کرناٹکا میں کورونا کے بڑھتے معاملات کے چلتے سرکاری اسپتالوں میں ڈیالسس کی خدمات بند : حکومت کی خاموشی پر فاؤنڈیشن کا اقدام

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 15th May 2021, 6:31 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:15؍ مئی (ایس اؤ نیوز) پیشگی احتیاطی تدابیر اورمنظم و منضبط نظام کے بغیر  کورونا وائرس پر  کنٹرول کرنے میں ناکامی  اور کووڈ ٹیکہ  کی سپلائی بند ہوجانے سے ایک طرف عوام پہلے سے پریشان ہیں، ایسے میں    حکومت کی ایک  اورنظرا ندازی  نے ریاست کرناٹک کے ہزاروں ڈیالسس کے مریضوں کو مشکلات میں ڈال دیا ہے۔

گذشتہ تین چار برسوں سے اترکنڑا سمیت ریاست کے 23اضلاع کے سرکاری اسپتالوں میں ڈیالسس کی خدمات دینے والی بی آر شٹی فاؤنڈیشن  نے ریاستی حکومت کو خط لکھتےہوئے مطلع کیا ہے کہ حکومت کی جانب سے امداد نہ ملنے کی وجہ سے اپنی خدمات 15مئی سے بند کررہی ہے۔حکومت اورفاؤنڈیشن کے  اقدام سے سرکاری اسپتالوں میں ڈیالسس کی خدمات  پر سوالیہ نشان کھڑا ہواہے۔ چند اسپتالوں میں ڈیالسس کے لئے استعمال ہونے والی اشیاء  کی موجود گی کی اطلاع دیتےہوئے اسپتال عملے کا کہنا ہے مزید دو تین دن ڈیالسس کیا جاسکتاہے۔وہیں ڈیالسس کے مریضوں کو خوف کھائےجارہاہے کہ اس معاملےمیں اگر  حکومت خاموش رہی تو پھر آگے کیا ہوگا؟

ریاست کے ڈیالسس مریضوں کو سرکاری اسپتالوں میں ہی خدمات دینے کےلئے اپریل 2017میں اس وقت کی حکومت نے ٹینڈر بلایاتھا۔ جس کے تحت بی آر شٹی فاؤنڈیشن نے ریاست کے 23اضلاع میں ڈیالسس کی خدمات دینے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔ فاؤنڈیشن نے قریب 700عملے کا تقرر کرتےہوئے اپنی سرویس شروع کی تھی۔ریاست میں  فی الوقت 3000سے زائد کڈنی کے مریض انہی مرکزوں میں ڈیالسس کروا رہے تھے۔ لیکن فاؤنڈیشن کے ذمہ داروں کے مطابق گذشتہ تین برسوں سے حکومت نے ڈیالسس کے لئے مالی امداد نہیں دے رہی ہے۔ تین برسوں کا بقایہ 28کروڑ روپیوں سےزائد ہوگیا ہے۔ عملہ کی ماہانہ تنخواہ ایک کروڑروپیوں سے زائد ہے۔ حکومت کی مالی مدد کے بغیر خدمات کو جاری رکھنا ممکنات میں سے نہیں ہے۔ یہ بھی خیال رہے کہ پچھلے دو مہینوں سے عملے کو تنخواہ ادا نہ کئے جانے کی اطلاعات ہیں۔ اس سلسلے میں ادارے نے 21اپریل کو حکومت کو خط لکھتے ہوئے جانکاری دی ہےکہ وہ 15مئی سے اپنی خدمات بند کررہی ہے۔ اس پر حکومت  نے ابھی تک کوئی فیصلہ نہ کرتےہوئے خاموشی اختیار کررکھی ہے۔ سرکاری اسپتالوں میں اس طرح اچانک ڈیالسس کی خدمات بند ہوجائیں گی تو پرائیویٹ اسپتالوں کا خرچ غریب مریض کیسے ادا کریں گے کوئی جواب نہیں مل رہاہے۔ اس سلسلے میں حکومت نے  ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں لیا ہے۔

فاؤنڈیشن کے جنرل مینجر کا کہنا ہے کہ حکومت کی طرف سے جواب ملنے تک ہم کچھ نہیں کرسکتے۔ اب جو بھی کرنا ہے حکومت کو ہی کرنا ہوگا۔ ادھر ڈیالسس سنٹر کے عملےکا کہنا ہےکہ ہمیں پچھلے دومہینوں سے تنخواہ نہیں ملی ہے۔ جب تک ڈیالسس کے اشیاء ہیں تب تک کام کریں گے پھر اس کے بعد بند کرنے کے سوا ہمارے پاس کوئی چارہ نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل جالی میں انڈر گراونڈ ڈرینیج کا مسئلہ؛ ممکنہ کنووں کو خراب کرنے والے چمبرس کی درستگی کے بعد ہی کام کو بڑھایا جائے گا آگے؛ ایک ہفتہ کے اندر سڑکوں کی مرمت کی یقین دھانی

