کرونا وائرس : ولی عہد دبئی کا کاروباروں کی بحالی کے لیے 40 کروڑ80 لاکھ ڈالر کا امدادی پیکج

Source: S.O. News Service | Published on 11th July 2020, 9:57 PM | خلیجی خبریں |

دبئی،11؍جولائی(ایس او نیوز؍ایجنسی) امارت دبئی نے کرونا وائرس کے منفی معاشی اثرات سے نمٹنے میں مدد دینے اور کاروباروں کی بحالی کے لیے ڈیڑھ ارب درہم (40 کروڑ 80لاکھ ڈالر) کے نئے مالیاتی پیکج کی منظوری دی ہے۔

دبئی کے ولی عہد شیخ حمدان بن محمد بن راشد آل مکتوم نے ہفتے کے روز اس پیکج کا اعلان کیا ہے۔انھوں نے ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ ’’یہ کووِڈ-19 کی وَبا کے ردعمل میں تیسرا پیکج ہے۔اس کو ملا کر مجموعی طور پر چھے ارب 30 کروڑ درہم صرف کیے جائیں گے۔‘‘

شیخ حمدان نے اس مالیاتی پیکج سے مستفید ہونے والوں کی فہرست بھی جاری کی ہے،ان میں تعلیمی ادارے بھی شامل ہیں۔

وہ لکھتے ہیں کہ ’’ہم نے جرمانوں کی تنسیخ کا فیصلہ کیا ہے اور نجی اسکولوں کو آیندہ دسمبر کے آخر تک تجارتی اور تعلیمی لائسنسوں کے اجراء اور تجدید کے لیے فیس میں استثنا دینے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔‘‘

انھوں نے مزید کہا ہے کہ’’ہمیں اپنی معیشت کی لچک داری اور پائیداری پر اعتماد ہے۔ہم اس مرحلے سے تیزی سے آگے بڑھنے کے لیے نجی شعبے کے ساتھ کھڑے ہیں۔ہم کاروباروں کو جلد سے جلد معمول پر لانے میں دلچسپی رکھتے ہیں اور ہم تمام اقتصادی شعبوں کی معاونت کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کرتے ہیں۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

مطافِ کعبہ میں تنہا دعا کرنے والی دنیا کی خوش قِسمت خاتون

کورونا وائرس کی وَبا کے پیش نظر اس مرتبہ حج کے ایّام میں بعض بڑے نادر اور منفرد واقعات پیش آئے ہیں جن کا عام حالات میں تصور بھی ممکن نہیں۔ ایسے واقعات میں تازہ اضافہ ایک تنہا مسلم خاتون کی کعبۃ اللہ کے سامنے عبادت وریاضت ہے اور ان کے ساتھ مطاف میں کوئی دوسرا فرد نظر نہیں آرہا ہے۔

ترکی عرب امور میں مداخلت سے باز رہے: متحدہ عرب امارات کا انتباہ

متحدہ عرب امارات نے  لیبیا سے متعلق ترکی کے بیان کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ترکی کو کہا ہے کہ وہ عرب ممالک کے امور میں مداخلت کرنے سے باز رہے۔متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے سلطنت عثمانیہ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ترکی اب اس دور کی طرح کا رویہ اختیار ...