بھٹکل کے شرالی میں زیرو ویسٹ مینجمنٹ مرکز  کا قیام : کچرے کا دوبارہ استعمال کے لئے لائق بنانے والا مثالی منصوبہ :سی ای اؤ محمد روشن

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 22nd January 2020, 6:53 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل؍کاروار:22؍جنوری(ایس اؤ نیوز) گھر گھر سے جمع کئے جانے والے کچرے کو مقامی طورپر ہی دوبارہ استعمال کرنے کا مقصد لے کر زیرو ویسٹ مینجمنٹ مرکز کا بھٹکل تعلقہ کے شرالی میں قائم کئے جانے کی اترکنڑا ضلع پنچایت کے  سی ای اؤمحمدر وشن نےجانکاری دی ہے۔ پورے ملک میں یہ پہلی تجرباتی کوشش ہے جس کے لئے شرالی گرام پنچایت کو منتخب کیاگیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ عوامی نج کاری کے اشتراک سے (پی پی پی) قریب 30 لاکھ روپئے کے لاگت سے مختلف قسم کے کچروں کو الگ الگ طریقوں سے علاحیدہ کرنے اور اس کا دوبارہ استعمال کرنے کا منصوبہ تشکیل دیاگیا ہے۔ کچا کچرا، سوکھا کچرااس کے علاوہ پرانے کپڑے ، شوز، چپل، الکٹرانک کچرا، نامیاتی کچرا، کانچ ،شیشے کی اشیاء ، پلاسٹک ، سیانیٹری پیاڈ وغیرہ گرام پنچایت کی سطح پر ہی نکاسی کی جائے گی۔ جس کے لئے جدید ٹکنالوجی کے مشینوں کا استعمال کیا جائے گا۔ کچے کچرے کو کھاد میں تبدیل کرکے زراعت کے لئے استعمال کریں گے تو سیانیٹری پیاڈ انسنیٹر مشین کا استعمال کرتے ہوئے اس کو جلا دیا جائے گا۔ کانچ، شیشوں کی اشیاء کو مٹی میں منتقل کیا جائے گا اور پلاسٹک سول کاموں کے لئے خام اشیاء کے طورپر استعمال کئے جانے کی سی ای اؤ روشن نے جانکاری دی۔

زیرو ویسٹ مینجمنٹ مرکز کے لئے گرام پنچایت کی طرف سے عمارت کی نشاندہی کی جاچکی ہے، گھر گھر کچرا جمع کرنے کی ذمہ داری گرام پنچایت کرے گی۔ مشینوں کی نصب کاری، نگرانی صنعت کار کرشنانند نائک کی ملکیت والی ایس ایم انجنئیرس اینڈ ٹریڈرس کمپنی کرے گی۔ اس سلسلے میں کمپنی کے ساتھ  ضلع پنچایت نے اصول و ضوابط کے مطابق معاہدہ کر لیا ہے۔  اس سلسلے میں سوچھ بھارت مشن کے ضلع سنچالک سوریا نارائن بھٹ نے بتایا کہ ضلع پنچایت سی ای اؤ محمد روشن کی دور اندیشی کے چلتے عوام کو سہولت فراہم  کرنےو الے اس منصوبہ  کو تشکیل دیا گیا ہے۔

زیرو ویسٹ مینجمنٹ کے نفاذ سے مقامی اداروں کے مراکز پرنہ  ملنے والے مشینوں کو شرالی گرام پنچایت کو مہیا کی جارہی ہیں۔ جس میں الکٹرانک کچرے کو پروسس کرنے سے لے کر پلاسٹک اور کانچ کو بھی دوبارہ استعمال کرتےہوئے خام مواد میں منتقل کرنے والی مشینیں شامل ہیں۔ عوامی استعمال کے بعد یوں ہی پھینکی ہوئی کانچ کی بوتلیں جمع کرکے ان کو چورا کرنےکے بعد مٹی میں منتقل کیا جائے گااور اس کو متعلقہ علاقوں میں ہونے والے تعمیراتی کاموں میں استعمال کرنے کے لئے پنچایت راج انجنئیرنگ شعبہ کو ہدایت دی جائے گی۔ پلاسٹک کو سڑک تعمیراتی کاموں میں استعمال کیا جائےگا۔ 9فی صد خام مواد ان مراکز سے حاصل کرنے کا حکم جاری کیاجائے گا۔ جس کے نتیجے میں نہ صرف کچرے کا دوبارہ استعمال ہوگا بلکہ سرکار پر معاشی بوجھ بھی کم ہونے کی سی ای اؤ روشن نے جانکاری دی ۔

منصوبے کو لے کر ضلع پنچایت کے سی ای اؤ محمدر وشن نے بتایا کہ ’’ایک مثالی منصوبے کے تحت ضلع کو صفائی میں آگے صف میں لاکھڑا کرنے کا ارادہ ہے، تجرباتی طورپر بھٹکل کے شرالی گرام پنچایت میں زیرو ویسٹ مینجمنٹ مرکز کا قیام ہوگا، اگلے چند دنوں میں کاروار کی چتاکول گرام پنچایت میں مرکز قائم کرنے کا فیصلہ لیاگیا ہے، منصوبے کی کامیابی کے لئے عوامی تعاون کی ضرورت ہے‘‘۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں موٹر گاڑیوں کی بڑھتی تعداد۔ آمدورفت کی دشواریوں پر قابو پانے کے لئے ٹریفک پولیس اسٹیشن کا قیام اشد ضروری

بھٹکل شہر تعلیمی، معاشی اور سماجی طور پرتیز رفتاری کے ساتھ ترقی کی طرف گامزن ہے۔ لیکن اس ترقی کے ساتھ یہاں پر موٹر گاڑیوں کی تعداد میں بھی بے حد اضافہ ہوا ہے جس سے ٹریفک کے مسائل پیدا ہوگئے ہیں۔ دوسری طرف ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیاں بھی بڑھتی جارہی ہیں اوراس سے سڑک حادثے بھی ...

شرالی میں سپاری خریداری مرکز کامپکو کا افتتاح : کسانوں کو بہتر قیمت ملنے کی امید

دلالوں  کے پھندوں سے بچا کر کسانوں کی محنت سے اگائی ہوئی فصل کو بہتر قیمت پر لانے کے لئے ضروری ہے کہ کامپکو سپاری خریداری  مرکز  انہیں پہلی ترجیح دینے کا ہوناور اے پی ایم سی کے صدر گوپال نائک نے خیال ظاہر کیا۔

بھٹکل کے شرالی حدود میں غیر قانونی شراب پر پابندی عائد کرنے کامطالبہ لےکر عوام نے اے سی کو دیا میمورنڈم

شرالی گرام پنچایت  کے منُّو ہونڈا حدود میں  بے تحاشہ غیر قانونی شراب کی فروخت کاری کے خلاف سخت برہمی کا اظہار کرتےہوئے دیہی عوام نے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم سونپتے ہوئے سخت اقدام کا مطالبہ کیا ہے۔

کاروار میں تمباکو کی روک تھام کے لئے بیداری ریلی: ’گلابی آندولن ‘ کے تحت گلاب کے پھول کی تقسیم

قومی منصوبہ تمباکو روک تھام کے تحت ضلع صحت عامہ اور خاندانی فلاح وبہبودی محکمہ اور دیگر محکمہ جات کے اشتراک سے 17فروری کو تمباکو فروخت کرنے والے دکانداروں اور تمباکوکے  اشیاء کا استعمال کرنےو الوں  میں بیداری پیدا کرنے کا مقصد لے کر ’گلابی آندولن ‘ مہم چلائی گئی جس کے ...