کرناٹک دورہ میں پی ایم مودی کے بیان سے وزیر اعلیٰ بومئی کو ملی راحت!

Source: S.O. News Service | Published on 23rd June 2022, 11:44 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 23؍ جون (ایس او نیوز؍ایجنسی) وزیر اعظم نریندر مودی کے کرناٹک دورہ کے بعد وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی راحت محسوس کر رہے ہیں۔ ایسا اس لیے کیونکہ اس دورہ سے ریاست میں قیادت کی تبدیلی جیسی افواہوں پر فل اسٹاپ لگ گیا ہے۔ دراصل پی ایم مودی نے ایک جلسہ عام میں بومئی کی بہت تعریف کی اور واضح پیغام دے دیا کہ بومئی کی قیادت میں ریاست میں ترقیاتی سرگرمیاں جاری رہیں گی۔ یہ بیان ان لیڈروں کو خاموش کرنے کے لیے بھی کافی ہے جو بومئی کے خلاف آواز اٹھا رہے تھے۔

وزیر اعظم مودی نے کہا کہ بومئی کی قیادت میں کرناٹک نئی اونچائیوں کو چھوئے گا اور مرکزی حکومت ان کے ساتھ کھڑی رہے گی۔ پارٹی کے ایک ذرائع کا کہنا ہے کہ پی ایم مودی کے ذریعہ دیا گیا پیغام واضح کر رہا ہے کہ آئندہ اسمبلی انتخابات کے لیے قیادت میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی، کیونکہ ریاست پہلے ہی انتخابی سال میں داخل ہو چکا ہے۔

گزشتہ دنوں کئی بی جے پی لیڈران نے بلاواسطہ یا بالواسطہ طور سے بومئی کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا اور ان کی قائدانہ صلاحیت پر بھی سوال اٹھایا تھا۔ ایم ایل سی انتخابات میں ملے جلے ریزلٹ، لنگایت اکثریتی انتخابی حلقہ میں ان کی ناکامی نے کئی سوال کھڑے کیے تھے۔ حالانکہ پارٹی کی اعلیٰ قیادت ان کے ساتھ کھڑی دکھائی دے رہی ہے۔ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے اعلان کیا ہے کہ آئندہ اسمبلی انتخاب بومئی کی قیادت میں ہی لڑا جائے گا۔

جگدیش شیٹار، جنھوں نے بومئی کو اپنا جونیئر بتاتے ہوئے کابینہ کا عہدہ لینے سے انکار کر دیا تھا، اب بھی ان سے دوری بنائے ہوئے ہیں۔ بی جے پی کی گرفت والے بیلگاوی ضلع میں سیاسی رسہ کشی کا حل نکلنا ابھی باقی ہے۔ پارٹی کے ذرائع نے کہا کہ مودی کی تقریر نے ایک واضح پیغام دیا ہے کہ ایک سال سے بھی کم وقت میں ہونے والے اسمبلی انتخاب کی تیاری کے لیے قیادت میں تبدیلی کی جگہ ترقیات پر توجہ مرکوز کی جانی چاہیے۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلور میں کانگریس لیڈر ضمیراحمد خان کے مکان اور دفتر پر اے سی بی کے دھاوے؛ کانگریس نے کہا؛ سب انسپکٹرس بھرتی اسکیم سے عوام کی توجہ ہٹانے کی کوشش

کرناٹک اینٹی کرپشن بیوروکے عہدیداروں نے منگل کے دن غیرمتناسب اثاثوں کی انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ(ای ڈی) رپورٹ پر کانگریس رکن اسمبلی بی زیڈ ضمیر احمد خان کے 5 مقامات پر بہ یک وقت دھاوے کئے۔

بھٹکل: ساحلی کرناٹکا کے علاوہ دیگر 6 اضلاع میں بھی موسلا دھار بارش  -طالبہ سمیت 2 ہلاک ۔ ندیاں پار کر گئیں خطرے کا نشان ؛ کاروار کے قریب انموڈ گھاٹ پر چٹان کھسک گئی

ریاست کے ساحلی علاقہ کے شمالی کینرا، اُڈپی اور  جنوبی کینرا کے علاوہ کوڈاگو، چکمگلورو اور شیموگہ جیسے اضلاع  زبردست بارش کی زد میں آ گئے ہیں ۔  جس کے نتیجے میں کئی علاقوں سے نقصانات کی خبریں بھی موصول ہورہی ہیں، جبکہ  بارش کے نتیجے میں اب تک  دو لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے۔

کولار میں شانِ رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی بے حرمتی کے واقعے پر بھٹکل تنظیم کی سخت مذمت؛ خاطیوں کے خلاف سخت کاروائی کا مطالبہ

کولار میں  جمعہ کے روز اُدے پور واقعے  کو لے کر منعقدہ  احتجاج  میں  ہندو تنظیموں کی طرف سے  پھر  ایک بار شان رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی کھلے عام بے حرمتی کا معاملہ سامنے آنے پر مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل نے سخت تشویش کا اظہار کیا ہے اور نوپور شرما  کی حمایت کرتے ہوئے  کی ...