ای ڈی نے احمد پٹیل سے پی ایم ایل اے معاملے میں چوتھی بار کی تفتیش

Source: S.O. News Service | Published on 9th July 2020, 9:41 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،09 /جولائی (آئی این ایس انڈیا) انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کے عہدیداروں نے سندیسرا بندھو بینک فراڈ اور منی لانڈرنگ کیس میں کانگریس کے سینئر رہنما احمد پٹیل سے جمعرات کی صبح ان کی سرکاری رہائش گاہ پر تفتیش کی۔

ای ڈی کی تین رکنی ٹیم صبح 11 بجے راجیہ سبھا کے رکن پارلیمنٹکی 23 مدر ٹریسا کریسنٹ رہائش گاہ پر پہنچی، اس سے پہلے 2 جولائی کو پٹیل سے تقریباً10 گھنٹے تک اس معاملے میں پوچھ گچھ کی گئی تھی۔

انہوں نے بتایا تھا کہ ای ڈی کے تفتیش کاروں نے تین سیشنوں میں ان سے 128 سوالات پوچھے تھے۔ پٹیل نے کہاکہ یہ میرے اور میرے اہل خانہ کے خلاف سیاسی انتقام ہے اور میں نہیں جانتا کہ وہ تفتیش کار کس کے دباؤ میں کام کر رہے ہیں۔ 27 جون 30 جون اوردو جولائی کوای ای ڈی نے 27 گھنٹوں تک پوچھ گچھ کی ہے۔

عہدیداروں نے بتایا کہ کانگریس قائد کے بیانات پریوینشن آف منی لانڈرنگ ایکٹ (پی ایم ایل اے) کے تحت ریکارڈ کیے جارہے ہیں۔ پٹیل سے بڑدودرہ کی کمپنی ا سٹرلنگ بائیوٹیک فارماسیوٹیکل کمپنی کے پروموٹر سینڈسرا برادران سے مبینہ تعلقات کے بارے میں اور رہنما کے رشتہ داروں کے ساتھ لین دین معاملے کے بارے میں پوچھ گچھ کی جارہی ہے۔

ایجنسی نے پٹیل کے بیٹے فیصل اور داماد عرفان احمد صدیقی سے اس سلسلے میں گذشتہ سال پوچھ گچھ کی تھی اور اپنا بیان ریکارڈ کرایا تھا۔ ان دونوں سے سنڈیسارا گروپ کے ملازم سنیل یادو کے بیان کے تناظر میں پوچھ گچھ کی گئی تھی، جس نے ایجنسی کے ساتھ اپنے بیانات ریکارڈ کروائے تھے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

راجستھان: ’جے شری رام‘ نہ کہنے پر بزرگ مسلم ڈرائیور کے ساتھ مار پیٹ، پاکستان جانے کو کہا!

 راجستھان کے سیر میں ایک 52 سالہ آٹو رکشہ ڈرائیور غفار احمد کچاوا کو ’مودی زندہ آباد‘ اور ’جے شری رام‘ نہ بولنے پر بے رحمی سے پیٹا گیا۔ پولیس نے ہفتہ کے روز یہ اطلاع دی۔ متاثرہ ڈرائیور نے بتایا کہ ان پر حملہ کرنے والے دو لوگوں نے ان کی داڑھی کھینچی اور پاکستان جانے کو کہا۔

ہندوستان: کورونا کے نئے معاملہ ایک دن میں65 ہزار سے پار، اب تک کے سب سے زیادہ

ملک میں کورونا وائرس کی دن بدن خراب ہوتی صورتحال کے درمیان سنیچر کی دیر رات تک65,156نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 21.50لاکھ سے زیادہ ہوگئی اور 875مزید لوگو کی موت سے مرنے والوں کی تعداد 43,446تک پہنچ گئی لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ مریضوں کے صحت یاب ہونے کی شرح 69فیصد کے قریب پہنچ ...

ایئر انڈیا کا طیارہ گرنے کی ایک نہیں کئی وجوہات

ماہرین کا ماننا ہے کہ کیرالہ کے کوزی کوڈ میں جمعہ کی رات ہوئے جہاز حادثے میں تیز بارش کے ساتھ کئی وجوہات رہی ہوں گی۔ائر انڈیا ایکسریس کا بوئنگ 737-800 جہاز جب کوزی کوڈ پہنچا اس وقت وہاں تیز بارش ہورہی تھی۔ جب رن وے گیلا ہوتا ہے تو جہاز کو اترنے کے بعد رکنے کے لئے رن وے پر معمول کے ...