میں گوشت خورہوں، گوشت کھانے میں کیا حرج ہے؟ اپوزیشن لیڈر سدارامیا

Source: S.O. News Service | Published on 22nd August 2022, 12:42 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 22؍اگست (ایس او نیوز) میں ایک گوشت خور ہوں، گوشت کھانے میں کیا حرج ہے؟ آپ کی خوراک آپ کی ہے، ہماری خوراک ہماری ہے۔ یہ باتیں ریاستی قانون ساز اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سدارامیا نے کہیں۔ 

بروز اتوار چکبالا پور شہر میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جس دن وہ مڈکیر گئے تھے اس دن انہوں نے گیسٹ ہاؤس میں دوپہر کا کھانا کھایا تھا۔ میں شام کو مندر گیا۔ 

انہوں نے سوال کرتے ہوئے کہا کہ کیا خدا نے کہا کہ ایسی ہی چیز کھا کر میرے سامنے آنا؟ انہوں نے اعتراض کرنے والوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ رات کو گوشت کھا کر صبح مندر جاسکتے ہیں تو دوپہر کو گوشت کھا کر شام کو مندر کیو نہیں جاسکتے۔ 

انہوں نے بی جے پی پر تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ بی جے پی کو دہی کنکریاں نکالنے کا شوق ہے ۔ جہاں کچھ ہوگا وہاں وہ لوگ زہر ملا دیتے ہیں۔ 

انہوں نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ان کی کار پر انڈا پھینکنے والا کانگریس پارٹی سے ہے، ایسا بیان اس شخص سے بی جے پی والوں نے زیردستی دلایا ہے۔ وہ شخص آر ایس ایس سے تعلق رکھنے والا ہے، حکومت نے منصوبہ بند طریقہ سے یہ حملہ کروایا ہے۔ سدارامیا نے کہا کہ بی جے پی والے ٹیپو سلطان کی مخالفت کرتے ہیں۔ جبکہ بی ایس ایڈی یورپا اور جگدیش شٹر نے ٹیپو سلطان کی حمایت میں کیا کچھ کہے ہیں، اس بارے میں میرے پاس جانکاری ہے۔ اس وقت بی جے پی کے ان قائدین کے خلاف کیوں احتجاج نہین کیا گیا؟ 

ایڈی یورپا نے ٹیپو کا پیٹھا اور تلوار تھامے ہوئے تصویر میں موجود ہین، اس وقت بی جے پی اور پرہلاد جوشی کہاں چلے گئے تھے، اس لیے میں کہتا ہوں کہ بی جے پی والے ڈھونگی افراد کی ٹیم ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:کانگریس لیڈر رماناتھ رائے نے کہا؛ سی ٹی روی کے بیان نے بی جےپی کو ننگا کردیا ہے

بی جے پی میں راؤڈی شیٹر وں کی شمولیت کی حمایت میں سی ٹی روی نے جو بیان دیا ہے، اُس بیان نے بی جے پی کو ننگاکردیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار  سابق وزیر  اور کے پی سی سی کے نائب صدر بی ، رماناتھ رائی  نے کیا۔

مہاراشٹر-کرناٹک سرحد تنازعہ میں شدت، بیلگاوی میں مہاراشٹر کے ٹرکوں پر پتھراؤ، حالات کشیدہ

کرناٹک اور مہاراشٹر کے درمیان جاری سرحد تنازعہ نے بیلگاوی علاقہ میں حالات کو کشیدہ کر دیا ہے۔ سرحدی علاقہ بیلگاوی میں تشدد کے واقعات پیش آ رہے ہیں اور منگل کے روز تو بیلگاوی کے باگیواڑی میں شدید احتجاجی مظاہرہ دیکھنے کو ملا۔ اس دوران کرناٹک رکشن ویدیکے سے جڑے کارکنان نے ...

’مہاراشٹر کے وزراء نے بیلگاوی میں قدم رکھا تو ہوگی قانونی کارروائی‘، کرناٹک کے وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی نے کیا متنبہ

مہاراشٹر اور کرناٹک کے درمیان سرحدی تنازعہ کو لے کر بیان بازی لگاتار بڑھتی جا رہی ہے۔ تازہ بیان کرناٹک کے وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی کا سامنے آیا ہے جس میں انھوں نے مہاراشٹر حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر ان کے وزراء نے کرناٹک کے بیلگاوی میں قدم رکھنے کی کوشش کی تو ان کے ...

منڈیا : مالا دھاری بھکتوں نے لگائے سری رنگا پٹن جامع مسجد کو ہنومان مندر بنانے کے نعرے - مسجد میں گھسنے کی کوشش پولیس نے کر دی ناکام  

زعفرانی جھنڈے اٹھائے ہوئے ہزاروں  مالا دھاری ہنومان بھکتوں کا جلوس 'سیکیرتھنا یاترا' کی شکل میں ہنومان مندر کی طرف جاتے ہوئے جب تاریخی سری رنگا پٹن جامع مسجد کے سامنے پہنچا تو نوجوان بھکتوں نے اچانک اشتعال انگیزی شروع کر دی اور جامع مسجد کو ہنومان مندر میں بدلنے کے نعرے لگانے ...

مرکزی حکومت کی طرف سے دلت، پسماندہ اور اقلیتی طلباء کا اسکالرشپ ختم کیا جانا انہیں تعلیمی حقوق سے بتدریج محروم کرنے کی حکمت عملی ہے: ایس ڈ ی پی آئی

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا کرناٹک کے ریاستی صدر عبدالمجید نے اپنے جاری کردہ اخباری بیان میں کہا ہے کہ مرکزی حکومت کی طرف سے تعلیمی سال 23۔2022سے ایس سی، ایس ٹی، پسماندہ طبقات، اور اقلیتی برادریوں سے تعلق رکھنے والے پہلی سے آٹھویں جماعت کے تمام طلباء کو کوئی اسکالرشپ ختم ...