بھٹکل کے قریب منکی سمندر سے نامعلوم خاتون اور اس کی دو لڑکیوں کی نعشیں برآمد؛ خودکشی کا شبہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 13th May 2019, 1:04 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 13/مئی (ایس او نیوز) بھٹکل سے قریب 25 کلو میٹر دور منکی  سمندر کنارے  ایک نامعلوم جوان خاتون اور  دو لڑکیوں کی نعشیں برآمد ہوئی  ہیں جن کے تعلق سے سمجھا جارہا ہے کہ یہ تینوں ماں اور بیٹیاں ہیں۔ شبہ ہے کہ   ماں نے اپنی دو بیٹیوں کو پہلے  رسی سے باندھ کر سمندر میں پھینکا ہوگا، پھرخود سمندر میں چھلانگ لگاتے ہوئے خودکشی کی ہوگی۔

منکی کے سماجی کارکن اور ساحل آن لائن  کے نامہ نگار  ذاکر کٹنگری نے بتایا کہ نعشوں کا معائنہ کرنے اور  حالت دیکھنے سے اندازہ ہوتا ہے کہ  ان تینوں نے غالباً کل اتوار شام کو سمندر میں چھلانگ لگاکر خودکشی کی ہوگی، دونوں لڑکیاں اور خاتون ایک دوسرے سے بندھی ہوئی حالت میں تھے ، خاتون  اور ایک بچی کے  بدن کے اوپری حصے کے کپڑے   اُتر گئے تھے ، مگر ان کے جسم سے ہی  لگے ہوئے تھے، سمجھا جارہا ہے کہ سمندری موجوں سے کپڑے اُتر گئے ہوں گے۔ اندازہ ہے کہ کسی بڑے پتھر پر سے ان لوگوں نے سمندر میں چھلانگ لگائی ہے، سمندر کنارے میں ہی چھلانگ لگانے کی وجہ  سے سمندری موجوں نے تینوں کو سمندر کنارے لاکر ڈال دیا تھا۔

آج پیر صبح  سمندر کنارے سے گذرنے والوں نے   منکی پولس کو واقعے کی جانکاری دی اور اطلاع ملتے ہی پولس ٹیم جائے وقوع پر پہنچ گئی۔ خبر ملتے ہی بھٹکل ڈی وائی ایس پی ویلنٹائن ڈیسوزا سمیت ہوناور سرکل پولس انسپکٹر اور دیگر آفسران بھی جائے وقوع پر پہنچ کر جائزہ لیا بعد میں نعشوں کو  منکی سرکاری اسپتال منتقل کیا گیا ۔

خاتون کی عمر لگ بھگ 30 سال اور لڑکیوں کی عمر  آٹھ اور دس سال  ہونے کا اندازہ لگایا گیا ہے۔ 

اس رپورٹ کے ساتھ فوٹوز شائع کئے جارہے ہیں، منکی پولس نے درخواست کی ہے کہ اگر کسی کو ان کے تعلق سے کوئی جانکاری ہوتو  منکی پولس سے رابطہ کریں۔شناخت کے لئے منکی اسپتال پہنچ کر نعشوں کا معائنہ بھی کیا جاسکتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا سے چھٹی مرتبہ جیت درج کرنے والے اننت کمار ہیگڑے کی جیت کا فرق ریاست میں سب سے زیادہ؛ اسنوٹیکر کو سب سے زیادہ ووٹ بھٹکل میں حاصل ہوئے

پارلیمانی انتخابات میں شمالی کینرا کے بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے نے پوری ریاست کرناٹک میں سب سے زیادہ ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ہے۔ انہوں نے 479649 ووٹوں کی اکثریت سے کانگریس  جے ڈی ایس مشترکہ اُمیدور  آنند اسنوٹیکر  کو شکست دی ۔

ریاست میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے سیاسی لیڈروں کی ذلت بھری شکست

ریاست کرناٹکا میں انتخابی میدان میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے چند نامورسیاسی لیڈران جیسے ملیکا ارجن کھرگے، دیوے گوڈا، ویرپا موئیلی اورکے ایچ منی اَپا وغیرہ کو اس مرتبہ پارلیمانی انتخاب میں انتہائی ذلت آمیز شکست سے دوچار ہونا پڑا ہے۔ 

منگلورو:کلاس میں اسکارف پہننے پر سینٹ ایگنیس کالج نے طالبہ کو دیا ٹرانسفر سرٹفکیٹ۔طالبہ نے ظاہر کیاہائی کورٹ سے رجوع ہونے اور احتجاجی مظاہرے کاارادہ

کلاس روم میں اسکارف پہن کر حاضر رہنے کی پاداش میں منگلورومیں واقع سینٹ ایگنیس کالج نے پی یو سی سال دوم کی طالبہ فاطمہ فضیلا کو ٹرانسفر سرٹفکیٹ دیتے ہوئے کالج سے باہر کا راستہ دکھا دیا ہے۔

بھٹکل میں رمضان باکڑہ کی نیلامی؛ 40 باکڑوں کے لئے میونسپالٹی کو 1126 درخواستیں

رمضان کے آخری عشرہ کے لئے بھٹکل  میں لگنے والے رمضان باکڑہ کی آج میونسپالٹی کی جانب سے  نیلامی کی گئی۔ بتایا گیاہے کہ 40 باکڑوں کی نیلامی کے لئے  میونسپالٹی کے جملہ 1126 درخواست فارمس فروخت ہوئے تھے۔ 

گڑگاوں میں مسلم نوجوان سے کہا گیا : اس علاقہ میں ٹوپی پہن کر آنا منع ہے ، جے شری رام نہیں کہنے پر مار پیٹ

رمضان میں دیررات مسجدوں میں تراویح کی نماز پڑھی جاتی ہے ۔ بہار کے بیگوسرائے کا رہنے والا برکت عالم بھی اتوار کی رات صدر بازار گروگرام کی جامع مسجد سے تراویح کی نماز پڑھ کر لوٹ رہا تھا ۔ برکت کا کہنا ہے کہ اسی دوران ایک بائیک پر آئے چار نوجوان اور وہاں سے پیدل گزر رہے دو دیگر ...

وائی ایس آر کانگریس کے سربراہ کی وزیراعظم مودی سے ملاقات، آندھرا کو خصوصی درجہ دینے پر زور

 وائی ایس آر کانگریس کے سربراہ جگن موہن ریڈی نے وزیر اعظم نریندر مودی سے اتوار کو دہلی میں ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی۔اس کے بعد انہوں نے بغیر کسی طے پروگرام کے بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ سے ملاقات کی۔

اسمرتی ایرانی کے قریبی سابق پردھان کا گولی مار کر قتل ، علاقہ میں کشیدگی

اترپردیش کے امیٹھی میں ہفتہ دیر رات اسمرتی ایرانی کے قریبی سابق پردھان کا گولی مار کر قتل کردیا گیا ۔ اطلاعات کے مطابق جامو تھانہ حلقہ کے برولیا گاوں کے سابق پردھان سریندر سنگھ کو نامعلوم بدمعاشوں نے گولی مار کر موت کے گھاٹ اتار دیا ۔ بدمعاشوں نے واقعہ کو اس وقت انجام دیا جب ...