دہلی فسادات: دو سال سے قید طلبا لیڈر گلفشاں فاطمہ کی عرضی پر ہائی کورٹ کا دہلی حکومت کو نوٹس

Source: S.O. News Service | Published on 11th May 2022, 11:36 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،11؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) دہلی ہائی کورٹ نے بدھ کے روز 2020 کے دہلی فسادات کے معاملہ میں طلبا لیڈر ایکٹیوسٹ گلفشاں فاطمہ کی عرضی پر دہلی حکومت سے جواب طلب کیا۔ ہائی کورٹ نے فاطمہ کی اس اپیل پر دہلی حکومت سے جواب طلب کیا ہے، جس میں ذیلی عدالت کے اس حکم کو چیلنج کیا گیا ہے، جس میں 2020 میں ہونے والے دہلی فسادات کے پیچھے مبینہ بڑی سازش کا حوالہ دیتے ہوئے ان کی درخواست ضمانت منطور کرنے سے انکار کر دیا گیا تھا۔

جسٹس سدھارتھ مردول اور جسٹس رجنیش بھٹناگر کی بنچ نے اس معاملہ میں نوٹس جاری کرتے ہوئے آئندہ سماعت کے لئے 14 جولائی کی تاریخ مقرر کی ہے۔ گلفشاں فاطمہ کو فروری 2020 میں شمال مشرقی دہلی میں ہونے والے تشدد کے سلسلہ میں گرفتار کیا گیا تھا۔ سماعت کے دوران عرضی گزار کے وکیل نے کہا کہ وہ دو سال سے زیادہ عرصہ سے جیل میں قید ہیں۔

پولیس کی ایف آئی آر کے مطابق فاطمہ نے مبینہ طور پر لوگوں کے ایک غیرقانونی مجمع کو مشتعل کیا تھا، جس کے بعد جعفرآباد علاقہ میں فسادات برپا ہو گئے۔ فاطمہ پر غیرقانونی سرگرمیاں (انسداد) قانون کے تحت الزام عائد کیا گیا ہے۔

دہلی پولیس نے جو چارج شیٹ داخل کی ہے اس میں دہلی یونیورسٹی کی پروفیسر ماہر اقتصادیات جینتی گھوش، سماجی کارکن اپوروانند اور ڈاکیومنٹری فلم کے تخلیق کار راہل رائے کے نام شامل ہیں۔ جے این یو کے سابق طالب علم عمر خالد، یونائیٹڈ اگینسٹ ہیٹ کے کارکن خالد سیفی، کانگریس کی سابق کونسلر عشرت جہاں، عآپ کے سابق کونسلر طاہر حسین اور آر جے ڈی یوتھ ونگ کے میران حیدر سمیت دیگر اہم ملزمان کو مبینہ سازش کرنے کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

حجاب کیس: ججوں کو دھمکیاں دینے والے شخص کی درخواست ضمانت مسترد

بنگلورو کی ایک سیشن عدالت نے تمل ناڈو کے ترونیل ویلی سے تعلق رکھنے والے رحمت اللہ کی ضمانت کی درخواست مسترد کر دی ہے، جو حال ہی میں کلاس رومز میں حجاب پہننے پر فیصلہ سنانے والے کرناٹک ہائی کورٹ کے ججوں کی جان کو مبینہ طور پر خطرے میں ڈالنے کے الزام میں عدالتی حراست میں ہے۔ سٹی ...

اب کارڈ کے بغیر بھی اے ٹی ایم سے رقم نکالنا ہوا ممکن

آر بی آئی نے نیا اصول نافذ کر دیا ہے۔ اگر آپ کے پاس بینک کارڈ نہیں ہے اور آپ اے ٹی ایم سے رقم نکالنا چاہتے ہیں، تب بھی نکال سکتے ہیں۔ آر بی آئی نے تمام بینکوں سے کہا ہے کہ وہ کارڈ استعمال کیے بغیر رقم نکالنے کی سہولت فراہم کریں۔ تاہم،ایس بی آئی سمیت کچھ منتخب بینک پہلے ہی یہ سہولت ...

بھٹکل تعلقہ میں بارش سے پیش آنے والے حادثات کے موقع پر فوری کارروائی کے لئے نوڈل افسران نامزد

سال 2022کےمانسون  بارش کے دوران بھٹکل تعلقہ میں پیش آنے والے سماوی حادثات کے موقع پر فوری توجہ دیتے ہوئے امداد پہنچانے اور تعلقہ کی مکمل نگرانی کی سخت ضرورت  رہتی ہے۔تعلقہ میں موسلادھار یا تیز بارش کی وجہ سے عوام کو ہونے والی مشکلات و پریشانی ، جانی ، مالی ،جانوراور فصل کے ...

اب کارڈ کے بغیر بھی اے ٹی ایم سے رقم نکالنا ہوا ممکن

آر بی آئی نے نیا اصول نافذ کر دیا ہے۔ اگر آپ کے پاس بینک کارڈ نہیں ہے اور آپ اے ٹی ایم سے رقم نکالنا چاہتے ہیں، تب بھی نکال سکتے ہیں۔ آر بی آئی نے تمام بینکوں سے کہا ہے کہ وہ کارڈ استعمال کیے بغیر رقم نکالنے کی سہولت فراہم کریں۔ تاہم،ایس بی آئی سمیت کچھ منتخب بینک پہلے ہی یہ سہولت ...

کانگریس ’شیور‘ کے بعد مرکزی حکومت کو دباؤ میں پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کو گھٹانے کا فیصلہ کرنا پڑا: اشوک گہلوت

راجستھان کے وزیر اعلی اشوک گہلوت نے کہا ہے کہ کانگریس کی طرف سے مہنگائی کے خلاف احتجاج اور اور ادے پور میں اس کے نوسنکلپ شیور کےعوامی بیداری مہم کے دباؤ میں مرکزی حکومت کو پٹرول اور ڈیزل پر ایکسائز ڈیوٹی کو کم کرنے کا فیصلہ کرنا پڑا۔

مدھیہ پردیش: مسلم ہونے کے شبہ میں جین بزرگ کا پیٹ پیٹ کر قتل

مدھیہ پردیش کے رتلام ضلع میں بزرگ کا پیٹ پیٹ کر قتل کیے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ الزام ہے کہ ضلع کے سب سے بزرگ سرپنچ پستا بائی چتّر کے بڑے بیٹے بھنور لال جین کو مسلمان ہونے کے شبہ میں موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