مینگلور: ساحلی اضلاع دکشن کنڑا اور اُڈپی میں کورونا پر قابو پانے میں انتظامیہ اب تک ناکام؛ مینگلور میں آج سات لوگوں کی موت، 208 نئے معاملات

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 30th July 2020, 12:56 AM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

مینگلور 29 جولائی (ایس او نیوز) جس طرح ریاست کرناٹک میں کورونا وباء   قابو سے  باہر ہوتے جارہی ہے، ریاست کے بعض اضلاع میں بھی کورونا قابو میں آتی  نظر نہیں آرہی ہے۔  ایک طرف  بنگلور میں سب سے زیادہ  دو ہزار سے زائد معاملات ہر روز درج کئے جارہے ہیں، اسی طرح ساحلی اضلاع میں بھی کورونا پر قابو پانے میں انتظامیہ ناکام ثابت ہوتی نظر آرہی ہے جہاں ہر روز سو اوردو سو معاملات درج کئے جارہے ہیں۔

آج بدھ کو مینگلور میں کوویڈ معاملے میں  پھر سات لوگوں نے دم توڑا جس کے ساتھ ہی  یہاں کورونا سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 142 ہوگئی ہے جبکہ آج ایک ہی دن کورونا کے 208 معاملے درج کئے گئے ہیں۔

مینگلور میں آج جن لوگوں نے کورونا  اثرات کے ساتھ دیگر مرض میں مبتلا ہوکر انتقال کئے ہیں، اُن میں  پڈوبدری کے 52 سالہ شخص، بنٹوال کے 62 سالہ شخص، دھارواڑ کے 66 سالہ شخص، کاروار کے 66 سالہ شخص اور  مینگلور سے تعلق رکھنے والے تین لوگ 39 سالہ، 69 سالہ اور 73 سالہ شخص شامل ہیں۔

مینگلور میں تشویش کی بات یہ ہے کہ یہاں آج جو 208 معاملے سامنے آئے ہیں، اُس میں 58 لوگوں  کے بارے میں حکام یہ پتہ لگانے میں ناکام ہیں کہ کن لوگوں کے رابطے میں آنے سے ان کی رپورٹ پوزیٹیو آئی ہے۔ البتہ اس درمیان راحت کی خبر یہ ہے کہ آج ایک ہی دن 118 لوگ صحت یاب ہوکر وینلاک اور دیگر  اسپتالوں  سے ڈسچارج بھی ہوئے ہیں۔

ایک اور ساحلی ضلع    اُڈپی کی بات کریں تو آج اُڈپی میں ایک ہی دن 173 لوگوں کی رپورٹ کورونا پوزیٹیو آئی ہے،جبکہ تین لوگوں نے دم توڑا ہے۔ آج پوزیٹیو آنے والوں میں  95 لوگ اُڈپی تعلقہ کے ہیں، کنداپور سے 37 اور کارکلا سے 40 لوگ بھی شامل ہیں۔ محکمہ صحت کی طرف سے دی گئی اطلاع کے مطابق ضلع اُڈپی میں اب تک  کورونا کے معاملات کی تعداد بڑھ کر  3895 ہوگئی ہے جس میں ایکٹیو کیسس 1547 ہیں۔ اُڈپی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر ڈاکٹر سدھیر چندرا سوڈ کے مطابق  ضلع بھر میں 737 کورونا متاثرین کو ہوم ایسولیشن میں (گھروں میں ہی الگ تھلگ) رکھا گیا ہے۔ یاد رہے کہ ضلع اُڈپی میں اب کوویڈ  وائرس کے ساتھ دیگر مرض میں مبتلا ہوکر اب تک 28 لوگ  اپنی جانیں گنواچکے ہیں۔اُڈپی میں بھی راحت کی بات یہ  ہے کہ  آج ایک ہی دن اُڈپی سے 84 لوگ صحت یاب ہوکر اسپتال سے ڈسچارج بھی  ہوئے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کرناٹکا میں 'ٹاوکٹے' طوفان کی دستک ۔ محکمہ موسمیات نے جاری کیا 16 مئی تک ریڈ الرٹ

ساحلی کرناٹکا کی طرف  بڑھتے  'ٹاوکٹے' طوفان کے پیش نظرمحکمہ موسمیات نے 16مئی تک ریڈ الرٹ جاری کرتے ہوئے مچھیروں اور عوام الناس کو دریا، سمندراورنشیبی و ساحلی علاقوں سے دور رہنے کی ہدایت دی ہے۔

بھٹکل میں کورونا لاک ڈاون کے چلتے عید الفطر؛ مولانا خواجہ مدنی اور مولانا عبدالعلیم ندوی کا عوام کےنام عید کا پیغام؛ انکھوں سے نظر نہ آنے والے ایک چھوٹے سے جرثومہ کے آگے دنیا عاجز

بھٹکل سمیت ریاست کرناٹک کے ساحلی علاقوں  میں  کورونا لاک ڈاون کے چلتے کل جمعرات کو عید الفطر منائی جائے گی، جس کی وجہ سے  عید گاہ یا مساجد میں  نماز عید کی  ادائیگی کی اجازت نہیں ہے،  اسی طرح   لوگوں کو گھروں سے باہر نکل کر عید کی خوشیاں منانے سمیت  دوست احباب اور رشتہ داروں  ...

