ناگالینڈ میں شہری ہلاکتوں پر برہمی، مرکز کا اظہار افسوس

Source: S.O. News Service | Published on 7th December 2021, 12:14 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،7؍دسمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) ناگالینڈ  میں فوج کی فائرنگ میں ۱۴؍ عام شہریوں کی ہلاکت پر افسوس کااظہار کرتے ہوئے وزیر داخلہ امیت شاہ  نے لوک سبھا میں بتایا کہ کوئلے کی کانوں کے مزدوروں کی جس گاڑی کو فوجیوں  نے جنگجوؤں کی گاڑی سمجھ کر اندھادھند فائرنگ کی،اسے رُکنے کا اشارہ کیاگیاتھا مگر گاڑی رکی نہیں بلکہ فرار ہونے کی کوشش کی گئی جس کی وجہ سے غلط فہمی پیدا ہوئی۔ اس کے ساتھ  ہی معاملے کی جانچ کیلئے ایس آئی ٹی تشکیل دے دی گئی ہےجبکہ ناگالینڈمیں اس   المناک  حادثہ کے خلاف عوام نے  پیر کو بند منایا۔ ریاستی حکومت نے مہلوکین کے اہل  خانہ کیلئے معاوضہ کا اعلان کیا ہے۔ 

 وزیر داخلہ امیت شاہ نے  ناگالینڈ کے واقعہ پر پیرکو لوک سبھا میں افسوس کا اظہار کرتے ہوئے  بتایا کہ حالات کشیدہ مگر کنٹرول میں ہیں۔ انہوں نے مزید کہا  کہ ان کی حکومت اس واقعہ میں ہلاک ہونے والوں کے کنبوں  کے تئیں اپنی گہری تعزیت کا اظہار کرتی ہے۔ وزیر داخلہ  نے بتایا کہ حکومت متاثرہ علاقہ  کے  حالات پر قابو پا کر ماحول کو پرسکون    کرنے کی کوشش کر رہی ہے اور اس کے لیے وہ خود ریاستی حکومت کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں۔ انہوں  نے بتایا کہ مرکزی حکومت کے شمال مشرقی امور کے ایک سینئر  افسر کو موقع پر بھیجا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی اس واقعہ کی تحقیقات کے احکامات دیتے ہوئے ایک ماہ میں رپورٹ پیش کرنے کیلئےکہا گیا ہے۔

 واقعہ کی تفصیلی معلومات دیتے ہوئے انہوں نے بتایاکہ فوج کو ایک گاڑی سے عسکریت پسندوں کی نقل و حرکت کی اطلاع ملی تھی، اس لیے اس کے کمانڈوز نے مشکوک جگہ پر پہنچ کر گاڑیوں کی چیکنگ شروع کی۔ جب ایک گزرنے والی گاڑی کو رُکنے کا اشارہ کیا گیا تو ڈرائیور نے گاڑی روکنے کی بجائے اسے بھگانے کی کوشش کی۔ گاڑی میں عسکریت پسندوں کی موجودگی کے شبہ میں سیکوریٹی  فورسیز کے اہلکاروں نے  فائرنگ کردی۔ واضح  رہے کہ مذکورہ فائرنگ میں ۶؍ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔  وزیر داخلہ نے کہا کہ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی کچھ مقامی لوگ وہاں جمع ہوگئے اور سیکوریٹی فورسز کی گاڑیوں کو نقصان پہنچانا شروع کردیا۔ انہوں نے وہاں بھی فائرنگ کی اور فوجیوں پر حملہ کیا، جس میں کئی فوجی زخمی ہوئے۔ سیکوریٹی فورسیز کے اہلکاروں نے اپنے دفاع میں اور ہجوم کو منتشر کرنے کیلئے گولی چلائی جس  میں مزید ۷؍شہری ہلاک اور کچھ زخمی ہوگئے۔

  وزیر داخلہ نے بتایا کہ واقعہ کی ایف آئی آر بھی درج کر لی گئی۔ اس کی جانچ کیلئےایک خصوصی تحقیقاتی ٹیم(ایس آئی ٹی) تشکیل دی گئی ہے اور اسے ایک ماہ میں اپنی رپورٹ پیش کرنے کو کہا گیا ہے۔واضح رہے کہ ریاستی پولیس نے  اس معاملے میں فوجیوں کے خلاف قتل کرنے کے مقصد سے فائرنگ کرنے کا مقدمہ درج کیا ہے۔   امیت شاہ نے بتایا کہ مذکورہ واقعہ کے بعد اتوار کو ایک ہجوم نے مون شہر میں آسام رائفل کے دفتر میں توڑ پھوڑ کی اور آگ لگا دی جس کے جواب میں جوانوں نے گولی چلائی جس میں ایک اور شخص کی موت ہو گئی اور دوسرا زخمی ہو گیا۔

