چین معاملہ میں مرکزی وزیر دفاع کے بیان سے پی ایم مودی کا جھوٹ ثابت: راہل گاندھی

Source: S.O. News Service | Published on 15th September 2020, 10:38 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،15؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) مشرقی لداخ میں چین کے ساتھ جاری سرحدی تنازعہ کے درمیان مرکزی وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ نے منگل کو پارلیمنٹ میں کہا کہ چین نے ہندوستان کی 38 ہزار اسکوائر کلو میٹر زمین پر ناجائز طریقے سے قبضہ کر رکھا ہے۔ وزیر دفاع نے کہا کہ حقیقی کنٹرول لائن یعنی ایل اے سی واضح طور پر نشان زد ہے اور چین ہندوستان کی سرحد سے ملحق تقریباً 90 ہزار اسکوائر کلو میٹر کی زمین کو بھی اپنی بتاتا ہے۔

وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ نے چین کی ایک ایک ناپاک کرتوتوں کی جانکاری ایوان کو دی۔ انھوں نے کہا کہ چین نے مئی اور جون میں حقیقی صورت حال کو بدلنے کی کوشش کی، لیکن ہندوستانی فوج نے اس کی کوششوں کو ناکام کر دیا۔ راج ناتھ نے مزید کہا کہ "ہم نے چین سے کہا ہے کہ ایسے واقعات ہمیں قابل قبول نہیں ہوں گے۔" ان کا کہنا ہے کہ مرکز کے ماتحت علاقہ لداخ میں چین تقریباً 38 ہزار اسکوائر کلو میٹر کا ناجائز قبضہ کیا ہے۔ اس کے علاوہ 1963 کے مبینہ چین-پاکستان 'سرحد تنازعہ' کے تحت پاکستان نے پاکستان مقبوضہ کشمیر میں 5180 اسکوائر کلو میٹر ہندوستانی زمین غلط طریقے سے چین کو سونپ دی۔ انھوں نے کہا کہ چین نے اروناچل پردیش میں ہند-چین سرحد کے مشرقی علاقہ میں تقریباً 90 ہزار اسکوائر کلو میٹر ہندوستانی علاقہ کا دعویٰ کیا ہے۔

ایوان میں ہند-چین تنازعہ کے درمیان راج ناتھ سنگھ کے اس بیان پر کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے ٹوئٹ کیا ہے جس میں انھوں نے پی ایم مودی کو کٹہرے میں کھڑا کر دیا ہے۔ اس بار راہل گاندھی نے راج ناتھ سنگھ کے بیان کا حوالہ دیتے ہوئے مرکز کی مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ راہل گاندھی نے ٹوئٹ کر کہا ہے کہ "وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کے بیان سے صاف ہے کہ مودی جی نے ملک کو چینی قبضہ کے تعلق سے گمراہ کیا۔" راہل گاندھی نے ساتھ ہی لکھا ہے کہ "ہمارا ملک ہمیشہ سے ہندوستانی فوج کے ساتھ کھڑا تھا، ہے اور رہے گا۔ لیکن مودی جی، آپ کب چین کے خلاف کھڑے ہوں گے؟ چین سے ہمارے ملک کی زمین کب واپس لیں گے؟ چین کا نام لینے سے ڈرو مت۔"

دراصل اپوزیشن چین کے ساتھ چل رہی کشیدگی پر لگاتار حکومت سے بیان دینے کا مطالبہ کر رہا تھا۔ اس کے بعد راج ناتھ سنگھ نے منگل کے روز جواب دیتے ہوئے کہا کہ سرحد پر ہندوستانی جوان پوری چابکدستی کے ساتھ تیار ہیں۔ راج ناتھ نے چین کو بات چیت کی تجویز پیش کرتے ہوئے کہا کہ اگر ڈریگن سرحد پر کوئی حرکت کرے گا تو ہمارے جوان اسے معقول جواب بھی دیں گے۔ راج ناتھ نے کہا کہ فوج کے لیے خصوصی اسلحہ اور گولہ بارود کا مناسب انتظام کیا گیا ہے۔ ان کے رہنے کے لیے ہر سہولتیں دی گئی ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ لداخ میں ہم ایک چیلنج کے دور سے گزر رہے ہیں۔ یہ وقت ہے کہ یہ ایوان اپنے جوانوں کی بہادری کا احساس دلاتے ہوئے انھیں پیغام بھیجیں کہ پورا ایوان ان کے ساتھ کھڑا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں کورونا سے 95542 افراد ہلاک، متاثرین کی تعداد 60.74 لاکھ

 ملک میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران متاثرہ افراد کے 82 ہزار سے زیادہ نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 60.74 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ کورونا کے انفیکشن سے 74 ہزار سے زائد افراد صحت مند ہوچکے ہیں جس کے نتیجے میں صحت مند افراد کی تعداد 50.16 لاکھ ہوگئی ہے۔

بہار اسمبلی انتخابات میں ٹکٹ کے لئے بی جے پی کے دفتر میں ہنگامہ

بہار اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے بعد سے ٹکٹ کے دعویداروں کی سرگرمیاں اس قدر بڑھ گئی ہیں کہ ان کے حامی کارکنان ہنگامہ آرائی اور ہاتھاپائی کرنے تک آمادہ ہیں اور کل ایسا ہی نظارہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ریاستی دفتر میں دیکھا گیا۔

بالاسبرامنیم اس ملک کے موسیقی اورلسانی ثقافت کی ایک عمدہ مثال تھے: سونیا گاندھی

کانگریس  کی  چیئرپرسن سونیا گاندھی نے موسیقی کی دنیا کی ایک عظیم ہستی بالاسبرامنیم کے انتقال پراپنے گہرے رنج  وغم  کا اظہار کرتےہوئے کہا ہے کہ وہ ملک کی  موسیقی اور لسانی  ثقافت کے عمدہ مثال تھے اور ان کے نہیں رہنے  سے آرٹ اور کلچرل کی دنیا پھیکی پڑگئی ہے۔