بی جے پی کا حصہ بن چکی ہیں سرکاری ایجنسیاں:کنی موجھی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th April 2019, 11:46 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

چنئی ،18؍ اپریل (ایس او نیوز) گزشتہ چند دنوں میں محکمہ انکم ٹیکس نے ملک کے مختلف حصوں میں چھاپہ ماری کی ہے۔حکام نے منگل کو ڈی ایم کے لیڈر کنی موجھی کے گھر پر چھاپہ ماری کی تھی۔رپورٹوں کے مطابق ان کے پاس سے بڑی مقدار میں نقد رقم جمع ہونے کی اطلاع ملی تھی،اسے لے کر کنی موجھی نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر نشانہ لگایا ہے۔انہوں نے الزام لگایا ہے کہ ساری سرکاری ایجنسیاں بی جے پی کا حصہ بن گئی ہیں۔توتیکورن لوک سبھا سیٹ سے ڈی ایم کے امیدوار کنی موجھی نے کہا ہے کہ گزشتہ پانچ سال میں ہر سرکاری ایجنسی کا استحصال کیا جا چکا ہے،وہ بی جے پی کا حصہ ہو گئی ہیں،سی بی آئی،ای ڈی،آربی آئی ،الیکشن کمیشن سب کے ساتھ معاہدہ ہو چکا ہے،صرف اپوزیشن رہنماؤں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ ان سے پہلے ڈی ایم چیف ایم کے اسٹالن نے انتخابات سے 2 دن پہلے آئی ٹی کی چھاپہ ماری پر سوال اٹھایا تھا۔اسٹالن نے کہا تھا کہ پی ایم انتخابات کو متاثر کرنے کے لئے انکم ٹیکس حکام کا استعمال کر رہے ہیں۔بتا دیں کہ دوسرے مرحلے میں ریاست کی 39 لوک سبھا اور 18 اسمبلی سیٹوں کے لیے جمعرات کو انتخابات ہونے ہیں۔دوسرے مرحلے کے لئے چل رہی انتخابی مہم کے ختم ہونے کے بعد انکم ٹیکس حکام نے توتیکورن کے کرگی شہر واقع کنی موجھی کی رہائش گاہ پر چھاپے ماری کی۔

ایک نظر اس پر بھی

وزیراعظم مودی نے کابینہ سمیت سونپا صدرجمہوریہ کو استعفیٰ، 30 مئی کو دوبارہ حلف لینےکا امکان

لوک سبھا الیکشن کے نتائج کے بعد جمعہ کی شام نریندرمودی نے وزیراعظم عہدہ سے استعفیٰ دے دیا۔ ان کے ساتھ  ہی سبھی وزرا نے بھی صدرجمہوریہ کواپنا استعفیٰ سونپا۔ صدر جمہوریہ نےاستعفیٰ منظورکرتےہوئےسبھی سے نئی حکومت کی تشکیل تک کام کاج سنبھالنےکی اپیل کی، جسے وزیراعظم نےقبول ...

نوجوت سنگھ سدھوکی مشکلوں میں اضافہ، امریندر سنگھ نے کابینہ سے باہرکرنے کے لئے راہل گاندھی سے کیا مطالبہ

لوک سبھا الیکشن میں زبردست شکست کا سامنا کرنے والی کانگریس میں اب اندرونی انتشار کھل کرباہرآنے لگی ہے۔ پہلےسے الزام جھیل رہے نوجوت سنگھ سدھو کی مشکلوں میں اضافہ ہونےلگا ہے۔ اب نوجوت سنگھ کوکابینہ سےہٹانےکی قواعد نے زورپکڑلیا ہے۔

اعظم گڑھ میں ہارنے کے بعد نروہوا نے اکھلیش یادو پر کسا طنز، لکھا، آئے تو مودی ہی

بھوجپوری سپر اسٹار نروہوا (دنیش لال یادو) نے لوک سبھا انتخابات کے دوران سیاست میں ڈبیو کیا تھا،وہ بی جے پی کے ٹکٹ پر یوپی کی ہائی پروفائل سیٹ اعظم گڑھ سے انتخابی میدان میں اترے تھے لیکن اترپردیش کے سابق وزیر اعلی اکھلیش یادو کے سامنے نروہا ٹک نہیں پائے۔

مسلمانوں کے خلاف اشتعال انگیز بیانات دینے والوں کی بھاری اکثریت کے ساتھ جیت

مسلمانوں کے خلاف ہمیشہ اشتعال انگیز بیانات دینے والوں کو اس مرتبہ لوک سبھا انتخابات میں بھاری اکثریت کے ساتھ کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ اترکنڑا لوک سبھا حلقے کے بی جے پی اُمیدوار اننت کمار ہیگڈے جنہوں نے کہا تھا کہ جب تک اسلام رہے گا دہشت گردی رہے گی،اسی طرح انہوں نے  دستور کی ...

ایچ کے پاٹل نے راہل گاندھی کو بھیجا استعفیٰ

ریاست میں کانگریس کے تشہیری مہم کمیٹی کے صدر ایچ کے پاٹل نے لوک سبھا انتخابات میں ریاست میں پارٹی کی شکست کی اخلاقی ذمہ داری لیتے ہوئے اپنے عہدے سے استعفی دینے کی پیشکش کی ہے۔