بھٹکل انجمن انجنئیرنگ کالج کے طلبا کو داخلے میں اسکالرشپ کے ذریعے رعایت : کالج کے طلبا ملٹی نیشنل کمپنیوں میں برسرروزگار

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 12th September 2021, 11:18 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل: 11؍ستمبر(ایس اؤ نیوز)انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے زیرسرپرستی چلنے والے انجمن انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی اینڈ مینجمنٹ (انجنئیرنگ کالج )ریاست کے معیاری کالجوں میں شمار کی جاتی ہے۔ہرسال کالج کے نتائج بہتر سے بہتر ہوتے جارہے ہیں، تعلیمی میعار میں بھی اضافہ ہورہاہے۔ ہم نے کورونا وباء کے دوران بھی اپنے  طلبا کی تعلیمی سطح پر خاص توجہ دی اور آن لائن کے ذریعے ہرطرح کی رہنمائی کی۔ ان خیالات کا اظہار کالج پرنسپال ڈاکٹر مشتاق بھاوی کٹی نے کیا۔

کالج کیمپس میں منعقدہ پریس کانفرنس میں انہوں نےکہاکہ انجمن کالج فی الوقت  6کمپنیوں کے ساتھ باہمی سمجھوتہ معاہدہ(ایم اؤ یو)کرچکی ہے آئندہ دنوں میں دیگر ملٹی نیشنل کمپنیوں کے ساتھ ایسے  مزیدمعاہدے کئے جائیں گے۔ کمپنیوں کے معاہدے سے طلبا کو انٹرشپ کی رہنمائی ہوتی ہے اور انہیں روزگار بھی مل جاتاہے۔

پرنسپال نے بتایا کہ گذشتہ برس کالج کے 26طلبا کامختلف کمپنیوں میں اور امسال 11طلبا کا تقرر ہوچکاہے کئی اور طلبا برسرروزگار ہوجائیں گے۔ اس کے علاوہ کالج کے الومنی بھی ہمارے طلبا کو مختلف کمپنیوں میں روزگار فراہم کرنے میں کامیاب ہوئےہیں۔ کے ایس سی ایس ٹی کی جانب سے کالج طلبا کے 6پروجکٹس کو منظوری دئیے جانے پر انہوں نے طلبا اور اساتذہ کو مبارکباد ی دی۔

انہوں نے بتایاکہ کالج کے سبھی شعبہ جات میں داخلے جاری ہیں،طلبا کو تعلیمی فیس میں اسکالرشپ کے ذریعے رعایت بھی دی جاتی ہے، انجمن ادارے کی طرف سے بھی اسکالرشپ دی جاتی ہے تو وہیں مرحوم جوکاکو عبدالرحیم کے خاندان والوں کی طرف سے غیر مسلم طلبا کو بھی اسکالرشپ دی جاتی ہے۔ہمارے کالج میں ہرمذہب اور طبقے کے طلبا  زیر تعلیم ہیں۔کالج میں  پرسکون تعلیمی فضا یہاں میسر ہونے کی بات کہی۔ کالج کے کسی بھی شعبہ کی تعلیمی فیس میں اضافہ نہیں کیا گیا ہے البتہ  یونیورسٹی کی طرف سے عائدکردہ نئے اصولوں کے مطابق شعبہ کمپیوٹر سائنس میں معمولی اضافہ کئے جانےکی جانکاری دی ۔

اسی طرح کالج کے پروفیسر ڈاکٹر راج کمار نے بتایا کہ انجمن کالج میں بہتر تعلیمی ماحول، تجرکار اسٹاف ہیں۔ کالج کے کئی طلبا و طالبات ملک و بیرونی ملک کے ملٹی نیشنل کمپنیوں میں برسرروزگار ہیں۔ کرناٹکا اسٹیٹ سائنس اینڈ ٹکنالوجی جیسےمشہور و نامی ادارے نے ہمارے فائنل ائیر طلبا کے 6پروجکٹس کومنظور کیاہے تو یونیورسٹی نے 10پروجکٹس کو منتخب کیاہے۔ اس کے علاوہ کئی طلبا پی ایچ ڈی بھی کررہے ہیں جب کہ 2طلبا کو پی ایچ ڈی کی ڈگری تفویض ہوچکی ہے۔ ہمارے طلبا کالج اساتذہ کی رہنمائی میں سمینار وویبنار میں شرکت کرتےہوئے اپنے تعلیمی معیار کو برابر بڑھاتے رہتےہیں۔

