نیشنل اسٹاک ایکسچینج کو-لوکیشن گھوٹالہ معاملہ میں چترا رام کرشن اور آنند سبرامنیم کو دہلی ہائی کورٹ سے ملی ضمانت

Source: S.O. News Service | Published on 28th September 2022, 9:30 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 28؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) دہلی ہائی کورٹ نے نیشنل اسٹاک ایکسچینج (این ایس ای) کو-لوکیشن گھوٹالہ معاملے میں گرفتار سابق چیف ایگزیکٹیو افسر چترا رام کرشن اور سابق گروپ آپریٹنگ افسر آنند سبرامنیم کو ضمانت دے دی ہے۔ اس گھوٹالے کی سی بی آئی کے ذریعہ جانچ کی جا رہی ہے۔

دراصل این ایس ای میں بے ضابطگیوں کو لے کر 2018 میں ہی کیس درج کیا گیا تھا۔ اس میں الزام لگایا گیا تھا کہ این ایس ای نے ہائی فریکوئنسی ٹریڈرس کو غیر قانونی طریقے سے سرور کے نزدیک ٹریڈنگ کی اجازت دی تھی۔ اس معاملے میں سی بی آئی نے چترا رام کرشن اور آنند سبرامنیم سے پوچھ تاچھ کی۔ 6 مارچ 2022 کو سی بی آئی نے نچلی عدالت کے ذریعہ چترا رام کرشن کی ضمانت عرضی خارج کیے جانے کے بعد انھیں گرفتار کیا تھا۔ شیئر بازار کے ریگولیٹر سیبی نے اس معاملے میں نیشنل اسٹاک ایکسچینج کے ذریعہ کارپوریٹ گورننس کی خلاف ورزی بتایا تھا۔

سیبی کے مطابق چترا رام کرشن نے این ایس ای کے خفیہ ڈاٹا کو باہری شخص کے ساتھ شیئر کیا تھا۔ چترا رام کرشن پر بغیر کسی تجربہ کے آنند سبرامنیم کو مشیر بنانے کا بھی الزام ہے۔ سی بی آئی اس معاملے میں گزشتہ 4 سال سے جانچ کر رہی تھی۔ سی بی آئی نے 25 فروری کو آنند سبرامنیم کو گرفتار کر لیا تھا۔

واضح رہے کہ این ایس ای کو-لوکیشن کا مطلب ہے بروکریج ہاؤس اپنے سرور ایکسچینج کو این ایس ای کے سرور سے نزدیک رکھتے ہیں۔ اس کے سبب بروکریج ہاؤس کے رکن بہت تیزی سے این ایس ای کے سرور کو ایکسیس کر سکتے ہیں۔ اس سے انھیں خریدنے اور بیچنے کے آرڈر جلدی جلدی پلیس کرنے میں مدد ملتی ہے۔ کئی بروکریج ہاؤس ہیں جنھوں نے یہ کو-لوکیشن کی سہولت چنی ہیں۔ سیبی کو 2015 میں ایک بروکر سے شکایت ملی کہ کو-لوکیشن سہولت لینے والے باقی لوگوں کے مقابلے کچھ لوگوں کو زیادہ جلدی ڈاٹا مل رہا تھا جو کو-لوکیشن کے اصولوں کے خلاف ہے۔ کو-لوکیشن میں ڈاٹا ایکسیس ہر رکن کے لیے شفاف اور برابر ہونا چاہیے۔

اس شکایت کے بعد ہی سیبی نے جانچ شروع کی۔ جانچ میں پتہ چلا کہ این ایس ای نے اراکین کے درمیان تفریق کی ہے۔ سیبی کی جانچ میں یہ بات سامنے آئی کہ کمپنی کے سی ای او روی نارائن اور چترا رام کرشن کی مدت کار میں سب سے زیادہ بے ضابطگیاں ہوئی ہیں اور اس کے لیے یہ دونوں ذمہ دار ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا اندور سے برولی پہنچی

 کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا چھٹے دن آج صبح اندور سے مدھیہ پردیش کے برولی گاؤں کی طرف روانہ ہوئی۔ ان کے ساتھ کانگریس کے درجنوں سینئر رہنما اورافسران کے علاوہ ہزاروں کارکنان بھی موجود ہیں۔

مہاراشٹر میں ریلوے فٹ اوور برڈج کاحصہ گرپڑا 20افراد سے زیادہ زخمی،8کی حالت تشویشناک

) مہاراشٹر کے چندر پور میں بلارشاہ ریلوے اسٹیشن پر فٹ اوور برڈج کا ایک حصہ گرنے سے ایک بڑا حادثہ پیش آیا- کئی مسافر تقریباً 60فٹ کی بلندی سے پٹری پر پل سے گر گئے- حادثے میں 20مسافر زخمی ہو گئے-8 افراد کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے-

گجرات کے نوجوان نوکریاں دینے کے جھانسے کو سمجھ چکے ہیں: ملکارجن کھرگے

کانگریس کے صدر ملکارجن کھڑگے نے اتوار کے روز بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کے نام پر صرف جھانسہ دینے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ گجرات کے نوجوان اس کی اصلیت کو سمجھ چکے ہیں اور اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو اس کا مناسب جواب ملے گا۔

راہل گاندھی نے 'بھارت جوڑو یاترا' میں چلائی بلیٹ موٹر سائیکل، پدیاترا میں انہیں دیکھنے کے لیے امڈا جم غفیر

مدھیہ پردیش میں کانگریس کی 'بھارت جوڑو یاترا' جاری ہے۔ پدیاترا میں کافی بھیڑ جمع ہو رہی ہے۔ روزانہ ہزاروں کی تعداد میں لوگ پد یاترا میں شامل ہو رہے ہیں۔ راہل گاندھی کو آج 'بھارت جوڑو یاترا' کے دوران بلٹ موٹر سائیکل چلاتے ہوئے دیکھا گیا۔ اس جی تصاویر اور ویڈیوز منظر عام پر آگئی ...

مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ حکومت عوام کو دے رہی ’انتخابی دھوکہ‘:میناکشی نٹراجن

حال ہی میں صدر دروپدی مرمو نے مدھیہ پردیش میں دو دن کا قیام کیا۔ ریاستی حکومت کی طرف سے شہڈول ضلع کے لال پور میں برسا منڈا جینتی کے موقع پر منعقدہ ’آدیواسی گورو دیوس‘ میں مدھیہ پردیش 'پی ای ایس اے' اصول کے باضابطہ نفاذ کا اعلان کیا گیا۔