بھٹکل میں ڈاکٹر محمد حنیف کولا ٹرافی تعلقہ لیول کرکٹ ٹورنامنٹ میں انفا کی شاندار جیت؛ فائنل میں شاہین مخدوم کو دی پانچ وکٹوں سے شکست

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 2nd January 2022, 8:13 PM | ساحلی خبریں | اسپورٹس |

بھٹکل 2 جنوری (ایس او نیوز) بھٹکل تعلقہ اسٹڈیم  المعروف وائی ایم ایس اے  میدان میں منعقدہ بھٹکل تعلقہ لیول کرکٹ ٹورنامنٹ میں انفا نے شاندار جیت درج کرتے ہوئے فائنل مقابلے میں شاہین مخدوم کو پانچ وکٹوں سے شکست دے دی جس کے ساتھ ہی  قریب ایک ماہ سے جاری ٹورنامنٹ  دلچسپ  مقابلوں  کے بعداختتام کو پہنچ گیا۔

حنیف ویلفئیر اسوسی ایشن کے زیر اہتمام  ڈاکٹر محمد حنیف کولا ٹرافی   میں بھٹکل  تعلقہ سمیت منکی کی تین  ٹیموں کے ساتھ  35 ٹیموں نے حصہ لیا تھا، پہلا مقابلہ 5 ڈسمبر کو  ہوا تھا، آج 2 جنوری کو ٹورنامنٹ کا فائنل مقابلہ کھیلا گیا۔

اس سے قبل سیمی فائنل میں انفا نے لبیک نوائط کو  215 رنوں کا حدف دینے  کے باوجود ایک دلچسپ اور سخت مقابلے کے     بعد لبیک نوائط  کو شکست دی تھی، اسی طرح شاہین مخدوم نے سیمی فائنل میں  آرگنائزر حنیف  ویلفئیر اسوسی ایشن کو  66  رنوں سے    شکست دے کر فائنل میں رسائی حاصل کی تھی۔

فائنل میں  شاہین مخدوم نے  ٹوس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا اور اوپنراعجاز احمد اور نبیل نے شاندار بلے بازی کرتے ہوئے    بالترتیب 25 اور 38 رن بنائے، نبیل نے 19 گیندوں پر  تین چھکوں اور چار چوکوں کی مدد سے  38 رن بنائے تھے، اسی طرح اعجاز احمد نے  27 گیندوں پر  دو چوکوں کی مدد سے 25 رن بنائے تھے۔  شاہین مخدوم نے ابتدائی چار اووروں میں ہی 50 رن بنائے تھے اور اُس کی کوئی وکٹ نہیں گری تھی، مگر  ان دونوں کے آوٹ ہونے کےبعد  کھلاڑی ایک کے بعد ایک  آتے رہے اور پویلین لوٹتے رہے البتہ اس درمیان محمد غوث  نے 26 گیندوں پر  27 رن بناتے ہوئے   ٹیم کو سہارا دینے کی کوشش کی   مگر پوری ٹیم  19.1 اوورس میں   128 رن بنانے میں کامیاب رہی۔

انفا کے بلے باز جب  میدان میں اُترے تو لگ رہا تھا کہ  انفا آسانی کے ساتھ مقررہ حدف کو پار کرلیں گے، مگر   شاہین مخدوم کے باولروں نے کافی دم خم دکھایا، ابتدا میں ہی     اعجاز احمد نے    پہلے ہی اوور کی دوسری گیند پر عبدالباری خطیب  کو    صفر پر  چلتا کردیا، مگر دوسرے اینڈ پر موجود  نثار احمد نے شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے   بہترین شارٹس سے حاضرین کوخوب محظوظ کیا۔ انہوں نے  60 گیندوں پر ایک چھکہ اور  12 چوکوں کی مدد سے 80 رن بناتے ہوئے  اپنی ٹیم کو جیت دلانے تک کریز پر ہی آہنی دیوار کی طرح   ڈٹے  رہے اور آخر تک ناٹ آوٹ رہے۔ بہرحال انفا نے  18 ویں اوور میں   پانچ وکٹوں کی نقصان پر  مقررہ جیت کا حدف حاصل کرتے ہوئے  ٹورنامنٹ جیت لیا ۔

ٹورنامنٹ کے فائنل  کا مین آف دی میچ کا اعزاز     انفاء  کےنثار  کو  دیا گیا۔    پورے ٹورنامنٹ میں 247 رن بنانے پر حنیف ویلفئیر کے مغیرہ ایم جے کو بیسٹ بیٹسمین  اور ٹورنامنٹ میں  نپی تلی باولنگ کرتے ہوئے سب سے زیادہ وکٹیں (دس وکٹیں)  لینے والے رویل ٹیم  کے طلحہ ترچنا پلّی کو بیسٹ باولرکے اعزاز سے نوازا گیا۔ شاہین مخدوم کے اعجاز احمد نے پورے ٹورنامنٹ میں بہترین بلے بازی کرنے کے ساتھ ساتھ بہترین گیندبازی کا بھی مظاہرہ کیا اور ایک طرف پورے ٹورنامنٹ میں سب سے زیادہ  275 رن بنائے تو وہیں  ٹورنامنٹ میں دس وکٹیں بھی  حاصل کرنے میں کامیاب رہے جس کی بنا پر انہیں پلئیر آف دی ٹورنامنٹ کے خطاب  سے  نوازا گیا۔

