سی وی سی کی سفارش پر چھٹی پر گئے تھے سی بی آئی کے سینئر افسر:ارون جیٹلی

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 9th January 2019, 12:07 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی:8/جنوری (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)  وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے منگل کو کہا کہ سی بی آئی کے دو سینئر افسران کو چھٹی پر بھیجنے کا حکومت کا فیصلہ مرکزی ویجلنس کمیشن (سی وی سی)کی سفارش پر لیا گیا تھا۔سپریم کورٹ کی طرف سے سی بی آئی ڈائریکٹر آلوک ورما کو عہدے پر بحال کرنے کا فیصلہ سنائے جانے کے بعد پارلیمانی احاطے میں نامہ نگاروں سے جیٹلی نے کہا کہ حکومت عدالت کے احکامات کی تعمیل کرے گی۔ورما اور سی بی آئی کے اسپیشل ڈائریکٹر راکیش استھانہ کو چھٹی پر بھیجے جانے کے فیصلے کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت نے یہ فیصلہ سی بی آئی کی خودمختاری کو بچائے رکھنے کے لئے کیا،حکومت نے سی بی آئی کے دو سینئر افسران کو چھٹی پر بھیجنے کی کارروائی سی وی سی کی سفارش پر کی گئی تھی ۔جیٹلی نے کہا کہ سی بی آئی کی غیر جانبدارانہ اور امتیاز سے صاف طریقہ کار کے وسیع مفاد کو دیکھتے ہوئے عدالت نے واضح طور پر سی بی آئی ڈائریکٹر کو ملی سیکورٹی کو مضبوط کیا ہے۔وہیں عدالت نے احتساب کے نظام کا راستہ بھی نکالا ہے،عدالت کی ہدایات کو ضرور یقینی بنایا جائے گا۔ورما کے حقوق واپس لے لینے کے مرکز کو فیصلے کو درکنار کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے ورما کی بحالی کر دی لیکن ان پر لگے بدعنوانی کے الزامات کی سی وی سی کی انکوائری ختم ہونے تک انہیں کوئی بھی بڑا پالیسی فیصلہ لینے سے روک دیا۔سپریم کورٹ نے کہا کہ ورما کے خلاف کسی بھی فیصلے کو بااختیار کمیٹی کی طرف سے لیا جاسکتا ہے جو سی بی آئی ڈائریکٹر کا انتخاب کرتا ہے۔واضح رہے کہ ورما کو 23اکتوبرکو مرکزی حکومت کے فیصلے کے بعدچھٹی پربھیج دیا گیا تھا اوروہ 31جنوری کو ریٹائرمنٹ بھی ہونے والے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بابری مسجد ملکیت کا معاملہ؛ مقدمہ کی سماعت آخری مرحلے میں، ایڈوکیٹ ڈاکٹر راجیو دھون پیر کو کریں گے بحث ؛ 17 اکتوبر تک تمام فریقین کو بحث مکمل کرنے کے احکامات

بابری مسجد حق ملکیت معاملہ کی سماعت کل پیر سے ایک بار پھرشر وع ہونے جارہی ہے، حتمی بحث کا یہ 38 واں دن ہوگا جس کے دوران سوٹ نمبر 4 پر مسلمانوں کی نمائندگی کرنے والے  وکیل ڈاکٹر راجیو دھون اپنی نا مکمل بحث کا آغاز کریں گے۔گذشتہ ایک ہفتہ سے دسہرے کی تعطیلات کی وجہ سے عدالت کی ...

سول سوسائٹی کے ارکان کے ساتھ مل کر جماعت اسلامی ہند وفد کا کشمیر دورہ، کشمیر کے مسائل پر عام لوگوں سے کی گفتگو

سول سوسائٹی اور جماعت اسلامی ہند کے   ذمہ داران پر مشتمل ایک وفدنے مورخہ7/ اکتوبر سے 10/ اکتوبر کے درمیان کشمیر کا دورہ کیا اور وہاں کے حالات کا جائزہ لینے کے بعد پریس ریلیز جاری کرتے ہوئے بتایا کہ ابھی بھی کشمیر میں عوام بے حد پریشان ہیں اور کئی مسائل کا سامناکررہے ہیں۔ ریلیز ...

’وعدے پورے نہیں کرنے والی بی جے پی کو ووٹ مانگنے کا کوئی حق نہیں‘: رامیشور راؤ

جھارکھنڈ ریاستی کانگریس کمیٹی کے صدر اور سابق ممبر پارلیمنٹ رامیشور راؤ نے الزام لگاتے ہوئے آج کہا ہے کہ ریاست کے وزیراعلی رگھوبر داس کی قیادت میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی حکومت گزشتہ پانچ برسوں میں وعدے پورے کرنے میں ناکام رہی ہے اس لئے اسے عوام سے ووٹ مانگنے کا کوئی ...

کانگریس رکن بننے پر فخر محسوس کر رہی ہوں: الکا لامبا

گزشتہ اسمبلی انتخابات میں دہلی کی چاندنی چوک سے عام آدمی پارٹی کے ٹکٹ پر اسمبلی پہنچنے والی الکا لامبا ہفتہ کو کانگریس میں واپس آگئیں۔ کانگریس کے پارٹی معاملات کے دہلی کے انچارج پی سی چاکو کی موجودگی میں محترمہ لامبا نے پارٹی کی رکنیت حاصل کی۔ کانگریس کی طلبا یونین کی تنظیم ...

کشمیر میں مواصلاتی پابندی، اہلیان کشمیر پر قہر سامانیوں کی داستان

وادی کشمیر میں گزشتہ زائد از دو ماہ سے موبائل فون اور انٹرنیٹ خدمات پر پابندی، جو ہنوز جاری ہے، کے دوران اہلیان وادی کو جن متنوع مصائب و گوناگوں مشکلات سے دوچار ہونا پڑا ان مصائب ومشکلات سے نصف صدی قبل کے لوگ بھی دوچار نہیں تھے۔