کرناٹک: وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمارا سوامی کرینگے فلور ٹیسٹ کا سامنا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th July 2019, 11:04 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،18؍جولائی (ایس او نیوز؍ایجنسی) کرناٹک کی کمار اسوامی کے مستقبل کا فیصلہ آج ہوسکتا ہے۔ کمارا سوامی آج فلور ٹیسٹ کا سامنا کرنے والے ہیں۔ سیاسی تجزیہ نگاروں کی مانیں تو حکومت کے بچنے کے آثار کم ہی نظرآرہے ہیں۔ باغیوں میں سے کسی نے بھی حکومت کی جانب کوئی نرم رویہ نہیں دکھایا ہے۔حکومت کو بچانے کیلئے برسراقتدار محاذ کی کوششیں بھی تیز ہو گئی ہیں تو وہیں بی جے پی بھی حکومت سازی کی تیاریوں میں نظرآ رہی ہے۔اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ موجودہ اسمبلی کے ارکان کی تعداد 224 ہے۔ جس کی تفصیل کچھ اس طرح ہے۔کانگریس78،جے ڈی ایس37، بی جے پی 105،آزاد ایم ایل اے2، بی ایس پی1،

تاہم اب اسمبلی کی موجودہ شکل اسطرح نہیں ہے۔کانگریس کے 13 ارکان علم بغاوت بلند کر چکے ہیں۔اس طرح سے کانگریس 65 ارکان ہیں۔ جے ڈی ایس کے3ارکان باغی ہو چکے ہیں۔ اسطرح جے ڈی ایس کے پاس 34 ارکان ہیں۔ بی ایس پی کے ایک رکن کی حمایت اتحادی گروپ کوحاصل ہے۔اس طرح اتحادی گروپ کو 100 ارکان کی حمایت حاصل ہے۔

ایسے میں اتحادی گروپ کی نظریں سی ایل پی لیڈرسدرامیا کے حامیوں ایس ٹی سوم شیکھر، بئیراتی بسواراج اور ایم مُنی رتنا پر ٹکی ہوئی ہیں۔ یہ تین ارکان ممبئی سے واپس بنگلورو آکر کچھ کرسکتے ہیں۔ اسکے علاوہ رام لنگا ریڈی اور روشن بیگ سے بھی اتحادی محاذ پرامید نظر آتا ہے۔ بعض تجزیہ نگاروں کی مانیں تو ہر حال میں حکومت کو جانا ہے۔ اعداد وشمار کسی بھی طرح سے اتحادی محاذ کے پاس نہیں ہے۔ اسپیکر کا فیصلہ باغیوں کے بارے میں جو بھی آئے۔ اس سے حکومت کے مستقبل پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔اگرباغی 16 ارکان کوایوان سے باہر بھی رکھا جاتا ہے توایوان کی تعداد 208 ہو جائیگی اورجادوئی عدد 105 قرار پائیگا۔اگر سے اسپیکر نے بھی اپنے ووٹ کا استعمال کر لیا تو اتحادی خیمے میں ایک سو ایک ارکان ہی رہ پائیں گے

دوسری جانب بی جے پی لیڈر مرلی دھر راؤ نے کرناٹک میں اگلی حکومت بی جے پی کے ہونے کا دعویٰ کیا ہے۔ مرلی دھر راؤ کا کہنا ہے کہ ایک ہفتے کے اندر بی جے پی،کرناٹک میں 107 ارکان کی حمایت کے ساتھ حکومت تشکیل دے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

بلند عزائم کی انوکھی کہانی: بنگلوروکے بس کنڈکٹر نے پاس کیا آئی اے ایس کا امتحان۔ ڈیوٹی کے ساتھ روزانہ کرتاتھا 5گھنٹے پڑھائی!

بنگلورو میٹروپولیٹن ٹرانسپورٹ کارپوریشن (بی ایم ٹی سی) کی بس میں کنڈکٹر کی ملازمت کرنے والے مدھو این سی ثابت کردکھایا  کہ اگر ارادے پختہ ہوں، عزائم بلند ہوں اور دل و جان سے محنت کی جائے تو کامیابی کے آسمان کو چھونا کوئی مشکل بات نہیں ہے۔ 

چکبالاپور میں سرکاری میڈیکل کالج واسپتال کے تعمیری کام کا آغاز

ضلع کے لئے منظور کی گئی سرکاری میڈیکل کالج و اسپتالکیتعمیری کام کا آغاز آج سے کیا جارہا ہے جس کو اگلے ڈھائی سال میں مکمل کرلیا جائے گا۔ میڈیکل کالج کے تعمیر ہونے سے دونوں اضلاع سمیت آندھرو دیگر ریاستوں کے غریب وکمزور لوگوں کو بہت سہولت فراہم ہوسکے گی۔

غیر قانونی بنگلہ دیشیوں کے نام پر غریب مزدوروں کی جھونپڑیاں منہدم کرانے والے انجینئر کا تبادلہ ، مزدوروں میں خوف و ہراس ، کرناٹک ہائی کورٹ نے لگائی پھٹکار

بنگلورو میں غیر قانونی بنگلہ دیشی تارکین وطن کو ہٹانے کے بہانے سینکڑوں جھونپڑیوں کو بی بی ایم پی نے منہدم کردیا۔ مہادے پورہ زون کے کریّمنا ا گراہار ،کاڑوہیسناہلی، دیورا ہیسناہلی، بیلندور، ورتور میں بی بی ایم پی نے 300 سے زائد جھونپڑیوں کو منہدم کردیا۔

سی اے اے کیخلاف قرار دادیں ’’دستوری اعتبار سے بھیانک غلطی‘‘ ، کوئی طاقت کشمیری پنڈتوں کو کشمیر واپس جانے سے نہیں روک سکتی ؛ منگلورو میں ریالی سے راجناتھ سنگھ کا خطاب

وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے آج اپوزیشن پارٹیوں کو ہدف تنقید بناتے ہوئےاُن سے خواہش کی ہے کہ یہ پارٹیاں ‘ جہاں اُن کی اکثریت ہے، ریاستی اسمبلیوں میں سی اے اے کیخلاف قرار دادیں منظور کرتے ہوئے ’’دستوری اعتبار سے بھیانک غلطی ‘‘ نہ کریں۔ راجنا تھ سنگھ نے اپوزیشن پارٹیوں کو مشورہ ...