اول انعام انفا کو  ٹرافی سمیت 40000 روپیہ نقد جبکہ رنرزآپ شاہین مخدوم کو ٹرافی سمیت 25000 روپیہ نقد انعام سے نوازا گیا۔ اسی طرح  فائنل میں جیت درج کرنے والی  ٹیم کے کھلاڑیوں کو فی کس دو دو ہزار روپئے اور رنرزآپ ٹیم کے سبھی کھلاڑیوں کو فی کس ایک ایک ہزا ر روپیہ انعام دیا گیا۔ یاد رہے کہ  بھٹکل میں  پہلی مرتبہ  ٹیم کے ساتھ ساتھ فائنل کھیلنے والی ٹیم کے تمام   کھلاڑیوں کو بھی نقد انعامات سے نوازا گیا۔

فائنل تقریب میں مہمان خصوصی کے طور پر  بھٹکل مسلم خلیج کونسل کے سکریٹری جنرل عتیق الرحمن مُنیری،  سابق سکریٹری جنرل محمد یونس قاضیا،  بھٹکل مسلم یوتھ فیڈریشن کے جنرل سکریٹری عمیر سعید رکن الدین،  اسپورٹس سکریٹری طلحہ ترچنا پلّی،   ڈاکٹر محمد حنیف کولا ٹرافی کے کنوینر سید سمیع کاظمی، حنیف ویلفئیر اسوسی ایشن کےصدر نثار ٹاپ رکن الدین ،  جنرل سکریٹری مولانا احمد اِیاد ایس ایم ندوی   ،دیگر ذمہ داران عبدالقادر کولا، آصف کولا وغیرہ موجود تھے۔ ٹورنامنٹ کو بہترین طور پر آرگنائز کرنے میں عبدالسلام کولا، سمعان کندن گوڑا، وفیق دامدا ،  عبدالودود کولا ، سید علی مالکی ، شریف مختصر  ، سلیم کندن گوڑا  و دیگر ذمہ داران پیش پیش تھے۔آخر میں کلمہ تشکر پیش کرتے ہوئے ابراہیم مائز  نے بالخصوص حنیف آباد ویلفئیر اسوسی ایشن کے  گلف کے اراکین  ضمان کولا، سلیم کولا،سِما ق جوباپو ، نواز کولاو دیگر  ذمہ داران کا  بھی  بہترین تعاون پیش کرنے پر شکریہ ادا کیا۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں زوردار بارش سے ہوئے نقصانات پر ایم ایل اے نے کہا؛ 4483 بارش سے متاثرہ مکانات میں سے اب تک 3890 گھروالوں میں معاوضہ تقسیم

   2 اگست کو بھٹکل میں  ہوئی زوردار بارش کے نتیجے  میں جو  نقصانات  ہوئے تھے، اس پر بھٹکل  ایم ایل اے  سنیل نائک نے کہا کہ مشکل کی  اس گھڑی میں پہلے دن سے ہی  وہ عوام کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ بارش سے جملہ  4483    مکانات میں پانی گھس جانے سے گھروں کے اندر موجود کافی چیزوں کو نقصان پہنچا ...

بھٹکل تعلقہ میں برسات کی تباہ کاریاں - اہم دستاویزات سیلاب کی نذر ہونے سے متاثرین کو ہوسکتی ہیں دشواریاں

بھٹکل تعلقہ کے مختلف علاقوں میں پچھلے دنوں شدید بارش کے بعد جو سیلابی کیفیت پیدا ہوئی تھی اس دوران جن گھروں میں پانی گھس آیا تھا ان میں سے کئی لوگوں کا کہنا ہے کہ ان کے ساز و سامان کے علاوہ کئی اہم دستاویزات بھی  پانی میں بھیگ کر خراب ہوگئے ہیں جس کی وجہ سے انہیں بڑی دشواریوں کا ...

