بھٹکل تعلقہ انتظامیہ اور سابق ایم ایل اے کے تعاون سے کیا گیا مہاجر مزدوروں کی روانگی کا انتظام

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 26th May 2020, 2:26 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 26/مئی (ایس او نیوز) اوڈیشہ اور جھار کھنڈ کے سیکڑوں مزدور جو ماہی گیری اور دیگر سرگرمیوں میں خدمات انجام دے رہے تھے اور لاک ڈاؤن کی وجہ سے پریشان تھے ان کو اپنے گھروں کے لئے روانہ کرنے کا انتظام بھٹکل تعلقہ انتظامیہ اور سابق ایم ایل اے منکال وئیدیا کی جانب سے کیا گیا۔

 مہاجر مزدوروں کو ان کے گھر جانے کا انتظام کرنے کے لئے سرکاری احکام کے مطابق اس سے پہلے بھی تعلقہ انتظامیہ نے سیکڑوں مزدوروں کو ہبلی ریلوے اسٹیشن تک پہنچانے کا انتظام کیاتھا۔اب 25تاریخ کو پھر ایک بار تعلقہ انتظامیہ کی جانب سے کے ایس آر ٹی سی بسوں کے ذریعے 118مزدوروں کو منگلورو ریلوے اسٹیشن کے لئے روانہ کیا گیا، جہاں سے وہ لوگ ٹرین کے ذریعے جھارکھنڈ کے لئے سفر کریں گے۔

 ان مزدروں کو روانگی سے قبل بھٹکل پرانے بس اسٹانڈ کے قریب جمع کرکے تھرمل اسکریننگ کی گئی اور اس کے بعد بسوں میں سوار کیا گیا۔ اس موقع پر بھٹکل تحصیلدارایس روی چندرا اور نوڈل آفیسر شمس الدین، لیبر ڈپارٹمنٹ کی آفیسر ریکھا نائک، محکمہ ماہی گیری کے آفیسرچیتن اور ٹاؤن پولیس سب انسپکٹر بھرت وغیر ہ موجود تھے۔

اسی طرح ماہی گیر کشتیوں میں خدمات انجام دینے والے اوڈیشہ کے باشندوں کو ان کے اپنے گاؤں روانہ کرنے کے لئے سابق ایم ایل اے منکال وئیدیا نے نجی بسوں کاانتظام کیا۔دور دراز علاقے سے آنے والے یہ مزدور بھٹکل تعلقہ کے تینگن گنڈی، الوے کوڈی جیسے بندروں پر ماہی گیری کررہے تھے مگر لاک ڈاؤن کے بعد  کام نہ ہونے اور کھانے پینے کے علاوہ رہنے کا انتظام نہ ہونے سے پریشان تھے۔ ان کے لئے عبوری طور پر ایک شیڈ میں رہنے کا انتظام کیا گیا تھا۔ جب ان کی حالت زار سابق ایم ایل اے منکال وئیدیا کے علم میں لائی گئی تو انہوں نے دو نجی بسوں کو انتظام کیااور ان تمام71مزدورو ں کو ان بسوں کے ذریعے ان کے گاؤں کی طرف روانہ کردیا گیا۔روانگی سے قبل تمام مزدوروں کی تھرمل اسکریننگ کی گئی۔اس موقع پر ماہی گیر بندر کے سپرنٹنڈنٹ روی جالی اور جالی پٹن پنچایت کے سابق صدر عبدالرحیم وغیر ہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

کورونا سے اُڈپی میں مرنے والوں کی تعداد ہوگئی 6؛ بھٹکل میں بھی ایک شخص کی موت

جمعرات کو اُڈپی میں مزید ایک شخص کی کورونا سے موت واقع ہونے کے بعد ضلع میں کورونا سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 6 ہوگئی ہے۔ اسی طرح بدھ کی شب کو بھٹکل میں بھی ایک شخص کی موت واقع ہونے کی خبر  موصول ہوئی ہے جس کی رپورٹ آج جمعرات کو کورونا پوزیٹیو آنے کی اطلاع ملی ہے۔اس طرح بھٹکل ...

مینگلور : دکشن کنڑا میں ایک ہفتہ تک جاری رہنے والے لاک ڈاون کا آج سے ہوا نفاذ، راستے سنسان، دکانیں بند، عام زندگی مفلوج

کورونا کے بڑھتے معاملات اور روز بروز اضافہ کو دیکھتے ہوئے  ایک ہفتہ طویل لاک ڈاون کا آج  سے مینگلور سمیت دکشن کنڑا ضلع میں نفاذ عمل میں آیا جس کے دوران شہر کی سڑکیں سنسان اور بہت زیادہ چہل پہل والے علاقوں میں بھی سناٹا نظر آیا۔ 

بنگلورکے ساتھ ساتھ ساحلی کرناٹکا میں کورونا کا قہر جاری؛ اُترکنڑا میں 76 معاملات؛ بھٹکل میں پھر ایک شخص کی موت

ریاست کرناٹک بالخصوص بنگلور میں کورونا کا قہر جاری ہے مگر ساحلی کرناٹکا میں بھی کورونا کے معاملات رُکنے کا نام نہیں لے رہے ہیں، ایک طرف آج ضلع اُترکنڑا میں کورونا کے 76 معاملات سامنے آئے تو وہیں پڑوسی ضلع اُڈپی میں 52 اور دکشن کنڑا میں 76 پوزیٹیو کیسس کی تصدیق ہوئی ہے۔

کورونا سے اُڈپی میں مرنے والوں کی تعداد ہوگئی 6؛ بھٹکل میں بھی ایک شخص کی موت

جمعرات کو اُڈپی میں مزید ایک شخص کی کورونا سے موت واقع ہونے کے بعد ضلع میں کورونا سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 6 ہوگئی ہے۔ اسی طرح بدھ کی شب کو بھٹکل میں بھی ایک شخص کی موت واقع ہونے کی خبر  موصول ہوئی ہے جس کی رپورٹ آج جمعرات کو کورونا پوزیٹیو آنے کی اطلاع ملی ہے۔اس طرح بھٹکل ...

بنگلورو میں ایک ہفتہ طویل لاک ڈاؤن، سڑکیں سنسان، راستوں سے سواریاں غائب

بنگلورو میں جہاں ایک ہفتہ طویل لاک ڈاؤن نافذ کردیا گیا ہے، سڑکیں  سنسان رہیں اور راستوں پر لوگوں کی نقل و حرکت بھی بہت کم رہی۔ کورونا وائرس کیسس میں اضافہ کے پیش نظر حکومت کرناٹک نے مذکورہ لاک ڈاؤن نافذ کیا ہے۔