احتجاج واپس لینے کسانوں سے وزیراعلیٰ یڈیورپا کی اپیل

Source: S.O. News Service | Published on 23rd September 2020, 8:06 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،23؍ستمبر(ایس او نیوز) لوک سبھامیں مرکزی حکومت کی جانب سے زرعی امورسے متعلق تین اہم ترین مسودہ قانون کوبحث کاموقع دئے بغیرمنظورکئے جانے سے ملک بھرکے کسان نالاں ہیں۔زراعت سے متعلق تین اہم قوانین میں ترمیم کرتے ہوئے منظورکئے جانے سے خفاکسانو ں کی مختلف تنظیموں نے 25ستمبرکوبھارت بندکی کال دی ہے۔

ریاست میں بھی بندکال کی جزوی تائیدکااعلان کیاگیاہے۔ کسان مخالف ترمیمی ایکٹ کی مخالفت میں بنگلورمیں گزشتہ 2دنوں سے کسانوں کی مختلف تنظیمیں احتجاج کررہی ہیں۔احتجاجی کسان تنظیموں کے لیڈروں کو آج وزیراعلیٰ بی ایس ایڈی یورپانے اپنے رہائشی دفترمیں تبادلہ خیال کے لیے طلب کیا۔ وزیراعلیٰ نے اس اجلاس میں کسان تنظیموں کے قائدین سے احتجاج واپس لینے کی اپیل کی۔

اس موقع پروزیراعلیٰ یڈیورپا نے کسانوں کوزرعی ترمیمی مسودہ قانون سے متعلق معلومات فراہم کیں،اس سے ہونے والے فائدہ کا ذکرکیا۔کسانوں کے لیے حکومت کی جانب سے کئے جارہے اقدامات سے بھی آگاہ کیا۔ان تمام باتوں کے ذریعہ وزیراعلیٰ نے کسانوں کومنانے کی بھرپورکوشش کی مگران کی جانب سے کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا۔

ایک نظر اس پر بھی

مرسی مشن کی کورونا متاثرین کیلئے خدمات کے 6 ماہ مکمل، ضرورت مندوں کی مدد کے لئے جوش کے ساتھ سلیقہ مندی کے امتزاج کی انوکھی مثال

شہر بنگلورو میں جب سے کورونا وائرس کے واقعات نے سر اٹھانا شروع کیا، اس وقت سے ہی شہر کے نوجوانوں کی ٹیم ضرورت مندوں کی مختلف زاویوں سے ہر ممکن مدد کرنے کے لئے متحرک رہی ہے