خبریں آرہی ہیں کہ رات کے اندھیرے میں الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کو غیر قانونی طریقے سے ادھر سے ادھر پہنچایا جارہا ہے۔ اس سے شبہ پیدا ہونا فطری ہے اور ایسے میں الیکشن کمیشن کی ذمہ داری ہے کہ وہ لوگوں کا شبہ دور کرنے کے لئے ضروری قدم اٹھائے۔ لوگوں میں یہ اعتماد قائم رہنا چاہئے کہ الیکشن غیر جانبدارانہ اور شفاف طریقے سے ہوئے ہیں۔ ملک کے انتخابی عمل پر کسی کا بھروسہ کم نہیں ہونا چاہئے۔ اس پر سب کا بھروسہ قائم رکھنا اور ان کا شک دور کرنا کمیشن کی ذمہ داری ہے۔اس درمیان الیکشن کمیشن نے ان شکایتوں کے سلسلے میں کہا کہ کچھ مقامات پر ای وی یم مشینوں میں ہیراپھیری کے الزام لگائے جارہے ہیں لیکن وہ بے بنیاد اور پوری طرح غلط ہیں۔ کمیشن نے کہا کہ ای وی ایم پوری طرح محفوظ ہیں اور اس کی سیکورٹی کا نظم زیادہ سخت کردیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سرمائی اجلاس کو کامیاب بنانے کے لیے وینکیا نائیڈو نے 17 نومبر کو کل جماعتی میٹنگ بلائی

راجیہ سبھا کے چیئرمین ایم وینکیا نائیڈو نے 18 نومبر سے شروع ہو رہے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کو کامیاب بنانے سمیت دیگر اہم مسائل پر تبادلہ خیال کرنے کے لئے ایوان بالا میں مختلف جماعتوں کے رہنماؤں کی 17 نومبر کو میٹنگ بلائی ہے۔