برازیل میں ایک دن میں 1179 مریض چل بسے

Source: S.O. News Service | Published on 21st May 2020, 3:53 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ریو ڈی جنیرو،21؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) لاطینی امریکہ میں کرونا وائرس سے بدترین متاثر ملک برازیل میں منگل کو 1179 افراد ہلاک ہوئے، جو ملک میں 24 گھنٹوں کے دوران ہلاکتوں کا نیا ریکارڈ ہے۔ ان میں سے 324 اموات صرف ایک صوبے ساؤپولو میں ہوئی ہیں۔

برازیل چوتھا ملک ہے جہاں ایک دن میں ایک ہزار سے زیادہ اموات ہوئی ہیں۔ باقی تین ممالک امریکہ، فرانس اور برطانیہ ہیں۔ اٹلی اور اسپین میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد بہت زیادہ ہے۔ لیکن وہاں بھی ایک دن میں ایک ہزار اموات نہیں ہوئی تھیں۔

21 کروڑ آبادی والے ملک برازیل میں کرونا وائرس کے پہلے مریض کی تصدیق 18 مارچ کو ہوئی تھی اور ابتدا میں وبا کے پھیلنے کی رفتار سست تھی۔ لیکن اس ماہ کیسز اور اموات میں تیزی آئی۔ اب مریضوں کی تعداد کے لحاظ سے یہ امریکہ اور روس کے بعد تیسرے نمبر پر ہے۔ یہاں 2 لاکھ 75 ہزار کیسز اور 18 ہزار اموات ہوچکی ہیں۔

ساؤپولو کے مئیر نے چند دن پہلے خبردار کیا تھا کہ ان کا سوا کروڑ آبادی کے شہر کے اسپتال مریضوں سے بھر چکے ہیں اور شہریوں نے احتیاطی تدابیر اختیار نہ کیں تو صورتحال قابو سے باہر ہوسکتی ہے۔

برازیل کے صدر جائر بولسونارو کرونا وائرس کے خطرے کو مسلسل مسترد کرتے آئے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ معمولی سا فلو ہے۔ لوگوں کا قرنطینہ میں رہنے اور لاک ڈاؤن کرنے سے معیشت پر زیادہ برے اثرات پڑ سکتے ہیں۔ بحران شروع ہونے کے بعد ایک وزیر صحت کو اختلافی رائے رکھنے پر صدر نے برطرف کردیا تھا جبکہ دوسرے نے خود مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا۔

صدر بولسونارو سوشل میڈیا پر اظہار خیال کرتے رہتے ہیں۔ حال میں انھوں نے ایک ٹوئیٹ میں لکھا کہ لوگ کام کرنا چاہتے ہیں، تاکہ اپنے اہلخانہ کے لیے رزق کما سکیں۔

دریں اثنا، جانز ہاپکنز یونیورسٹی اور ورڈومیٹرز کے مطابق، دنیا بھر میں کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد 50 لاکھ 45 ہزار اور اموات کی تعداد 3 لاکھ 27 ہزار سے زیادہ ہوگئی ہے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران برطانیہ میں 363، میکسیکو میں 334، اٹلی میں 161، روس میں 135، بھارت میں 132، کینیڈا میں 115، فرانس میں 110 اور اسپین میں بھی 110 مریض دم توڑ گئے۔ امریکہ میں بدھ کی سہہ پہر تک ساڑھے چھ سو مریض چل بسے تھے، جس کے بعد مجموعی تعداد 94 ہزار سے زیادہ ہوگئی تھی۔

دنیا میں سب سے زیادہ کیسز بھی امریکہ میں ہیں جن کی تعداد 15 لاکھ 80 ہزار ہے۔ روس 3 لاکھ 8 ہزار کیسز کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے جبکہ برازیل، اسپین، برطانیہ اور اٹلی میں بھی 2 لاکھ سے زیادہ مریضوں کی تصدیق ہوئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

نیوزی لینڈ: زلزلہ نے وزیراعظم جیسنڈا آرڈرن کو بنایا عوامی توجہ کا مرکز

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق انتہائی پرسکون انداز میں ٹی وی میزبان Ryan Bridge کے پروگرام Newshub AM Show کرونا سے نمٹنے سے متعلق مباحثے کے دوران زلزلے کے جھٹکے شروع ہوئے اور کیمرے میں دکھائی دینے والی چیزیں حرکت کرنے لگیں۔

انکولہ ۔ہبلی ریلوے منصوبہ : ماہرین ماحولیات کے خلاف اسنوٹیکر گرم

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبے کو لے کر ماہرین ماحولیات کے خلاف  جے ڈی ایس لیڈر آنند اسنوٹیکر نے سخت اعتراض جتاتے ہوئے کہا ہے کہ اس منصوبے کے تعلق سے مداخلت یا مخالفت نہ کریں تو بہتر ہے ورنہ ماہرین ماحولیات کی طرف سے فاریسٹ کی جتنی زمین ہتھیائی گئی ہے ثبوت کے ساتھ پیش کرنے کی ...

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

بھٹکل میں خدمات انجام دینے والے کورونا کے خصوصی آفسر ڈاکٹر شرتھ نائیک اب ہوں گے ضلع ہیلتھ آفسر

بھٹکل میں کورونا وباء پر قابو پانے کے لئے کاروار سے ڈاکٹر شرتھ نائیک کو بھٹکل روانہ کرکے انہیں نوڈل آفسر کی ذمہ داری سونپی گئی تھی، اُنہیں اب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پرخدمات انجام دینے والے  ڈاکٹر ...