بی بی ایم پی اسکولوں میں 54فیصد طلبہ کی حاضری، طلبہ کی تھرمل اسکریننگ اورسیانٹائزکے بعد داخلہ

Source: S.O. News Service | Published on 25th August 2021, 11:28 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،25؍اگست(ایس او  نیوز) کووڈ۔ 19کی وجہ سے گزشتہ دیڑھ سال سے آن لائن کے ذریعہ تعلیم حاصل کر تے ہوئے مایوس ہو چکے طلبہ کے چہروں میں اسکولوں کو لوٹنے کی خوشی کی لہر دکھا ئی دے رہی ہے۔بروہت بنگلور مہا نگر پا لیکے(بی بی ایم پی) کے تمام ہائی اسکولس اور پری یو نیورسٹی کالجوں میں 50فیصد سے زائد طلبہ نے حاضری دی ہے۔ بی بی ایم پی کے33ہائی اسکولس اور16پری یو نیورسٹی کالجوں میں طلبہ کی حاضری54.31فیصد رہی ہے۔بی بی ایم پی ہائی اسکولوں او کالجوں میں طلبہ کے خیر مقدم کر تے ہو ئے تعلیمی اداروں کے باہر پلروں کو ناریل کی پتیوں سے سبز کیا گیا تھا،اساتذہ نے اسکولوں کے صحن میں رنگولی ڈال رکھی تھی،ہر ایک طالب علم کو گلاب کا پھول پیش کر تے ہو ئے ان کا خیر مقدم کیا گیا۔طلبہ اپنے والدین کے ہمراہ اسکول پہنچے تھے،ہر ایک طالب علم کا تھرمل اسکریننگ ٹسٹ،سیا نیٹائز اور سماجی فاصلہ کے تحت کلاس روم میں داخل کیا گیا۔ہر ایک ڈسک پر صرف دو ہی طلبہ کو بیٹھنے کا مو قع دیا گیا ہے،طلبہ کے ساتھ آئے والدین کو اسکولوں میں ہی بیٹھنے کا موقع دیا گیا تھا،طلبہ کو ایک دوسرے کا کھانانہ دینے کی ہدایت دی گئی تھی۔آسٹن ٹاؤن،ہیروہلی، سری رام پورہ،کاکس ٹاؤن،بیرسندرا، بنپا پارک،شانتی نگر سمیت33ہائی اسکولس میں نویں تا دسویں جماعت میں 4,739طلبہ نے داخلہ لیا تھا جس میں 2,574(54.31فیصد) طلبہ نے حاضری دی،اسی طرح پری یو نیورسٹی کالجوں میں 1,350طلبہ نے داخلہ لیا ہے جن میں 812طلبہ نے حاضری دی ہے۔بی بی ایم پی کلیو لینڈ ٹاؤن کی زنانہ پی یو کالج کے پرنسپل بالپا نے بتا یا کہ ہفتہ کے دن ہی کالج کو سیناٹائز کر نے کے علاوہ تما م کمروں کی صفائی کی گئی تھی۔بی بی ایم پی شعبہ تعلیم کے اسسٹنٹ کمشنر لو کیش نے بتا یا کہ طلبہ کے خیر مقدم کے لپے الگ الگ قطاریں بنائے گئے تھے،طلبہ کو دھیرے دھیرے قطاروں کے ذریعہ کلاس رومس میں داخل کیا گیا،تمام طلبہ کووڈ ضوابط پر عمل کر تے ہو ئے ماسک پہنے ہو ئے تھا اور سماجی دوری اختیار کر رکھی تھی۔ہیرو ہلی میں واقع بی بی ایم پی ہائی اسکول کے پرنسپل ناگراج نے طلبہ کو کلاس روم میں داخل ہو نے سے قبل کووڈ ضوابط پر عمل کر نے کی ہدایت دی۔لو کیش نے بتا یا کہ بی ی ایم پی تعلیمی اداروں میں تعلیم حاصل کر نے والے طلبہ کی اکثریت کمزور طبقات سے ہوا کرتی ہے۔ انہوں نے بتا یا کہ شروعات میں صرف 50فیصد طلبہ نے کلاسوں میں حاضر ی دی ہے،چند طلبہ اور ان کے والدین میں ابھی بھی کووڈ کا خوف دکھائی دے رہا ہے اس خوف کو دور کرنے کے لئے بیداری پیدا کر نے کی ضرورت ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مسلمانوں میں نکاح معاہدہ ہے نہ کہ ہندو شادی کی طرح رسم، طلاق کے معاملے پرکرناٹک ہائی کورٹ کااہم تبصرہ

کرناٹک ہائی کورٹ نے اہم تبصرہ کرتے ہوئے کہاہے کہ مسلمانوں کے یہاں نکاح ایک معاہدہ ہے جس کے کئی معنی ہیں ، یہ ہندو شادی کی طرح ایک رسم نہیں ہے اور اس کے تحلیل ہونے سے پیدا ہونے والے حقوق اور ذمہ داریوں سے دور نہیں کیا جاسکتا۔

کرناٹک سے روزانہ 2100کلو بیف گوا کو سپلائی ہوتاہے : وزیر اعلیٰ پرمود ساونت

بی جے پی کی اقتدار والی ریاست کرناٹک سے روزانہ 2000کلوگرام سے زائد جانور اور بھینس کا گوشت (بیف)گوا کو رفت ہونےکی جانکاری بی جے پی اقتدار والی ریاست گوا کے وزیرا علیٰ پرمود ساونت نے دی۔ وہ گوا ودھان سبھا کو تحریری جواب دیتےہوئے اس بات کی جانکاری دی ۔

کرناٹک کے داونگیرے میں ایک لڑکی نے والدین سمیت 4 افرادکو سلایا موت کی نیند؛ کیا ہے پورا واقعہ

کرناٹک میں ایک لڑکی نے امتیازی سلوک سے تنگ آکر اپنے پورے خاندان کو زہر دے کر ہلاک کردیا۔ جب فارنسک رپورٹ منظر عام پر آئی تو انکشاف ہوا کہ اس خاندان کی موت رات کے کھانے میں پائے جانے والے زہر سے ہوئی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق داونگیر میں ایک 17 سالہ لڑکی کو کچھ عرصے سے اپنے خاندان ...

ہبلی میں مبینہ تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے شدت پسند ہندو تنظیموں کے کارکنوں نے چرچ کے اندر گھس کر گایا بھجن

ہبلی میں تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں کے کارکنوں نے ایک چرچ کے اندر گھس کر بھجن گانا شروع کردیا جس کی وائرل ہونے والی ویڈیو میں درجنوں مرد و خواتین کو دیکھا گیا ہے کہ وہ کس طرح ہبلی کے بیری ڈیوارکوپا چرچ کے اندر بیٹھے ہاتھ جوڑ کر بھجن گارہے ہیں۔