بھٹکل میں بڑھ رہے ہیں کورونا پوزیٹیو معاملات؛ آج ایک ہی دن 81 کی رپورٹ آئی پوزیٹو

بھٹکل سمیت ضلع اُترکنڑا میں  کورونا پوزیٹیو کے معاملات میں دن بدن اضافہ دیکھا جارہا ہے، جس سے ذمہ داران میں تشویش پائی جارہی ہے۔ آج بدھ کو ایک ہی دن بھٹکل میں کورونا پوزیٹیو کے 81 معاملات سامنے آئے ہیں  جس کے ساتھ ہی  کورونا کی دوسری لہر میں بھٹکل میں پوزیٹیو معاملات کی تعداد ...

بھٹکل سمیت اُڈپی، مینگلور اور کیرالہ میں آج 30 روزے مکمل؛ کل جمعرات کو منائی جائے گی عیدالفطر

  بھٹکل اور کمٹہ سمیت پڑوسی ضلع اُڈپی، دکشن کنڑا اور پڑوسی ریاست کیرالہ میں  آج بدھ کو  رمضان کے تیس روزے مکمل ہوگئے جس کے ساتھ ہی کل جمعرات  کو ان علاقوں میں عیدالفطر منائی جائے گی۔ جبکہ ملک کے دوسرے حصوں میں  آج 29 روزے مکمل ہورہے ہیں اوراگر آج شام کو چاند نظر آتا ہے    تو  ...

لوگ کورونا سے مرے جارہے ہیں اور ریاستی حکومت کو لگی ہے ذات پات کے اعداد و شمار کی فکر

پورے ملک کی طرح ریاست میں بھی کورونا کا قہر جاری ہے ۔ عوام آکسیجن، اسپتال میں بستر اور دوائیوں کی کمی سے تڑپ رہے ہیں۔ لیکن ریاستی حکومت کو الیکشن اور ذات پات کی تفصیلات کی فکر لاحق ہوگئی ہے تاکہ آئندہ انتخاب کے لئے تیاریاں مکمل کی جائیں۔

لوگ کورونا سے مرے جارہے ہیں اور ریاستی حکومت کو لگی ہے ذات پات کے اعداد و شمار کی فکر

پورے ملک کی طرح ریاست میں بھی کورونا کا قہر جاری ہے ۔ عوام آکسیجن، اسپتال میں بستر اور دوائیوں کی کمی سے تڑپ رہے ہیں۔ لیکن ریاستی حکومت کو الیکشن اور ذات پات کی تفصیلات کی فکر لاحق ہوگئی ہے تاکہ آئندہ انتخاب کے لئے تیاریاں مکمل کی جائیں۔

کورونا پر قابو پانے میں ایڈی یورپا مکمل طورپر ناکام: ایم بی پاٹل

ریاست میں کورونا وباء سے نمٹنے میں ایڈی یورپا کی بی جے پی حکومت مکمل ناکام ہوچکی ہے۔سابق ریاستی وزیر و مقامی بی ایل ڈی ای میڈیکل کالج کے سربراہ ایم بی پاٹل نے آج یہاں ایک اخباری کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئے ڈنکے کی چوٹ پر یہ بات بتائی۔

کرناٹک میں 120ٹن لکویڈ آکسیجن کی آمد

ریاست کرناٹک میں میڈیکل آکسیجن کی قلت ہنوز جاری ہے۔ حکومت آکسیجن منگوانے کی ہر ممکن کوشش کرنے کا دعویٰ کررہی ہے۔ ریاست کی راجدھانی بنگلورو میں پہلی آکسیجن ایکسپریس کی آمد ہوئی۔

کرناٹک لاک ڈاؤن:اب تک 19949گاڑیاں ضبط

ریاست   میں کوروناوائرس کے بے تحاشہ پھیلاؤ کے سبب ریاست گیرلاک ڈاؤن نافذکیاگیاہے،تاکہ کوروناپرقابوپاجائے۔لاک ڈاؤن کے دوران کسی بھی سوری کوسڑک پراترنے کی اجازت نہیں ہے۔اس قسم کی سختی کے باوجودبہت سارے لوگ گاڑیوں میں گھومتے ہوئے نظرآئے،خلاف ورزی کی پاداش میں پولیس سواریوں ...

تیجسوی سوریاریاست کیلئے زہریلابیج ہے:ڈی کےشیوکمار

ریاست کرناٹک  میں کووڈکے معاملات میں ہرگزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہاہے،اس دوران وزیراعلیٰ نے تیسری لہرپرقابوپانے کی تیاری کرنے کی صلاح دی ہے۔پہلے کووڈکی دوسری لہرپرقابوپانے کی کوشش کرے پھرتیسری لہرپرقابوپانے کی بات کریں۔یہ باتیں کے پی سی سی صدرڈی کے شیوکمارنے کہی۔