چوکیدار کا مطلب سب سے بڑا چور ہے:سدارامیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 22nd April 2019, 10:59 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،22؍اپریل(ایس او  نیوز) سابق وزیراعلیٰ سدارامیا نے کہا کہ ملک کے بے روز گار نوجوان بر سر اقتدار نریندر مودی سے روز گار کا سوال کرتے ہیں تو مودی ان نوجوانوں کو پکوڑے بنانے کی صلاح دیتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ چوکیدار چور واقعی بہت بڑا چور ہے۔ آج رائے باغ میں چکوڈی کے کانگریس امیدوار پرکاش ہکیری کے حق میں انتخابی مہم میں حصہ لیتے ہوئے سدارامیا نے کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی انتخابی منشور میں کئے گئے وعدے وفا کرنے میں پوری طرح ناکام ہوگئے ہیں ۔ نریندر مودی کو عوام نے اس لئے اقتدار دیا تھا کہ وہ تبدیلی کی نئی راہیں ہموار کریں گے ۔ لیکن عوام کی امیدوں پرپانی پھیر دیا گیا ۔گزشتہ5برسوں کے دوران اچھے دن صرف پونجی پتی اور سرمایہ داروں کے حق میںآئے ہیں ۔ لیکن اب تک غریبوں اور دلت طبقہ کیلئے اچھے دن نہیںآئے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ترقی پسند اتحاد ( یو پی اے ) کے دوراقتدار میں 12سرجیکل اسٹرائک ہوئے اور 4جنگیں ہوئی ہیں ۔ پہلی جنگ پاکستان کے خلاف لڑی گئی ۔ ہنگندہ میں باگل کوٹ کی کانگریس امیدوار وینا کا شپنور کی حمایت میں منعقدہ عوامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سدارامیا نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی جدوجہد آزادی و جنگ آزادی کے وقت ابھی پیدا نہیں ہوئے تھے ۔ ان سے میں 4سال بڑا ہوں ، مودی کو دم ہے تو وعدے کے مطابق کئے گئے کام کی تفصیل بتائے ۔ جب میں وزیر اعلیٰ تھا عوام سے کئے گئے وعدوں میں سے 160وعدے مکمل کیا ہوں ، دم ہے تو مودی کئے گئے وعدوں کے بارے میں کچھ کہیں۔ بفرض محال مودی دوبارہ وزیر اعظم بن گئے تو ہٹلر کی طرح آمرانہ حکمرانی شروع ہوجائے گی۔مودی کے ہٹلر ہونے میں کوئی شبہ نہیں ہونا چاہئے ۔ امن وشانتی کے مشہور کرنا ٹک میں فرقہ پرستوں کے قدموں کو جمنے نہ دیں ۔ بی جے پی والے سماجی انصاف کے مخالف ہیں ۔ سب کا ساتھ سب کا وکاس ایک جھوٹا نعرہ ہے ، کرناٹک میں ایک بھی پسماندہ اور اقلیتی طبقہ کے فرد کو بی جے نے ٹکٹ نہیں دیا ۔مرکز میں بی جے پی حکومت اپنی آخری سانس لے رہی ہے ۔ یہاں کے قائدین ریاست میں بی جے پی حکومت تشکیل دینے کا خواب دیکھ رہے ہیں۔ سیاسی حریفوں پرآئی ٹی کا رروائی کرنے کی بجائے اراکین اسمبلی کی خریداری کے انتظار میں بیٹھے ہوئے ریاستی بی جے پی قائدین کے مکانات پر چھاپہ مارا جائے ۔ فرقہ وارانہ فسادات بھڑکانے والے ،دلت مخالف ،بمباری کے ذریعہ معصوموں کی جان لینے والوں کو بی جے پی ٹکٹ دے رہی ہے ۔ یہ بات اب مزید واضح ہوگئی ہے ۔ مالیگاؤں بم حملہ کی ملزم کو بی جے پی ٹکٹ دینے کی وجہ کیا ہے؟ اس سے بی جے پی والے سماج و معاشرہ کو کیا پیغام دینا چا ہ رہے ہیں۔ ضلع کو آگ میں جھونکنے کی بات کرنے والے ، بریگیڈ توڑنے والے اور جاں بحق پولیس کی توہین کرنے والوں کو رکھتے ہوئے بی جے پی حب الوطنی کا ناٹک کررہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی کے سینئر لیڈر آر اشوک نے سدارامیا اور کمار سوامی سے استعفیٰ کا مطالبہ کیا

وکھے درخت کے پتوں کی مانند جھڑرہے کانگریس اراکین اسمبلی کی آنکھوں میں اندھیراچھا گیا ہے۔ انہیں آگے کوئی راستہ نظر نہیں آرہا ہے۔ ریاست کے عوام نے مخلوط حکومت کی چڈی پھاڑدی ہے۔ اس قسم کی طنزیہ باتیں بی جے پی کے سینئر قائدآر اشوک نے کہیں۔

کرناٹک پبلک اسکولوں میں سرکاری اسکولوں کو ضم نہیں کیا جائے گا

سرکاری اسکولوں کو ضم کئے بغیر ہی کرناٹک پبلک اسکول چلانے کی تجویز محکمہ تعلیمات کے زیر غور ہے ۔ سرکاری نظام کے تحت ایک ہی پلاٹ فارم پر پہلی سے بارھویں جماعت تک کی تعلیم کی سہولت فراہم کرنے کے مقصد سے کرناٹک پبلک اسکولوں کا انعقاد 2018-19 سے ہی شروع ہوگیا تھا ۔

کمارسوامی نے وزیراعلیٰ کا عہدہ دیش پانڈے کو سونپنے کی رکھی تھی شرط ، کانگریس لیڈران رہ گئے دنگ؛ کماراسوامی کی قیادت پر ہی ظاہر کیا گیا اعتماد

لوک سبھا انتخابات میں کانگریس جے ڈی ایس اتحاد کی رسواکن شکست کے بعد کل وزیراعلیٰ کمار سوامی کی قیادت میں طلب کی گئی غیر رسمی کابینہ میٹنگ کے دوران وزیراعلیٰ کمار سوامی کی طرف سے استعفے کی پیش کش کے متعلق چند نئے انکشافات سامنے آئے ہیں۔