طاق-جفت پرکجریوال بولے ضرورت پڑی تو بڑھائیں گے، سپریم کورٹ نے دہلی حکومت سے مانگا ایئر کوالٹی انڈیکس ڈیٹا

Source: S.O. News Service | Published on 13th November 2019, 8:51 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،13نومبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) دہلی میں طاق-جفت اگلے چند دنوں کے لئے بڑھا یاجا سکتا ہے۔سی ایم اروندکجریوال نے آج کہا کہ ضرورت پڑنے پر طاق-جفت بڑھا یاجا سکتا ہے۔دارالحکومت میں 15 نومبر تک فی الحال یہ منصوبہ قابل عمل ہے، لیکن آلودگی کی سطح اب بھی خطرناک سطح پر ہے۔اس دوران سپریم کورٹ نے بھی طاق-جفت منصوبہ بندی کے خلاف سپریم کورٹ میں داخل عرضی پر سماعت کرتے ہوئے دہلی حکومت کو نوٹس جاری کرکے ایئر کوالٹی انڈیکس پر جواب مانگا ہے۔

دہلی میں فضائی آلودگی سے متعلق کیس پر بھی آج عدالت عظمی میں سماعت ہوئی۔سپریم کورٹ نے دہلی حکومت سے طاق-جفت کے دوران 14 نومبر تک ہوا کے معیار کو لے کر جواب مانگا۔کورٹ نے حکومت سے ایئر کوالٹی انڈیکس کا طاق-جفت منصوبہ کے پہلے دن سے لے کر 14 نومبر تک کے درمیان تک ڈیٹاشیئر کرنے کے لئے کہا گیا ہے۔اس کے ساتھ ساتھ عدالت عظمی نے گزشتہ سال 1 اکتوبر سے 31 دسمبر کے درمیان تک ایئر کوالٹی انڈیکس ڈیٹا شیئر کرنے کا حکم دیا ہے۔بتا دیں کہ کچھ دنوں کی راحت کے بعد دہلی این سی آر کی ہوا ایک بار پھر ایمر جنسی کی سطح سے تجاوز کر گئی۔اگلے دو دنوں تک صورت حال اور بگڑنے کا امکان ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سی بی ایس ای طلباء کو راحت، 9؍ویں سے 12؍ ویں کے نصاب میں 30 فیصد تخفیف

کووڈ-19 کے بڑھتے معاملات کے درمیان اسکول کے نہ کھل پانے کی وجہ سے نظام تعلیم پر اثر اور کلاسز کے اوقات میں بھی آئی کمی کے پیش نظر سی بی ایس ای نے منگل کو تعلیمی سال 21-2020 کے لئے 9ویں -12ویں کا نصاب 30 فیصدی تک کم کر دیا ہے۔

کورونا انفیکشن: ہندوستان ہوا بے حال، مریضوں کی تعداد تقریباً 7.5 لاکھ، مہلوکین 20642

 ہندوستان میں کورونا کا قہر لگاتار بڑھتا ہی چلا جا رہا ہے۔ گزشتہ کچھ دنوں سے روزانہ 20 ہزار سے زائد نئے مریض سامنے آ رہے ہیں اور مہلوکین کی تعداد میں بھی 400 سے 500 کے درمیان درج کی جا رہی ہے۔ تازہ ترین خبروں کے مطابق ہندوستان میں کورونا متاثرہ افراد کی کل تعداد 7.42 لاکھ اور ہلاکتوں ...