بھٹکل میں مذہبی مراکز کے ذمہ داران کے ساتھ میٹنگ میں اے ایس پی نے دیا مذہبی لیڈران کو انتباہ : رہنما خطوط پر اگرعمل نہیں ہوا تو لیڈران کے خلاف ہی کی جائے گی قانونی کارروائی

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 9th June 2020, 12:45 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:9؍جون (ایس اؤ نیوز) بھٹکل میں مذہبی مراکز کے ذمہ داران کے ساتھ تعلقہ انتظامیہ کے آفسران کی میٹنگ میں اے ایس پی نکھل نے مذہبی لیڈران کو انتباہ دیا کہ اگر سرکار کی جانب سے جاری کئے گئے رہنما خطوط پر عملنہیں  کیا گیا   تو مذہبی   لیڈران کے خلاف ہی قانونی کاروائی کی جائے گی۔

اسسٹنٹ ایس پی نکھل نے یہاں بھٹکل اے کے حافظکا ہال میں مختلف  مذہبی مراکز کے عہدیداران اور لیڈران سمیت بھٹکل کے سرکردہ ذمہ داران کے ساتھ منعقدہ میٹنگ میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دومہینوں سے عوامی تعاون کے ذریعے کورونا وائرس پر قابو پانے میں جو کامیابی ملی ہے وہ اطمینان بخش ہے۔ لاک ڈاؤن میں ڈھیل دیتے ہوئے تجارتی معاملات، دکانیں  وغیرہ کھل چکی  ہیں، بازاروں میں لین دین بھی جاری ہوچکا  ہے ، ایسے میں مساجد ، منادر اور چرچ کو بھی عوام کے لئے کھولنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ لیکن  ایسے میں مذہبی مقامات پر انتظامیہ کے عہدیداران اور ذمہ داران کے لئے ضروری ہے کہ  وہ سرکار کی طرف سے جاری  رہنما خطوط پر مکمل عمل آوری کو یقینی بنائیں ، اس سلسلے میں اگر کوئی کوتاہی ہوتی ہے تو ان کے خلاف قانونی کارروائی کرنا طئے ہے۔

سرکاری اصول و ضوابط کی تفصیلات پیش کرتے ہوئے  انہوں نے بتایا کہ مسجدوں ، مندروں اور چرچوں میں ماسک پہننا ، طبعی دوری کو برقرار رکھنا ، سانیٹائزیشن ، تھرمل اسکریننگ لازمی ہے۔ اسی طرح ٹائلیٹ کی صفائی پر بھی خاص دھیان دینا ہوگا۔ حاملہ ، 65سالہ عمر سے زائد بزرگ حضرات اور 10سال سے کم عمر والے بچوں کے مذہبی مراکز میں داخلے پر پابندی ہے۔ آئندہ دنوں میں وبائی مرض مزید پھیلنے کا خدشہ ہے اس سلسلے میں ذمہ داران ہی اپنے اپنے لوگوں کو سمجھانے کا کام کریں۔ اگر بعد میں کوئی یہ کہتا ہے کہ ہم نے رہنما خطوط کا مطالعہ نہیں کیا  ہمیں بات سمجھ میں نہیں آئی ، اس طرح کے   بہانوں سے قانونی رعایت پانے کی کوشش نہ کریں، کسی کو بھی کوئی رعایت نہیں دی جائے گی۔ بھٹکل میں موجودہ حالات رواں رہتے ہیں تو آئندہ لاک ڈاؤن میں مزید ڈھیل دی جائے گی ۔ اس سے قبل ہم سب میں قانون پر عمل آوری کا شعور پیدا ہونا ضروری ہے۔ دوبارہ کورونا پھیلنے کی علامتیں نظر آئیں تو لاک ڈاؤن کا نفاذ مجبوری ہوگی  تو ذمہ داران  اس کو ذہن میں رکھتے ہوئے رہنما خطوط پر عمل کرنے اور کروانے  کی ذمہ داری قبول کریں ۔

ان سے قبل بات کرتےہوئے بھٹکل کے اسسٹنٹ کمشنر بھرت نے کہاکہ عوام دوری برتتے ہوئے مذہبی مراکز میں داخل ہوں۔ اگر انتظامیہ اس کا انتظام کرتی ہے تو وہ ایک بہترین کام ہوگا۔ تھرمل اسکریننگ ، سانیٹائزیشن وغیرہ کے لئے رضاکاروں کو نامزد کرنے کی صلاح دی۔ تحصیلدار ایس روی چندر، سی پی آئی دیواکروغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

کاروار:ایس ایس ایل سی امتحان کے نتائج۔ سرسی کی سنّدھی ہیگڈے نے پایا ریاست میں پہلا رینک

امسال ریاست میں ایس ایس ایل سی کے جو امتحانات ہوئے تھے اس کا سامنا طلبہ نے کووڈ وباء کے پس منظر میں ذہنی تناؤ کے ساتھ کیا تھا۔اس کے بعد کافی دنوں سے طلبہ بڑی بے چینی کے ساتھ اپنے نتائج کا انتظار کررہے تھے۔

یلاپورکے دیہات میں محکمہ جنگلات کے افسران اور عملے کی طرف سے مسلسل ہراسانی کے خلاف بھٹکل میں دیا گیا میمورنڈم

ضلع شمالی کینرا کے یلاپور تعلقہ میں گولاپور نامی دیہاتی علاقے میں رہائش پزیر ایک 70سالہ خاتون اوراس کے خاندان کو محکمہ جنگلات کے افسران اور عملے کی جانب سے مسلسل ہراساں کیے جانے کا الزام لگاتے ہوئے جنگلاتی زمین پر بسنے والے لوگوں کے حقوق کے لیے جدوجہد میں مصروف تنظیم نے وزیر ...