بھٹکل میں کرناٹکا ٹیکسی ڈرائیورس کی طرف سے وہائٹ بورڈ ٹیکسی کے خلاف کاروائی کرنے پولس سے مطالبہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 19th October 2020, 12:49 AM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 18 اکتوبر (ایس او نیوز) ٹیکس کی چوری کرتے ہوئے حکومت کو دھوکہ دے کر وہائٹ بورڈ ٹیکسی پر مسافروں کو ایک جگہ سے دوسری جگہ لے جایا جارہا ہے، اس طرح کے وہائٹ نمبر پلیٹ والی ٹیکسیوں پر  پابندی عائد کرنے کا مطالبہ لے کر کرناٹک ٹیکسی ڈرائیور یونین ، بھٹکل یونٹ کی طرف سے بھٹکل ٹاون پولس تھانہ اور بھٹکل رورل پولس تھانہ کو میمورنڈم پیش کیا گیا جس میں پولس حکام سے شکایت کی گئی کہ  بعض پرائیویٹ کار والے اپنی  وہائٹ بورڈ والی کار سے لوگوں کو کرایہ پر مینگلور، گوا اور دوسرے شہروں میں لے جاتے ہیں جس کے نتیجے میں  اصلی ٹیکسی والوں(یلّو نمبر پلیٹ والی ٹیکسی)  کا جینا مشکل ہوگیا ہے۔

ٹیکسی یونین کی طرف سے  پولس تھانہ کو میمورنڈم کے ساتھ بعض  کرایہ پر لے جانے والے کاروں کے نمبرس بھی فراہم کئے  گئے ہیں اور بتایا گیا ہے کہ کون کونسی وہائٹ نمبر پلیٹ والی کاروں کو ٹیکسی کے طور پر استعمال کیا جارہا ہے۔

ڈرائیوروں نے پولس کو بتایا کہ وہائٹ بورڈ والی ٹیکسی کے ذریعے مسافروں سے کرایہ حاصل کئے جانے سے  یلّو بورڈ والے ٹیکسی ڈرائیوروں کے لئے بہت زیادہ مشکلات پیش آرہی ہیں، ہمیں یلو بورڈ کے لئے سرکار سے منظوری لینی پڑتی ہے، حکومت کو  زائد ٹیکس بھرنے پڑتے ہیں، مگر پرائیویٹ کار والے حکومت کی انکھوں میں دھول جھونکتے ہوئے اپنے پرائیویٹ  کاروں کو ہی ٹیکسی کے طور پر  استعمال کرتے ہیں اور مسافروں کو لے جاتے ہیں، ایسا کرنے سے   ہمیں مسافر نہیں مل رہے ہیں، ہمارا دن کا خرچہ نہیں نکل رہا ہے، ہم حکومت کو بھاری بھرکم ٹیکس بھرنے کے باوجود ہمارا پورا دن ہاتھ خالی رہتا ہے۔ 

پولس تھانہ میں میمورنڈم پیش کرنے کے بعد اخبار نویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے یونین والوں نے بتایا کہ اگر لوگ یلّو بورڈ والی ٹیکسی پر سوار ہونے کے بجائے وہائٹ بورڈ والی گاڑیوں پر سفر کریں گے تو  اُنہیں آئندہ چل کر دشواری پیش آئے  گی کیونکہ  وہائٹ بورڈ پر سوار ہوکر کہیں جانے کی صورت میں  یونین کے اراکین  اُن کو راستے میں ہی روکیں گے اور گاڑی سے باہر نکالیں گے، پھر گاڑی کو پولس کے حوالے کیا جائے گا۔ ایسی صورت میں ایمرجنسی مینگلور یا ائرپورٹ کے لئے جانے والوں کو سخت دشواری پیش آسکتی ہے۔ یونین کے اراکین کا کہنا ہے کہ  یونین کے اراکین کے ذریعے  ایسی گاڑیوں کو روکنے کا سلسلہ جاری ہے، کئی گاڑیوں کو پولس کے حوالے کیا جاچکا ہے جس کے نتیجے میں بالخصوص ائرپورٹ جانے والے مسافروں کو سخت دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ ڈرائیور یونین والوں نے عوام الناس سے درخواست کی ہے کہ وہ برائے کرم یلو بورڈ والی سواریوں پر ہی سفر کریں۔

میمورنڈم دینے کے موقع پر  عبدالمجید، فیصل، تمیا نائک،  فیاض، مشتاق، فیروز اور موہن سمیت کافی دیگر اراکین موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

اڈپی میں نابالغ ہندو لڑکی کامبینہ اغواء۔ سنگھیوں نے کیا احتجاجی مظاہرہ۔ لگایا ’لوجہاد‘ کا الزام

تین دن پہلے ایک ہندونابالغ لڑکی کا اغواء مسلم نوجوان کی طرف سے کیے جانے کا الزام لگاتے ہوئےہیری اڈکا پولیس اسٹیشن کےسامنے بشمول بی جے پی دیگر ہندونواز سنگھی تنظیموں نے احتجاجی مظاہرا کیا اور اے ایس پی کے توسط سے سپرنٹنڈنٹ آ ف پولیس کےنام میمورنڈم پیش کیا۔

بھٹکل میں 3نومبرکو ہوگی اتی کرم داروں کی خصوصی میٹنگ

حالیہ دنوں میں بھٹکل تعلقہ کےمختلف علاقوں میں محکمہ جنگلات کے افسران اور عملےکی طرف سے اتی کرم داروں کو جو اذیت دی جارہی ہے اس کا جائزہ لینے کے لئے ایک خصوصی میٹنگ  3نومبر کو بھٹکل کے ستکار ہوٹل صبح 10بجے منعقد ہوگی۔

بھٹکل میں محکمہ جنگلات کے دفتر کے باہر اتی کرم داروں نے کیا احتجاجی مظاہرہ

بھٹکل تعلقہ کے جالی پنچایت، ہیبلے پنچایت اور دوسرے علاقوں میں کل محکمہ جنگلات کےافسران اور عملے نے اتی کرم  جگہوں پر تعمیرات روکنے اور قبضہ خالی کروانے کی جو مہم چلائی تھی اس کے خلاف بھٹکل محکمہ جنگلات کے دفتر کےسامنے اتی کرم داروں نے احتجاجی مظاہرہ کیا۔

بھٹکل میں 3نومبرکو ہوگی اتی کرم داروں کی خصوصی میٹنگ

حالیہ دنوں میں بھٹکل تعلقہ کےمختلف علاقوں میں محکمہ جنگلات کے افسران اور عملےکی طرف سے اتی کرم داروں کو جو اذیت دی جارہی ہے اس کا جائزہ لینے کے لئے ایک خصوصی میٹنگ  3نومبر کو بھٹکل کے ستکار ہوٹل صبح 10بجے منعقد ہوگی۔