بھٹکل کے جالی پٹن پنچایت حدود میں  تعمیر کئے جارہے  انڈر گراونڈ ڈرینیج (یو جی  ڈی)  کا مسئلہ بارش کے بعد مزید پیچیدہ ہونے کے بعد  گذشتہ روز  جالی پنچایت آفس میں  واٹر بورڈ انجینر سمیت  بھٹکل انڈر گراونڈ ڈرینیج کے کام کرنے والے کنٹریکٹر کے  ساتھ میٹنگ کا انعقاد کیا گیا تھا جس ...

کورونا کی تیسری لہر کو لے کر ریاستی ماہرین کمیٹی نے ریاستی حکومت کو سونپی سفارشی رپورٹ : وائرس شدت اختیار کرنےپر 3لاکھ بچے متاثر ہونے کا خدشہ

اگلے 6سے 8ہفتوں میں ملک میں کورونا کی تیسری لہر شروع ہونےکے متعلق ماہرین نےمتنبہ کیا تو ریاستی  حکومت نے ڈاکٹر دیوی شٹی کی قیادت میں کمیٹی تشکیل دیتے ہوئے کہا تھا کہ وہ بتائیں کہ  تیسری لہر کو روکنے کے لئے کیا کیا اقدامات کریں۔ ڈاکٹر دیوی شٹی کی قیادت والی ماہرین کی کمیٹی نے ...

منگلورو : کلاک ٹاور کے پاس پولیس کی اچانک چیکنگ ۔ غیر ضروری طور پر سڑکوں پر گاڑیاں دوڑانے والوں کے خلاف کی گئی کارروائی

دو دن پہلے شہر میں لاک ڈاون کے اوقات میں کمی کرنے کے بعد سڑکوں پر موٹر گاڑیوں کا ہجوم لگ گیا تھا۔ اس پر قابو پانے کے لئے پولیس کے افسران نے کلاک ٹاور کے پاس اچانک چیکنگ شروع کردی اور غیر ضروری طور پر سڑکوں پر گاڑیاں دوڑانے والوں کے خلاف معاملات درج کرلیے۔

اترکنڑا میں 77373افراد کو کووڈکا دوسرا ٹیکہ دیا جاچکا ہے: صحت عامہ کی رپورٹ

اترکنڑا میں ابھی تک 77173لوگوں کو کووڈکا ٹیکہ لگایاجاچکاہے۔ منگل کی شام 7بجے تک ملی رپورٹ کے مطابق 1590ڈوز باقی ہیں۔ جس میں کووی شیلڈ 740اورکو ویکسن 850ڈوز ٹیکوں کا ذخیرہ موجود ہے۔ اس بات جانکاری  ڈسٹرکٹ  آر سی ایچ افسر ڈاکٹر رمیش راؤ نے دی۔

جناب ایس ایم سید محی الدین مارکیٹ صاحب مرکزی خلیفہ جماعت المسلمین بھٹکل کے نئے صدر منتخب

مرکزی خلیفہ جماعت المسلمین بھٹکل  کے نائب صدرجناب ایس ایم سید محی الدین مارکیٹ صاحب اب مرکزی خلیفہ جماعت المسلمین بھٹکل کے  صدر منتخب ہوئے ہیں۔ پیر کو جماعت کے دفتر میں منعقدہ انتظامیہ میٹنگ میں  انہیں اس عہدہ کےلئے بالاتفاق رائے منتخب کیا گیا۔ یاد رہے کہ خلیفہ جماعت ...

کاروار میں کووڈ ٹیکہ مہم کا افتتاحی پروگرام : ہر ایک ٹیکہ لگوائیں اور اپنی جان کی حفاظت کریں : روپالی نائک

کورونا پر قابو پانے کے لئے حکومتیں کام کررہی ہیں، ملک بھر میں 21جون سے شروع ہوئے مفت کووڈ ٹیکہ مہم میں ہرایک ٹیکہ لگاتے ہوئے اپنی جان کی حفاظت کا سامان کرنے کی رکن اسمبلی روپالی نائک نے عوام سے اپیل کی۔