چکمگلورو : امبیڈکر اور دلتوں کی توہین - بجرنگی کارکنان کو گرفتار نہ کرنے پر دلت تنظیموں نے کیا احتجاجی مظاہرہ

Source: S.O. News Service | Published on 30th August 2022, 1:10 PM | ریاستی خبریں |

چکمگلورو، 30 ؍ اگست (ایس او نیوز) دستور ساز ڈاکٹر بی آر امبیڈکر اور دلتوں کی توہین اور تذلیل کرنے والے بجرنگ دل لیڈروں اور کارکنان کو جان بوجھ کر گرفتار نہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے دلت تنظیموں اور ترقی پسند اداروں کی طرف سے شہر میں احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ۔
    
ضلع بھر سے آئے ہوئے مختلف دلت اور ترقی پسند تنظیموں کے نمائندوں سے شہر کے کے ای بی سرکل سے آزاد پارک تک احتجاجی ریلی نکالی جس کے دوران ضلع پولیس کے خلاف اپنے غصہ کا اظہار کرتے ہوئے نعرے بازی کی ۔
    
اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے دلت لیڈروں نے کہا کہ حال ہی میں سکلیشپور میں بیف لے جانے والے دلت سماج کے ایک فرد کو بجرنگ دل کارکنان نے زد و کوب کیا اور اس کے ساتھ غیر انسانی سلوک کیا تھا ۔ اس کے بعد سکلیشپور میں دلت تنظیموں اور لیڈوں نے اس واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے احتجاجی مظاہرا کیا تھا ۔ اس کے دوسرے دن بجرنگ دل کے لیڈروں اور کارکنان نے دلتوں کی طرف سے کیے گئے مظاہرے کے فوٹو کے ساتھ ڈاکٹر امبیڈکر اور دلت لیڈروں کے فوٹو شامل  کرکے ایک فحش گیت والا ویڈیو بنایا اور اسے 'سی کے ایم پاور آف ہندو' کا ٹیاگ لگا کر انسٹاگرام پر شیئر کیا ۔ اس ویڈیو والے گیت میں امبیڈکر اور دلت لیڈروں کے خلاف فحش زبان استعمال کی گئی ہے ۔ 
    
مظاہرین نے الزام لگایا کہ دلت تنظیموں نے بجرنگی لیڈروں اور کارکنان کے خلاف چکمگلورو ایس پی کے پاس شکایت درج کروائی تھی جسے 15 دن گزر چکے ہیں ۔ اور ضلع پولیس نے اب تک اس ضمن میں کوئی کارروائی نہیں کی ہے ۔ اس طرح ضلع پولیس کی طرف سے بجرنگ دل کارکنان کو کھلی حمایت دی جا رہی ہے ۔ اس کے علاوہ یہاں پر لا اینڈ آرڈر کو برقرار رکھنے میں ضلع پولیس ناکام ہوگئی ہے ۔ مظاہرین کا یہ بھی الزام تھا کہ سیاسی دباو کے آگے جھکتے ہوئے ضلع پولیس  بجرنگیوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کر رہی ہے ۔        

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ 2023: ’کوئی امید نہیں، بجٹ ایک بار پھر ادھورے وعدوں سے بھرا ہوگا‘، سدارمیا کا اظہارِ خیال

یکم فروری کو مرکز کی مودی حکومت رواں مدت کار کا آخری مکمل بجٹ پیش کرنے والی ہے۔ مرکزی وزیر مالیات نرملا سیتارمن کے ذریعہ بجٹ پیش کیے جانے سے قبل بجٹ 2023 کو لے کر کانگریس کے کچھ لیڈران نے اپنے خیالات ظاہر کیے ہیں۔

کرناٹک ہائی کورٹ کی وارننگ، کہا: چیف سکریٹری دو ہفتوں میں لاگو کرائیں حکم

کرناٹک ہائی کورٹ نے منگل کو انتباہ دیا کہ اگر ریاستی حکومت دو ہفتوں کے اندر سبھی گاؤں اور قصبوں میں قبرستان کے لئے زمین فراہم کرانے کے اس کے حکم پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہتی ہے تو وہ چیف سکریٹری کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے پر مجبور ہوجائے گا ۔

منگلورو: محمد فاضل قتل میں ہندوتوا عناصر ملوث ہونے کا دعویٰ - اپوزیشن پارٹیوں نےکیا کیس کی دوبارہ جانچ کامطالبہ 

بی جے پی یووا مورچہ لیڈر پروین نیٹارو قتل کے بدلے میں عناصر کی طرف سے سورتکل میں محمد فاضل کو قتل کرنے کا کھلے عام دعویٰ کرنے والے وی ایچ پی اور بجرنگ دل لیڈر شرن پمپ ویل کے خلاف کانگریس ، جے ڈی ایس اور ایس ڈی پی آئی جیسی اپوزیشن پارٹیوں نے اس قتل کیس کی ازسر نو جانچ کا مطالبہ کیا ...

ٹمکورو میں اشتعال انگیز بیان دینے والے شرن پمپ ویل سمیت دیگر ہندوتوا لیڈروں کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ لے کر اے پی سی آر نے ایس پی کو دیا میمورنڈم

حال ہی میں ریاست کرناٹک کے  ٹمکور میں  منعقدہ شوریہ یاترا کے دوران وی ایچ پی لیڈر شرن پمپ ویل نے جو متنازع اور اشتعال انگیز بیان دیا  تھا ، اس پر کٹھن کارروائی کرتے ہوئے اسے گرفتارکرنے کا مطالبہ لے کر  ایسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) کے  ایک وفد نے ٹمکورو ...