کرونا وائرس: سعودی عرب میں 2532 نئے کیسوں کا اندراج،12مریض چل بسے!

Source: S.O. News Service | Published on 22nd May 2020, 9:14 PM | خلیجی خبریں |

ریاض،22؍مئی(ایس او نیوز؍ایجنسی) سعودی عرب نے جمعرات کو گذشتہ 24 گھنٹے میں کرونا وائرس کے 2532 نئے کیسوں کے اندراج اور 12 اموات کی اطلاع دی ہے۔

وزارت صحت کے مطابق مملکت میں اب کرونا وائرس کے کیسوں کی کل تعداد 65077 ہوگئی ہے ۔ان میں سے 351 افراد وفات پاچکے ہیں۔وزارت نے دارالحکومت الریاض میں ایک مرتبہ پھر کرونا وائرس کے سب سے زیادہ 714 کیسوں کے اندراج کی اطلاع دی ہے۔اس کے بعد ساحلی شہر جدہ میں 390 متاثرہ کیسوں کی تصدیق ہوئی ہے۔ دوسرے کیس سعودی عرب کے دوسرے شہروں اور صوبوں میں رپورٹ کیے گئے ہیں۔

وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر محمد العبد العالی کے مطابق کووِڈ-19 کے نئے کیسوں میں 27 فی صد خواتین اور 73 فی صد مرد حضرات ہیں۔انھوں نے ان کی قومیتوں کی تفصیل بھی بتائی ہے اور کہا ہے کہ ان میں 39 فی صد مریض سعودی شہری ہیں جبکہ 61 فی صد غیر سعودی یعنی تارکین وطن ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ اب تک کل متاثرہ کیسوں میں 36040 مریض مکمل صحت یاب ہوچکے ہیں اور 28686 فعال کیس موجود ہیں۔ ان میں 281 کی حالت تشویش ناک ہے۔

ڈاکٹر العبد العالی نے شہریوں اور مکینوں پر زوردیا ہے کہ وہ کرونا سے بچاؤ کے لیے حفاظتی احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد جاری رکھیں اور باہمی میل ملاقاتوں اور روابطہ میں مجوزہ فاصلہ اختیار کریں۔

سعودی وزارت داخلہ نے گذشتہ ہفتے پانچ سے زیادہ افراد کے اجتماع پر پابندی عاید کردی تھی اور 23 سے 27 مئی تک عیدالفطر کی تعطیلات کے موقع پر ملک بھر میں مکمل لاک ڈاؤن اور کرفیو کا اعلان کیا تھا۔

وزارت داخلہ کے اعلامیے کے مطابق شاپنگ مالوں یا دکانوں میں خریداروں اور عملہ کے ارکان کو جمع ہونے کی اجازت نہیں ہوگی۔وہ مقررہ فاصلے کی حد کی خلاف ورزی کرکے خریداری نہیں کرسکیں گے یعنی شاپنگ مالوں میں گاہکوں کے درمیان دو میٹر کا فاصلہ یقینی بنایا جایا چاہیے۔اس کی خلاف ورزی کے مرتکبین کو جرمانے اور دوسری سزاؤں کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے اور تارکینِ وطن کو سعودی عرب سے بے دخل بھی کیا جاسکتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سعودی عرب کی حکومت کا اہم فیصلہ

سعودی پبلک پراسیکیوشن نے قانون تحفظ اطفال کے حوالے بعض نکات کی وضاحت کی ہے، جس کے مطابق بچوں کے ساتھ کیے جانے والے غیر قانونی سلوک پر سخت سزائیں دی جائیں گی۔ ...

مطافِ کعبہ میں تنہا دعا کرنے والی دنیا کی خوش قِسمت خاتون

کورونا وائرس کی وَبا کے پیش نظر اس مرتبہ حج کے ایّام میں بعض بڑے نادر اور منفرد واقعات پیش آئے ہیں جن کا عام حالات میں تصور بھی ممکن نہیں۔ ایسے واقعات میں تازہ اضافہ ایک تنہا مسلم خاتون کی کعبۃ اللہ کے سامنے عبادت وریاضت ہے اور ان کے ساتھ مطاف میں کوئی دوسرا فرد نظر نہیں آرہا ہے۔

ترکی عرب امور میں مداخلت سے باز رہے: متحدہ عرب امارات کا انتباہ

متحدہ عرب امارات نے  لیبیا سے متعلق ترکی کے بیان کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ترکی کو کہا ہے کہ وہ عرب ممالک کے امور میں مداخلت کرنے سے باز رہے۔متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے سلطنت عثمانیہ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ترکی اب اس دور کی طرح کا رویہ اختیار ...