سی ایل پی اجلاس میں بیشتر اراکین اسمبلی شریک،آٹھ غیر حاضر اراکین میں سے چار کے خلاف کارروائی کی جائے گی: سدرامیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th February 2019, 11:47 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،9؍جنوری(ایس او نیوز) ریاست کی کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کو گرانے کے لئے کانگریس اراکین اسمبلی کی خرید وفروخت کی تمام کوششیں آج اس وقت رائیگاں گئیں جب سابق وزیراعلیٰ اور کانگریس لیجسلیچر پارٹی لیڈر سدرامیا کی طرف سے بجٹ سے پہلے طلب کی گئی کانگریس لیجسلیچر پارٹی میٹنگ میں بیشتر اراکین اسمبلی نے شریک ہوکر پارٹی سے اپنی وفاداری کا ثبوت دیا۔

چار برگشتہ اراکین کے علاوہ دیگر چار اراکین اسمبلی سدرامیا کی اجازت کے ساتھ اجلاس سے غیر حاضر رہے ، اور اجازت لے کر غیر حاضر رہنے والے اراکین کی غیر حاضری کو خاطر میں نہیں لایا گیا البتہ چار برگشتہ اراکین اسمبلی رمیش جارکی ہولی ، بی ناگیندرا ، مہیش کمٹلی،اور امیش جادھو کو اسمبلی کی رکنیت سے نااہل قرار دینے کی کارروائی سدرامیا نے شروع کروادی تو دوسری طرف امیش جادھو کو کرناٹکا ویر ہاؤزنگ ڈیولپمنٹ کارپوریشن کا چیرمین منتخب کیاگیا تھا انہیں بھی اس عہدے سے ہٹاکر ایک اور رکن اسمبلی پرتاب گوڈا پاٹل کو مقرر کردیا۔

آج صبح ودھان سودھا کے کانفرنس ہال میں منعقد کانگریس لیجسلیچر پارٹی میٹنگ میں بیشتر اراکین اسمبلی کی شرکت کی تصدیق کرتے ہوئے سدرامیا نے بتایاکہ شیواجی نگر کے رکن اسمبلی روشن بیگ نے میٹنگ سے غیر حاضر رہنے کے لئے ان سے پیشگی اجازت حاصل کرلی ہے۔ اسی لئے ان پر وہپ لاگو نہیں ہوگی، اسی طرح جن دیگر اراکین اسمبلی نے اجازت لی ہے ان پر بھی وہپ لاگو نہیں کی جائے گی۔البتہ پچھلی دو میٹنگوں میں غیر حاضر چار اراکین اسمبلی پر نااہل قرار دینے کی کارروائی شروع کی جائے گی۔ کانگریس لیجسلیچر پارٹی میٹنگ میں بیشتر اراکین اسمبلی کی شرکت کے ساتھ ہی ریاست کی مخلوط حکومت کو گرانے کے لئے بی جے پی کی طرف سے جاری آپریشن کمل پر چوتھی مرتبہ پانی پھر گیا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے کورونا؛ 122 نئے کیسس، صرف گلبرگہ میں ہی 29 پوزیٹو کی تصدیق، دکشن کنڑا اور اُڈپی میں بھی بڑھ رہے ہیں معاملات

ریاست کرناٹک میں  کورونا کیسس تھمنے کا نام نہیں رہے ہیں اور ہرروز سو سے زائد معاملات درج کئے جارہےہیں ۔ آج بدھ کو ریاست میں 122 کورونا پوزیٹو کیسس کی تصدیق کی گئی ہے جس میں سب سے زیادہ گلبرگہ سے 28 معاملات سامنے آئے ہیں، یادگیر سے16، ہاسن سے 15جبکہ ضلع اُترکنڑا میں چھ،  پڑوسی ضلع ...

گجرات کے سورت سے نکلی ٹرین ، بہار کے چھپرا کے بجائے پہنچی کرناٹک کے بنگلورو: مزدورں کا حال بے حال

لاک ڈاؤن کی مدت میں مزدوروں کو ان کے وطن لوٹانے گجرات سے نکلی ایک مزدور ٹرین (شریمک ریل ) بہار پہنچنے کے بجائے کرناٹکا کے بنگلورو پہنچ کر سب کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔ گرچہ یہ ایک مذاق لگتا ہے مگر ہے حقیقت۔ اسی طرح اور ایک خصوصی مزدور ریل گجرات کے سورت سے 1200مزدوروں کو لے کر بہار کے ...

کیا کرناٹکا میں یکم جون سے مسجد، گرجا گھر اور مندروں کو کھولنے کی دی جائے گی اجازت ؟

کورونا وائرس کے انفیکشن کو پھیلنے سے روکنے کے لئے ملک میں لاک ڈاؤن لاگو ہے۔لاک ڈاؤن 4.0 میں حکومت کی جانب سے بہت سی مراعات دی گئی ہیں، تاہم مندر، مسجد کو لے کر پابندیاں جاری ہیں لیکن حکومت نے لاک ڈاؤن میں رعایت کو لے کر ریاستوں کو بھی فیصلہ لینے کا حق دیا تھا۔دریں اثنا کرناٹک ...

انکولہ ۔ہبلی ریلوے منصوبہ : ماہرین ماحولیات کے خلاف اسنوٹیکر گرم

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبے کو لے کر ماہرین ماحولیات کے خلاف  جے ڈی ایس لیڈر آنند اسنوٹیکر نے سخت اعتراض جتاتے ہوئے کہا ہے کہ اس منصوبے کے تعلق سے مداخلت یا مخالفت نہ کریں تو بہتر ہے ورنہ ماہرین ماحولیات کی طرف سے فاریسٹ کی جتنی زمین ہتھیائی گئی ہے ثبوت کے ساتھ پیش کرنے کی ...

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

بھٹکل میں خدمات انجام دینے والے کورونا کے خصوصی آفسر ڈاکٹر شرتھ نائیک اب ہوں گے ضلع ہیلتھ آفسر

بھٹکل میں کورونا وباء پر قابو پانے کے لئے کاروار سے ڈاکٹر شرتھ نائیک کو بھٹکل روانہ کرکے انہیں نوڈل آفسر کی ذمہ داری سونپی گئی تھی، اُنہیں اب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پرخدمات انجام دینے والے  ڈاکٹر ...