میکانکل شعبہ کے صدر ڈاکٹر فضل الرحمن نے اساتذہ اور ان کے معیار کے متعلق کہا کہ ہمارےہاں سنئیر اسٹاف ہیں، کئی ایک پی ایچ ڈی کئےہیں۔ کافی تجربہ کار ہیں۔ ہماری سبھی لیاب بھی اپ ٹو ڈیٹ ہیں۔ ہر سال نئی نئی چیزیں شامل کی جاتی رہی ہیں۔ شعبہ کے نتائج بھی کافی اچھے ہیں۔ اس موقع پر پروفیسر بھاگوت موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل : بی جے پی کو پنچایت نظام پر اعتماد نہیں ہے:ودھان پریشد انتخابات کے کانگریس تشہیری پروگرام میں  سابق وزیر دیش پانڈے کا ںیان

ہرپانچ سال کےبعد منعقد ہونےو الے تعلقہ پنچایت اور ضلع پنچایت انتخابات کو بی جے پی کی ریاستی حکومت نے بغیر کسی وجوہ کے معطل کیاجانا بی جے پی کو پنچایت اور جمہوری نظام پر اعتماد نہیں ہونےکا ظاہر کرتاہے۔ سابق وزیر کانگریس لیڈر آر وی دیش پانڈےنےان خیالات کااظہار کیا۔

ہبلی۔ انکولہ ریلوے لائن منصوبہ : عدالتی فیصلےکا ہوراٹا سمیتی نے استقبال کیا

ہبلی۔ انکولہ ریلوے لائن منصوبے کو جاری کئےجانے سےجنگلی جانوروں پرہونےو الے اثرات کا مطالعہ کرنے ہائی کورٹ نے قومی وائلڈ لائف بورڈ کو حکم دئیے جانے کا ہبلی۔ انکولہ ریلوے ہوراٹ سمیتی نے استقبال کیا ہے۔

اترکنڑا میں اچانک ہونے والی تیز رفتار بارش سے فصل ، گھروں کو نقصان : یلاپور تعلقہ میں ایک گھر زمین بوس

اترکنڑا ضلع بھر میں منگل اور بدھ کی رات اچانک طوفانی ہواؤں  تیز رفتار سے بارش بسنے سے جہاں عوام کو کئی پریشانیاں ہوئیں تو یلاپور تعلقہ کے امچگی میں نانو منجا دیواڑیگا کی ملکیت والا گھر مکمل زمین بوس ہوگیا ہے۔

کنداپور : زیورات کی نمائش گاہ سے 3 لوگوں نے  چرائیں سونے کی چوڑیاں

کنداپور تعلقہ کے کوٹیشور میں واقع یو وی اے میریڈین ہال میں 27 تا 29  نومبر کو جو زیورات کی نمائش لگی تھی اس میں گاہک کی شکل میں آنے والے تین لوگوں نے تقریباً 3 لاکھ روپے مالیت کی سونے کی چوڑیوں پر ہاتھ صاف کر دیا ۔

منگلورو : بغیر لائسنس کی بندوقیں رکھنے والا ایک شخص ایئرپورٹ پر گرفتار

منگلورو ایئر پورٹ کی حفاظتی ڈیوٹی پر تعینات سنٹرل انڈیا سیکیوریٹی فورس (سی آئی ایس ایف) کے عملہ نے برہماور کے رہنے والے رینالڈ ڈیسوزا کو بغیر لائسنس کی بندوقیں اپنی کار میں رکھنے کے الزام میں گرفتار کر لیا ۔