ایران سے جنگ نہیں چاہتے، مگر جارحیت کا بھرپور جواب ملے گا: جان بولٹن

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th May 2019, 4:46 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن 6مئی (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) امریکی قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن نے کہا ہے کہ امریکا مشرق وسطی میں مرکزی کمان کے علاقے میں ایک طیارہ بردار بحری جہاز "یو ایس ایس ابراہم لنکن" اور ایک بمبار ٹاسک فورس کی تعیناتی عمل میں لا رہا ہے تا کہ ایرانی نظام کو یہ واضح پیغام دیا جائے کہ امریکا یا اس کے حلیفوں کے مفادات پر کسی بھی حملے کا بے رحمانہ جواب دیا جائے گا۔

پیر کے روز اپنے بیان میں بولٹن نے کہا کہ اس اقدام کا فیصلہ کئی تشویش ناک اور بڑھتے ہوئے انتباہات کے جواب میں کیا گیا ہے۔

بولٹن کا مزید کہنا تھا کہ واشنگٹن ایران کے ساتھ کسی جنگ کے لیے کوشاں نہیں ہے تاہم وہ ایرانی فورسز یا پاسداران انقلاب یا اس کے ایجنٹوں کی جانب سے کسی بھی حملے کا جواب دینے کے لیے مکمل طور پر تیار ہے۔

واضح رہے کہ ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے اپنے نیویارک کے آخری دورے میں صحافیوں سے گفتگو کے دوران واشنگٹن کو دھمکی دی تھی کہ تہران امریکی پابندیوں کا جواب دے گا جن کے نتیجے میں ایران کی معیشت زمین بوس ہو گئی ہے۔

ظریف نے خبردار کیا تھا کہ یہ حالات صورت حال کو دوزخ بنا رہے ہیں تاہم ایران اس دوزخ تک پہنچنا یا مقابلے کے بغیر اس میں گرنا ہر گز قبول نہیں کرے گا۔

جواد ظریف کا کہنا تھا کہ ایران پر امریکی پابندیاں اور ان پابندیوں کے سبب تباہ کن صورت حال کا درپیش ہونا یہ ایک اعلان جنگ ہے اور ایران اس کا جواب دے گا۔

ایرانی وزیر خارجہ کے مطابق ان کا ملک اس مقصد کے لیے اپنی عسکری فورسز کو براہ راست استعمال میں لائے بغیر اپنے زیر انتظام ملیشیاؤں کو کام میں لا سکتا ہے۔

ظریف نے عسکری قوت کے براہ راست استعمال کی دھمکی بھی دی اور کہا کہ اگر ایران کے لیے تیل کی فروخت کو محال بنایا گیا تو تہران آبنائے ہرمز کے راستے تیل کی تمام برآمدات کو روک دے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

پوری دنیا میں کورونا کا قہر جاری، متاثرین کی تعداد 63 لاکھ سے تجاوز

پوری دنیا میں عالمی وبا کورونا وائرس کا قہر جاری ہے اور ہر روز متاثرین اور اس سے ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد میں مستقل اضافہ ہو رہا ہے۔تازہ اعداد و شمار کے مطابق کورونا متاثرین کی تعداد 63لاکھ سے زیادہ ہوگئی ہے جبکہ اس وبا سے اب تک 3.73لاکھ سے زیادہ لوگوں کی موت ہوچکی ہے۔

عراق: فضائی حملے میں دو فوجی اور دو دہشت گردوں کی موت

عراق کے صوبہ نینوا اور دييالہ میں پیر کو ایک فضائی حملے اور ایک بم دھماکے میں دو فوجی ہلاک ہو گئے جبکہ دو دہشت گرد بھی مارے گئے۔ عراق کے جوائنٹ آپریشن کمانڈ کے میڈیا آفس نے ایک بیان میں بتایا کہ ایک حملہ میں دوعراقی فوجی ہلاک اور دو دیگر زخمی ہو گئے۔

انگلینڈ میں لاک ڈاؤن میں نرمی، 10 ہفتوں بعد کھلے اسکول

10 ہفتوں کے بعد برطانیہ کے انگلینڈ ریجن میں لاک ڈاؤن کے بعد اسکول کھول دیئے گئے، مگر نصف کے قریب والدین نے اپنے بچوں کو اسکول بھیجنے سے گریز کیا ہے۔ برطانوی حکومت نے گزشتہ روز لاک ڈاؤن میں نرمی کرنے کا اعلان کیا تھا جس میں اسکولوں کا کھولا جانا بھی شامل تھا، کچھ علاقوں میں ...

کورونا: جرمنی کو پیچھے چھوڑ ساتویں مقام پر پہنچا ہندوستان، 24 گھنٹے میں 230 اموات

  ملک میں كورونا وائرس کے نئے کیسز میں دن بہ دن ہو رہے اضافہ سے متاثرین کی کل تعداد 1.90 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے اور ہندوستان سب سے زیادہ متاثر ممالک کی فہرست میں فرانس اور جرمنی کو پیچھے چھوڑ کر ساتویں مقام پر پہنچ گیا ہے۔