95 ایم ایم بارش سے گروگرام بن گیا ’آبی گرام‘، دہلی میں 24 ستمبر کے لیے یلو الرٹ، مغربی یوپی میں زوردار بارش کی پیشین گوئی

Source: S.O. News Service | Published on 23rd September 2022, 11:48 PM | ملکی خبریں |

گروگرام، 23؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) مانسون جاتے جاتے دہلی-این سی آر کو نہ صرف تر بتر کر رہا ہے، بلکہ انتظامیہ کی لاپروائیوں کو بھی سب کے سامنے ظاہر کر رہا ہے۔ عام طور پر ستمبر میں 108.5 ایم ایم بارش ہوتی ہے اور ابھی تک 58.5 ایم ایم بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ محکمہ موسمیات نے 24 ستمبر سے متعلق کئی ریاستوں میں زوردار اور موسلادھار بارش کی پیشین گوئی کی ہے۔ دہلی کے لیے تو کل یلو الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔ مدھیہ پردیش، گجرات، اڈیشہ اور تلنگانہ کے کئی علاقوں میں بھی زوردار بارش کے امکانات ہیں۔ اتراکھنڈ میں آئندہ دو دنوں کے لیے بہت زیادہ بارش کے لیے آرینج الرٹ بھی جاری کیا گیا ہے۔ آئی ایم ڈی کے سینئر سائنسداں آر کے جینامنی کا کہنا ہے کہ اتراکھنڈ کے لیے 25 ستمبر تک بہت زیادہ بارش کے لیے آرینج الرٹ جاری کیا گیا ہے۔

اتر پردیش کی حالت لگاتار ہو رہی بارش سے خستہ ہو چکی ہے۔ مغربی اتر پردیش میں 24 ستمبر کو بارش میں مزید تیزی آنے کی پیشین گوئی کی گئی ہے جس سے عوام اور انتظامیہ دونوں میں خوف ہے۔ اتر پردیش کی راجدھانی لکھنؤ کے کئی علاقے گزشتہ کچھ دنوں سے پانی میں ڈوبے ہوئے ہیں جس کی وجہ سے لوگوں کو سخت مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ ایسا لگتا ہے کہ آنے والے دو تین دن حالات میں کچھ خاص بہتری نہیں ہوگی۔

عالمی سطح پر اپنی پہچان بنا چکا خوابوں کا شہر ’گروگرام‘ کی حالت بھی جمعہ کے روز ہوئی بارش میں خستہ ہو گئی۔ گروام گرام ایسا لگ رہا تھا جیسے کہ ’آبی گرام‘ بن گیا ہے۔ محض 95 ایم ایم بارش سے ہی یہ شہر پانی پانی ہو گیا۔ بارش کے بعد پورے شہر میں آبی جماؤ اور ٹریفک جام کا منظر دیکھنے کو ملا۔ سیکٹر سے لے کر کالونیوں اور بڑی سوسائٹی تک میں پانی بھرا ہوا دکھائی دے رہا ہے۔ کروڑوں روپے خرچ کر شہر کے اہم چوک چوراہوں پر بنائے گئے انڈر پاس بھی پانی میں ڈوبے ہوئے ہیں۔ فکر انگیز بات یہ ہے کہ ہفتہ کے روز بھی تیز بارش کے امکانات ظاہر کیے گئے ہیں۔ یعنی عوام کے ساتھ ساتھ انتظامیہ کی بے سکونی مزید بڑھنے والی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

نوٹ بندی کی آئینی درستگی کو چیلنج کرنے والی 59 عرضیوں پر سپریم کورٹ میں 12 اکتوبر کو ہوگی سماعت

مودی حکومت کی جانب سے 2016 میں نافذ کی گئی نوٹ بندی کے آئینی جواز کے خلاف دائر کی گئی عرضیوں پر سپریم کورٹ میں پانچ ججوں کی آئینی بنچ میں 12 اکتوبر کو سماعت ہوگی۔ نوٹ بندی کے خلاف عرضیوں پر سپریم کورٹ نے سوال کیا ہے کہ اب اس معاملے میں کیا باقی ہے؟ کیا اس معاملے کی جانچ کرنے کی ضرورت ...

یوپی: لکھیم پور کھیری میں دلخراش سڑک حادثہ، بس اور ٹرک کے تصادم میں 8 افراد ہلاک، 25 سے زائد زخمی

 اتر پردیش کے لکھیم پور کھیری میں آج صبح ایک بڑا حادثہ پیش آیا۔ معلومات کے مطابق بس اور ٹرک کے درمیان تصادم میں 8 افراد جاں بحق، جب کہ 25 زخمی ہوئے ہیں۔ بتایا جا رہا ہے کہ لکھیم پور کھیری ضلع کے عیسی نگر تھانہ علاقے کی کھماریا پولیس چوکی کے نزدیک شاردا ندی کے پل پر درجنوں مسافروں ...

بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ روی کشن کو لگا چونا! کاروباری پر عائد کیا 3.25 کروڑ کی ٹھگی کرنے کا الزام، پولیس میں درج کرائی شکایت

 بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ اور اداکار روی کشن مبینہ طور پر 3.25 کروڑ روپے کی ٹھگی کا شکار ہو گئے ہیں، اس واقعہ کی اطلاع پولیس نے دی ہے۔ گورکھپور صدر سے رکن پارلیمنٹ روی کشن نے گورکھپور کینٹ تھانہ میں ایک بلڈر کے خلاف 3.25 کروڑ کی ٹھگی کا الزام عائد کرتے ہوئے مقدمہ درج کرایا ہے۔

مرکزی حکومت کے ملازمین کو ملی سوغات، مہنگائی بھتہ میں 4 فیصد کا اضافہ

مرکزی حکومت نے ایک کروڑ سے زیادہ سرکاری ملازمین اور پنشن حاصل کرنے والے افراد کو تہواروں کے موقع پر سوغات پیش کی ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی کی سربراہی میں منعقد ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں مہنگائی بھتہ میں اضافہ کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

نیشنل اسٹاک ایکسچینج کو-لوکیشن گھوٹالہ معاملہ میں چترا رام کرشن اور آنند سبرامنیم کو دہلی ہائی کورٹ سے ملی ضمانت

دہلی ہائی کورٹ نے نیشنل اسٹاک ایکسچینج (این ایس ای) کو-لوکیشن گھوٹالہ معاملے میں گرفتار سابق چیف ایگزیکٹیو افسر چترا رام کرشن اور سابق گروپ آپریٹنگ افسر آنند سبرامنیم کو ضمانت دے دی ہے۔ اس گھوٹالے کی سی بی آئی کے ذریعہ جانچ کی جا رہی ہے۔

’کانگریس ہمیشہ سے فرقہ پرستی کے خلاف رہی ہے‘، پی ایف آئی پر پابندی کے بعد جئے رام رمیش کا رد عمل

مرکزی حکومت کے ذریعہ پی ایف آئی پر پانچ سال کی پابندی عائد کیے جانے کے بعد کانگریس جنرل سکریٹری جئے رام رمیش کا رد عمل سامنے آیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی ہمیشہ سے سبھی طرح کی فرقہ پرستی کے خلاف رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہم اکثریت یا اقلیت کی بنیاد پر مذہبی تشدد میں فرق ...