جلد ہی دہلی کا اپنا تعلیمی بورڈہوگا:منیش سسودیا

Source: S.O. News Service | Published on 10th September 2019, 10:00 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،10ستمبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے کہا کہ جلد ہی دہلی کا اپنا تعلیمی بورڈ ہوگا لیکن وہ سی بی ایس کی جگہ نہیں لے گا، بلکہ یہ اگلی نسل کا بورڈ ہوگا جو جی ای،نیٹ جیسے داخلہ امتحانات کی تیاریوں میں طالب علموں کی مددکرے گا۔نائب وزیراعلیٰ نے کہاہے کہ دہلی حکومت بورڈ کو ایسے طور پر دیکھتی ہے جو موجودہ حالات کی تشخیص کرے۔موجودہ میں طالب علم اسکولوں کی مددسے بورڈ امتحانات کی تیاری، لیکن انہیں انجینئرنگ اور میڈیکل کاداخلہ امتحان پاس کرنے کے لیے کوچنگ سینٹروں کاسہارالینا پڑتاہے۔منیش سسودیا نے کہاکہ یہ المیہ ہے کہ ہلی میں کوئی تعلیمی بورڈنہیں ہے۔ہم دہلی کو اپنا تعلیمی بورڈ دینے کی تیاری کر رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ ہم نے2015 میں اس کے بارے میں سوچنا شروع کر دیا اور اس پر کام کرنا بھی شروع کر دیاہے۔لیکن جب ہم نے عمارتوں کی حالت دیکھی اور کلاسوں میں تعلیم کے ماحول کو محسوس کیا تو ہمیں لگا کہ نیابورڈبنانے کی بجائے پہلے بنیادی ڈھانچہ کو بہتر بنانے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ دہلی کا اپنا تعلیمی بورڈ بنانے کا وقت آ گیا ہے۔منیش سسودیا نے کہاکہ حکومت اس پر کام کر رہی ہے۔یہ سی بی ایس کی جگہ نہیں لے گابلکہ نئی نسل کا بورڈہوگا۔یہ بورڈ اور اس کا کورس کیسا ہوگا، اس کے بارے میں انہوں نے کہاہے کہ سرکارمختلف موضوعات پر مختلف گریڈ دینے کا ارادہ رکھتی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

راجیہ سبھا میں کانگریس نے گاندھی خاندان کی ایس پی جی سیکورٹی بحال کا مطالبہ کیا

راجیہ سبھا میں بدھ کو کانگریس نے سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ اور کانگریس صدر سونیا گاندھی، پارٹی کے سابق صدر اور رہنما راہل گاندھی اور پارٹی کے جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی کی ایس پی جی سیکورٹی واپس لئے جانے کا معاملہ اٹھایا۔

ہوم گارڈ ڈیوٹی گھوٹالہ: فرضی ڈیوٹی دکھا کروصولی کر رہے تھے ہوم گارڈ افسر،گرفت میں آئے تو جلادئیے دستاویز

گوتم بدھ نگر کے گریٹر نوئیڈا میں ایک بڑے گھوٹالے کے تمام دستاویزات کو جلا کر راکھ کر دیا گیا۔گھوٹالہ یہ تھا کہ ضلع میں ہوم گارڈ کی ڈیوٹی میں فرضی انٹری دکھائی جا رہی تھی،

جے این یو پر بہار کے ڈپٹی سی ایم سشیل مودی بولے، کیمپس میں بیف پارٹی کرنے والے شہری نکسلی غریب طالب علموں کو کررہے ہیں گمراہ

جواہر لالو نہرو یونیورسٹی (جے این یو) میں اضافی فیس کے خلاف چل رہے مظاہرے پر بہار کے نائب وزیر اعلی سشیل کمار مودی نے ٹویٹ کر کے مخالفت کا اظہار کیا ہے۔