کرونا وائرس :سعودی عرب میں 4387 نئے کیسوں کی تشخیص ، 50 مریض چل بسے!

Source: S.O. News Service | Published on 30th June 2020, 10:54 PM | خلیجی خبریں |

ریاض،30؍جون(ایس او نیوز؍ایجنسی) سعودی عرب میں کوئی ایک ہفتے کے وقفے کے بعد ایک مرتبہ پھر کرونا وائرس کے یومیہ کیسوں کی تعداد میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے اور منگل کے روز وزارتِ صحت نے کووِڈ-19 کے 4387 نئے کیسوں کی تشخیص کی اطلاع دی ہے جبکہ پہلے سے اس مرض کا شکار 50 افراد وفات پاگئے ہیں۔

وزارتِ صحت کے مطابق اب مملکت میں کرونا وائرس سے وفات پانے والوں کی تعداد 1649 ہوگئی ہے اور اس وَبا کا شکار مریضوں کی تعداد 190823 ہوگئی ہے۔

وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر محمد العبد العالی نے ایک مرتبہ پھر کہا ہے کہ کرونا وائرس کے کیسوں میں اضافے کی بڑی وجہ لوگوں کا حفاظتی احتیاطی تدابیر کی پاسداری نہ کرنا ہے اور وہ بالخصوص سماجی فاصلے کے ضابطے کی پاسداری نہیں کررہے ہیں۔

انھوں نے شہریوں پر زوردیا ہے کہ وہ کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے حفاظتی احتیاطی تدابیر کی پاسداری کریں، سماجی فاصلہ اختیار کریں اور ہر وقت ماسک پہن کر رکھیں تاکہ اس مہلک وائرس کو پھیلنے سے روکا جاسکے۔

ترجمان نے بتایا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹے میں الہفوف شہر میں کووِڈ-19 کے سب سے زیادہ 980 کیس ریکارڈ کیے گئے ہیں۔ دارالحکومت الریاض میں 342 ، المبرز میں 323اور الدمام میں 308 نئے کیسوں کی تشخیص ہوئی ہے۔باقی کیس سعودی عرب کے دوسرے شہروں اور صوبوں میں ریکارڈ کیے گئے ہیں۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس کے یومیہ کیسوں کی تعداد میں اضافے کے باوجود تن درست ہونے والے مریضوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہورہا ہے۔ڈاکٹر العبد العالی نے آج کووِڈ-19 کے مزید 3648 مریضوں کے تن درست ہونے کی اطلاع دی ہے۔اس طرح اب صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 130766 ہوگئی ہے جبکہ 30 جون کو مملکت میں کووِڈ-19 کے فعال کیسوں کی تعداد 58408 تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاض معاہدے پرعمل درآمد پرغور کیلئے یمنی وفد کی سعودی عرب آمد

یمن کی آئینی حکومت اور عدن کی عبوری انقلابی کونسل کے درمیان جنگ بندی کے حوالے سے سعودی عرب کی کوششوں سے طے پائے معاہدے پرعمل درآمد پرغور کے لیے یمن کی اہم شخصیات پر مشتمل وفد الریاض پہنچ گیا ہے۔رپورٹ کے مطابق یمنی وفد مصر کے دارالحکومت قاہرہ سے الریاض پہنچا ہے۔ اس میں ...