بھٹکل : مٹھلّی گرام میں لال پتھروں کی کھدائی والے علاقے میں بسنے والوں پر منڈلا رہا ہے خطرہ

گزشتہ دنوں ہوئی بھاری برسات کے بعد مٹھلّی گرام پنچایت علاقے میں پہاڑی کھسکنے سے چار افراد کی موت واقع ہونے کا جو واقعہ پیش آیا تھا اس کے بعد وہاں پر بسنے والے لوگ خوف اور خدشات میں گھر گئے ہیں ۔ 

بھٹکل میں زوردار بارش کا سلسلہ جاری؛ منڈلّی اسکول کی دیوار بیٹھ گئی - اسکول میں چھٹی رہنے سے ٹل گئی ٹریجڈی؛ اپسر گونڈا میں پہاڑی میں شگاف

سنیچر کے دن پوری رات برسنے والی بھاری بارش کی وجہ سے     منڈلّی میں واقع سرکاری اسکول نمبر 1 کی دیوار گر گئی اور چھت کا ایک حصہ  بھی منہدم ہوگیا ۔   واردات اتوار کو پیش آئی۔ یہ تو اچھا ہوا کہ اتوار ہونے کی بنا پر اسکول میں چھٹی تھی، اس لئے  ایک بڑا حادثہ ٹل گیا۔

بھٹکل تینگنگونڈی کے ماہی گیروں کو ایک ایک لاکھ روپیہ معاوضہ فراہم کرنے کا مطالبہ لے کر ویلفئیر پارٹی نے تحصیلدار کو دیا میمورنڈم

گذشتہ ہفتہ بھٹکل میں ہوئی  زبردست بارش میں جہاں کئی  مکانوں ، دکانوں  اور کھیتوں وغیرہ کو نقصان پہنچا وہیں ماہی گیروں کی کشتیاں اور مچھلیوں کا شکار کرنے والی بوٹوں کو بھی نقصان پہنچا ہے، کئی ماہی گیروں کی کشتیاں سمندر میں بہہ کر لاپتہ بھی ہوئی ہیں  تو بعض  کی کشتیاں سمندر میں ...

کامن ویلتھ گیمز: ارشد ندیم نے طلائی تمغہ جیتا تو نیرج چوپڑا نے کہا ’آل دی بیسٹ‘

جیولن  تھرو کے دو بہترین کھلاڑی نیرج چوپڑا اور ارشد ندیم آپس میں بہترین دوست بھی ہیں۔ ہندوستانی کھلاڑی نیرج چوپڑا اور پاکستانی کھلاڑی ارشد ندیم ایک دوسرے کو ’بھائی‘ کہہ کر مخاطب کرتے ہیں۔

کامن ویلتھ گیمز 2022: سندھو کے بعد لکشیہ سین نے بھی کیا کمال، حاصل کیا طلائی تمغہ

ہندوستان کا کامن ویلتھ گیمز میں شاندار مظاہرہ جاری ہے۔ ویٹ لفٹنگ، کشتی کے بعد اب ہندوستانی بیڈمنٹن اسٹارس نے کمال کر دیا۔ پی وی سندھو کے بعد بیڈمنٹن اسٹار لکشیہ سین نے کامن ویلتھ گیمز 2022 کے بیڈمنٹن سنگلز فائنل میں ملیشیا کے تجے ینگ کو شکست دے کر طلائی تمغہ اپنے نام کیا ہے۔

کامن ویلتھ گیمز 2022 : نکہت زرین اور شرت کمل ہوں گے اختتامی تقریب میں ہندوستانی پرچم بردار

انگلینڈ کے برمنگھم میں کھیلے جا رہے 22ویں کامن ویلتھ گیمز کا آج یعنی 8 اگست کو آخری دن ہے۔ آج ہی ان کھیلوں کا اختتام ہو جائے گا اور اختتامی تقریب کا انعقاد عمل میں آئے گا۔ اس اختتامی تقریب میں ایک بار پھر سبھی ممالک کے نئے پرچم بردار دکھائی دیں گے۔

ہندوستان نے ویسٹ انڈیز کو پانچویں ٹی20 میں بھی شکست دی ، سیریز پر1-4 سے قبضہ

 ہندوستانی ٹیم نے ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کا پانچواں ٹی20 میچ اتوار کو 88 رنوں کے بڑے فرق سے جیت لیا۔ اسی کے ساتھ ٹیم انڈیا نے 5 میچوں کی ٹی20 سیریز 1-4 سے اپنے نام کیا۔ فلوریڈا کے لاڈرہل میں کھیلے گئے اس مقابلے میں ہندوستان نے مقررہ 20 اوور میں 7 وکٹ پر  188 رن بنائے۔

کامن ویلتھ گیمز: ہندوستان نے ایک دن میں جیتے 5 طلائی، 4 نقرئی اور 6 کانسے، اب تک 55 تمغے حاصل

  برطانیہ کے برمنگھم میں کھیلے جا رہے کامن ویلتھ گیمز 2022 میں ہندوستانی کھلاڑیوں کا شاندار کارکردگی کا مظاہرہ جاری ہے۔ کھیلوں کے دسویں دن (اتوار کے روز) 7 اگست کو ہندوستان نے 15 تمغے اپنے نام کئے۔ اس میں 5 گولڈ، 4 سلور اور 6 برونز میڈل شامل ہیں۔ اسی کے ساتھ ٹیبل ٹینس اور بیڈمنٹن میں ...