حکم امتناعی کے باوجود ،چنئی میں سی اے اے کے خلاف زبردست مظاہرہ

Source: S.O. News Service | Published on 20th February 2020, 12:34 AM | ملکی خبریں |

چنئی،19/فروری(ایس او نیوز/ایجنسی)عدالتی حکم کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آج ہزاروں لوگوں نے آج تمل ناڈو سکریٹریٹ کے باہر شہریت ترمیمی قانون این سی آر اور این پی آر کے خلاف مظاہرہ کیا ۔ اس دوران وہاں پر سینکڑو ں فوجیوں کو وہاں پر تعینات کیا گیا ۔ تا کہ وہ سکرٹریٹ کے باہر لنگرانداز نہ ہو ۔ اسی طرح مدورائی میں بھی اسی طرح کے مظاہرے دیکھنے کو ملے اور انہیں کلکٹر آفس کے پاس روکا گیا ۔ اس مظاہرے کا اہتمام مختلف مسلم تنظیمیوں نے کیا ۔ اور اس میں عورتوں اور طلباء اور کی بڑی تعداد موجود تھے۔ مظاہرے کی وجہ سے شہر کے کئی علاقوں میں ٹرایفک اثر انداز ہوا و۔ ریاست کے مختلف علاقوں سے احتجاجی آج سویرے سے کلوانن ارنگام کے پاس جمع ہوئے۔ اور وہاں سے جلوس کی شکل میں سیکریٹیٹ کی طرف بڑھنے لگے کچھ دن پہلے ہائی کورٹ کی ایک بنچ نے سیکرٹیٹ کے باہر مظاہروں پر پابندی لگائی تھی ۔ لیکن منتظمین کا کہنا ہے کہ ان کا مظاہرہ پرامن رہا اور وہ کامراج نگر سے لیکر سکریٹریٹ پہنچ گیا ہے اس موقع پر تمیم انصاری نے کہا کہ ریلی نکالنے پر کوئی پابندی نہیں ہے نہ ہی انہو ںنے یہ ضروری سمجھا کہ اس کے لئے اجازت لی جا ئے۔ ہائی کورٹ کے حکم کے باجود احتجاجیوں نے یہ فیصلہ کیا کہ وہ ریلی نکالیں گے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کورونا وائرس کے پھیلتے اثرات کے سبب این پی آر، مردم شماری کا پہلا مرحلہ ملتوی

کورونا وائرس کے سد باب کیلئے وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے اعلان کیے گئے21 روزہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے متنازعہ قومی آبادی رجسٹر (این پی آر)کواپ ڈیٹ کرنے اور2021 کی مردم شماری کے پہلے مرحلے کوملتوی کر دیاگیاہے۔