  فائرنگ  کے واقعہ کے خلاف  پیر کو پورے ناگالینڈ  میں صبح۶؍بجے سے دوپہر۱۲؍ بجے تک  چھ گھنٹے کا مکمل بند منایاگیا۔ ناگا اسٹوٹنٹ فیڈریشن (این ایس ایف) نے اس بند کا اعلان کیا تھا۔ انہوں نے لوگوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں اگلے ۵؍دنوں تک کسی طرح کا کوئی تہوار نہ منائیں اور ۵؍دن تک سوگ منائیں۔

 این ایس ایف نے مرکزی حکومت  سے اے ایف ایس پی(افسپا) ایکٹ کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ ریاست کے وزیراعلیٰ بھی  اس واقعہ کے بعد مودی سرکار سے  فوج کو خصوصی اختیار  دینے والے اس قانون کو  منسوخ کرنے کا مطالبہ کرچکے ہیں۔  این ایس ایف  اس قانون کو ختم کرنے کیلئے اسمبلی  کا خصوصی اجلاس طلب کرنے  مطالبہ کیا ہے  ۔  دریں اثنا   ناگالینڈ  کے وزیراعلیٰ  نیفیو ریو نےمہلوکین کے حوالے سے ایک بڑا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے اہل خانہ کو حکومت۱۱-۱۱؍ لاکھ روپے اور سرکاری ملازمت دے گی۔ انہوں نے مرکز سے پھر اپیل کی ہے کہ وہ افسپا کی منسوخی کا اعلان کرے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ہندوستان کورونا کے 2.86 لاکھ نئے کیسز، ایکٹو کیسز 22 لاکھ سے متحاوز

ملک میں کورونا وائرس کے کیسز میں ایک بار پھر تیزی دکھائی دے رہی ہے۔ جمعرات کو بھی کورونا کے نئے کیسز 3 لاکھ کے قریب درج ہوئے ۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں 2,86,384 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ تاہم کل کے مقابلے میں کیسز میں صرف معمولی اضافہ درج کیا گیا۔

طلبہ کے خلاف کارروائی پرنتیش کمارخاموش کیوں؟ کوچنگ مراکزکی حمایت میں آرجے ڈی،مانجھی نے بھی وارننگ دی

آر آر بی این ٹی پی سی امتحان کو لے کر بہار کے کئی اضلاع میں ہنگامہ آرائی کے بعد آر جے ڈی نے کوچنگ آپریٹروں کے خلاف درج ایف آئی آر کی سخت مخالفت کی ہے۔ آر جے ڈی لیڈرنے مطالبہ کیا ہے کہ پولیس اساتذہ کے بجائے ریلوے ریکروٹمنٹ بورڈکے عہدیداروں کے خلاف مقدمہ درج کرے۔ اس کے ...

طلبہ نے بہاربندکااعلان کیا،مہاگٹھ بندھن نے حمایت کی

این ٹی پی سی امتحان میں دھاندلی پر طلباء کا غصہ تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ طلبہ نے جمعہ 28 جنوری کو بہار بند کی کال دی ہے۔ آر جے ڈی سمیت عظیم اتحاد کی تمام جماعتوں نے طلبہ کے بند کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔جمعرات کوعظیم اتحادسے مشترکہ طور پر آر جے ڈی کے ریاستی دفتر میں پریس ...

مالیگاؤں 2008 بم دھماکہ معاملہ : اے ٹی ایس کی موجودگی سے بھگوا ملزمین سراپا احتجاج

مالیگائوں 2008 بم دھماکہ معاملے میںآج ایک بڑی اور اہم پیش رفت ہوئی ، بم دھماکہ متاثرین اور سابق وزیر نسیم خان کی کوششوں سے آج خصوصی این آئی اے عدالت میں انسدا ددہشت گرد دستہ کے دو سینئر افسران حاضر ہوئے اور خصوصی این آئی اے جج سے کہا کہ انہیں اے ٹی ایس چیف نے ہدایت دی ہیکہ وہ ...

یوپی اسمبلی انتخابات: بی ایس پی کی نئی فہرست جاری، کندرکی سے محمد رضوان اور نواب گنج سے یوسف خان امیدوار

 اتر پردیش میں اسمبلی انتخابات کے دوران بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) نے جمعرات کو اپنے چھ امیدواروں کی فہرست جاری کی ہے۔ بی ایس پی نے دو سیٹوں پر اپنے امیدواروں کو تبدیل کر دیا ہے، جبکہ چار نئی سیٹوں پر امیدواروں کا اعلان کیا ہے۔ نئی فہرست میں سب سے زیادہ توجہ بریلی ضلع پر مرکوز ...

ٹوئٹر کو ’آئیڈیا آف انڈیا‘ کی تباہی کا مہرہ نہ بننے دیں، سی ای او پراگ اگروال کے نام راہل گاندھی کا مکتوب

 کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے ٹوئٹر کے سی ای او پراگ اگروال کو مکتوب ارسال کرتے ہوئے اپیل کی ہے کہ وہ ٹوئٹر کو ’آئیڈیا آف انڈیا‘ (ہندوستان کے خیال) کی تباہی کا مہرہ بننے سے روکیں۔