بھٹکل میں محکمہ جنگلات کے افسران کے ساتھ اجلاس میں احتجاجی کمیٹی کے صدر رویندرا ناتھ کی شرکت

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th April 2019, 11:31 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 13؍اپریل (ایس او نیوز) محکمہ جنگلات کے دفتر میں افسران اور جنگلاتی زمین کے اتی کرم داروں کے ساتھ ایک مشترکہ اجلاس منعقد کیا گیا جس میں جنگلاتی زمین کے حقوق کی جدوجہد کرنے والی ہوراٹا سمیتی کے ضلع صدر رویندرا ناتھ نے شرکت کی۔

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ یہ خبر عام ہوئی ہے کہ محکمہ جنگلات کے افسران نے بھٹکل تعلقہ کے 1863اتی کرم داروں کو ان کے قبضے والی زمینوں سے بے دخل کرنے کے لئے حکومت کو سفارش بھیجی ہے۔ مگر اس بات میں کوئی سچائی نہیں ہے۔اگر کبھی اتی کرم داروں کواس طرح بے دخل کرنے کا قدم اٹھایا گیا تو پھر ہوراٹا سمیتی کی جانب سے ہر قسم کا احتجاج شروع کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ جس زمین پر لوگ رہائش اختیار کرکے 30سے40 برس کا عرصہ گزر چکا ہے۔ گھروں کے ٹیکس اداکیے جارہے ہیں۔ اتی کرم کو سکرم کرنے کی درخواستیں جمع کی گئی ہیں۔ جی پی ایس کا عمل بھی کیا گیا ہے۔اس کے باوجود محکمہ جنگلات کے افسران غریب اتی کرم داروں کو ایک باتھ روم تک باندھنے کی اجازت نہیں دے رہے ہیں۔ان کے خلاف مسلسل ظلم وستم کیا جارہا ہے۔ جبکہ امیر اتی کرم داروں کی طرف سے افسران آنکھیں موند لیتے ہیں۔ رویندرانائک نے محکمہ جنگلات کے افسران سے مطالبہ کیا کہ غریب اتی کرم داروں کو انصاف دلانے کا کام کریں۔

اس پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اے سی ایف بالچندرا نے کہا کہ اتی کرم کے معاملے میں بھٹکل اور ضلع کے دوسرے تعلقہ جات میں بڑا فرق نظر آرہا ہے۔ قبضہ کی گئی زمین پر اتی کرم داروں کی رہائش اہم بات ہوتی ہے۔اتی کرم داروں کو بے دخل کرنے کے لئے حکومت سے کی گئی سفارش کا معاملہ پرانا ہے۔ دوبارہ اس پرکا جائزہ لینے کا کام کیا جارہا ہے۔ پرانا قبضہ داروں کو تنگ کرنے کا کام ہم نہیں کررہے ہیں۔ ماضی میں چند معاملات میں فوجداری مقدمات درج ہوئے ہیں اوراس تعلق سے قانونی کارروائی شروع ہوئی ہے جس کی وجہ سے کچھ مسائل کھڑے ہوگئے ہیں۔ 

اس موقع پر اتی کرم ہوراٹا سمیتی بھٹکل تعلقہ صدر راما موگیرکے علاوہ رضوان، عبدالقیوم، دیوراج وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے کورونا؛ 122 نئے کیسس، صرف گلبرگہ میں ہی 29 پوزیٹو کی تصدیق، دکشن کنڑا اور اُڈپی میں بھی بڑھ رہے ہیں معاملات

ریاست کرناٹک میں  کورونا کیسس تھمنے کا نام نہیں رہے ہیں اور ہرروز سو سے زائد معاملات درج کئے جارہےہیں ۔ آج بدھ کو ریاست میں 122 کورونا پوزیٹو کیسس کی تصدیق کی گئی ہے جس میں سب سے زیادہ گلبرگہ سے 28 معاملات سامنے آئے ہیں، یادگیر سے16، ہاسن سے 15جبکہ ضلع اُترکنڑا میں چھ،  پڑوسی ضلع ...

انکولہ ۔ہبلی ریلوے منصوبہ : ماہرین ماحولیات کے خلاف اسنوٹیکر گرم

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبے کو لے کر ماہرین ماحولیات کے خلاف  جے ڈی ایس لیڈر آنند اسنوٹیکر نے سخت اعتراض جتاتے ہوئے کہا ہے کہ اس منصوبے کے تعلق سے مداخلت یا مخالفت نہ کریں تو بہتر ہے ورنہ ماہرین ماحولیات کی طرف سے فاریسٹ کی جتنی زمین ہتھیائی گئی ہے ثبوت کے ساتھ پیش کرنے کی ...

اترکنڑا کے کمٹہ میں پی یو دوم کے سالانہ  پرچوں کے جانچ مرکز کے قیام کا مطالبہ

اترکنڑا کے کمٹہ تعلقہ  میں پی یو سال دوم کے سالانہ پرچوں کے جانچ مرکز کے قیام کا مطالبہ لے کر اترکنڑا پی یو لکچررس اسوسی ایشین نے ضلع ایڈیشنل ڈی سی ناگراج سنگریر کی معرفت ریاستی وزیر تعلیم سریش کمار کو   میمورنڈم سونپا۔

ضلع اُترکنڑا میں کورونا کےپھر 6 معاملات؛سداپور میں بھی پہنچ گیا کورونا

ضلع اُترکنڑا میں آج بدھ کو مزید چھ  کورونا پوزیٹو معاملات سامنے آنے کے ساتھ ہی  ضلع میں کورونامتاثرین کی تعداد بڑھ کر 73 ہوگئی ہے۔  ضلع میں انکولہ، ہلیال اور سداپور  ایسے تعلقہ جات تھے جہاں اب تک کورونا نے دستک نہیں دی تھی، مگر آج سداپور کے ایک شخص میں بھی کورونا کے اثرات ...

بھٹکل میں خدمات انجام دینے والے کورونا کے خصوصی آفسر ڈاکٹر شرتھ نائیک اب ہوں گے ضلع ہیلتھ آفسر

بھٹکل میں کورونا وباء پر قابو پانے کے لئے کاروار سے ڈاکٹر شرتھ نائیک کو بھٹکل روانہ کرکے انہیں نوڈل آفسر کی ذمہ داری سونپی گئی تھی، اُنہیں اب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پرخدمات انجام دینے والے  ڈاکٹر ...

بھٹکل میں ایک شخص نے کی خودکشی

یہاں آزادنگر فورتھ کراس میں ایک 22 سالہ نوجوان نے گھر کے ایک کمرے میں ہی  چھت سے لٹک کر خودکشی کرلی جس کی شناخت محمد مستقیم شیخ کی حیثیت سے کی گئی ہے۔