حکومتی حکم کے مطابق ریاست کے 17اضلاع کے 80تعلقہ جات سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں شمار:فوری راحت دینے افسران کو ہدایات   

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 10th August 2019, 9:33 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:10؍اگست(ایس اؤ نیوز)ریاستی حکومت نے ریاست کے 17ضلعوں کے 80تعلقہ جات کو سیلاب سے متاثرہ علاقے قرار دیتے ہوئے فوری اقدامات کرنے ماتحت افسران کو حکم جاری کیاہے۔ اترکنڑا، دکشن کنڑا، اُڈپی ،کورگ سمیت ریاست کے 17اضلاع سیلاب سے متاثر ہوئے ہیں۔ متعلقہ اضلاع کے تعلقہ جات کو فوری طورپر سیلاب سے متاثرہ علاقے قرار دینےکی بات سرکلر میں درج ہے۔ سیلاب کو لےکر جمعہ کو چیف سکریٹری کی صدارت میں منعقد ہوئی میٹنگ میں سیلاب سے متاثرہ علاقے قرار دینےکی  سفارش کی گئی تھی۔

سنیچر کو باقاعدہ مصدقہ حکم جاری کرتےہوئے ریاستی حکومت نے کہاہے کہ یکم اگست سے 9اگست تک ریاست کے مختلف اضلاع میں برسی بارش اور مہاراشٹرا میں موسلادھار بارش کی وجہ سے بھرے ہوئے ڈیموں  سے چھوڑے جانے والے بھاری مقدار میں پانی کے نتیجے میں شمالی کرناٹکا کے کرشنا ندی کی وادی سمیت دیگر ندیوں کنارے علاقوں میں سیلاب برپا ہواہے۔ اعلان کئے گئے ریاست کے 17اضلاع کے 80تعلقہ جات کی فہرست یوں ہے۔

اترکنڑا ضلع میں بھٹکل، انکولہ، ہلیال، ہوناور، کاروار، کمٹہ، منڈگوڈ، سداپور، سرسی ،یلاپور ۔اُڈپی ضلع میں کارکلا، کنداپور، اُڈپی ۔ دکشن کنڑاضلع میں بیلتھنگڈی ، بنٹوال، منگلورو، پتور، سلیا۔ کورگ ضلع میں مڈکیری، سوموارپیٹ، وراج پیٹ،مڈکیری۔  چک منگلورو میں موڈگیری ، نرسمہاراج پور، شرنگیری ۔شیموگہ ضلع میں ہوسنگر، ساگر، شکاری پور، شیموگہ ، سورب، تیرتھ ہلی  سمیت کئی اضلاع کے تعلقہ جات شامل ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

مرکزی حکومت کے خلاف 8/جنوری کو ملک گیر ہڑتال کا اعلان

آل انڈیا اسٹوڈنٹس فیڈریشن (اے آئی ایس ایف) نے تعلیم، روزگار، خواتین کے حقوق کی پامالی، معاشی شعبہ میں گراوٹ اوربے روزگاری کے مسئلہ کو حل کرنے میں ناکام مرکزی حکومت کے خلاف 8/جنوری کو ملک گیر ہڑتال کا اعلان کیا ہے-

شہریت ترمیمی قانون کے خلاف ہلیال میں دیا گیا میمورنڈم

مرکزی حکومت کی جانب سے متنازع شہریت ترمیمی بل منظور کیے جانے کے خلاف ہلیال میں جمیت العلماء الہند ضلع کاروارکے پرچم تلے مسلمانوں اور غیر مسلم ایس سی / ایس ٹی لیڈروں نے مشترکہ طور پر تحصیلدار کی معرفت سے صدر ہند کو میمورنڈم پیش کیا۔

شہریت ترمیمی بل کے خلاف بنگلورو میں کرناٹکامسلم متحدہ محاذ کے زیر اہتمام ملّی و سماجی تنظیموں کا زبردست احتجاجی مظاہرہ

سماج کو مذہبی بنیادوں پر تقسیم کرنے والے مرکزی حکومت کے شہریت ترمیمی بل (سی اے بی) کے خلاف بنگلورو میں کرناٹکا متحدہ محاذ کے زیر اہتمام دوپہر 12بجے ٹاؤن ہال کے پاس ایک زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