میرا گھر جلانے والوں کے خلاف قانونی جنگ جاری رہے گی، سابق میئر سمپت راج اورذاکر کی ضمانت کو سپریم کورٹ میں چیلنج: سرینواس مورتی

Source: S.O. News Service | Published on 21st February 2021, 1:37 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 21؍فروری(ایس او  نیوز) شہر کے پلیکشی نگرحلقہ کے رکن اسمبلی اکھنڈا سرینواس مورتی نے کہا ہے کہ ڈی جے ہلی اورکے جی ہلی پولیس تھانے کی حدود میں 11اگست2020کو ہوئے پرتشدد واقعات کے دوران ان کا گھر جلانے کے معاملہ میں جو بھی ملوث ہیں ان کے خلاف وہ اپنی قانونی اور سیاسی جنگ جاری رکھیں گے۔

اس سلسلہ میں حال ہی میں کرناٹک ہائی کورٹ کی طرف سے سابق میئر سمپت راج اور سابق کارپوریٹر اے آر ذاکر کو ضمانت پر رہا کئے جانے کے فیصلہ کا انہوں نے سپریم کورٹ میں چیلنج کیا ہے اورانہیں توقع ہے کہ ان دونوں پر تحقیقاتی ایجنسیوں نے جس طرح کے سنگین الزامات عائد کئے ہیں ان کی وجہ سے ان کی ضمانت کے احکامات پر سپریم کورٹ میں ضرور روک لگنے والی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے ان کی عرضی کو سماعت کے لئے منظور کرتے ہوئے دونوں ملزمین سمیت تمام فریقوں کو نوٹس جاری کئے ہیں۔ اگلی سماعت کے دوران ممکن ہے کہ عدالت عظمیٰ کی طرف سے انہیں انصاف ملے گا۔ انہوں نے کہا کہ 11؍اگست کے واقعات کے سلسلہ میں ان کی قانونی لڑائی صرف ان کے خلا ف ہے جنہوں نے علاقے میں تشدد برپا کیا اور ان کے گھر کو نشانہ بنایا۔ جہاں تک بے قصور نوجوان جو بڑی تعدا د میں گرفتار کئے گئے ہیں ان کی رہائی کے سلسلہ میں وکلاء کی جو کوششیں جاری ہیں ان کا وہ بھر پور تعاون کر رہے ہیں اور یہ یقینی بنائیں گے کہ تمام بے قصور نوجوان جتنی جلدی ہو سکے ضمانت پر باہر آئیں۔

انہوں نے کہا کہ شہر کے نامی وکلاء کی کوششوں سے اب تک اس معاملہ میں گرفتار چند نوجوانوں کی رہائی ہو چکی ہے، توقع ہے کہ آنے والے دنوں میں مزید نوجوانوں کی رہائی ہو گی۔ تشدد کے دوران سرکاری، عوامی اور نجی املاک کو جو نقصان پہنچا اس کا تخمینہ لگانے کے لئے حکومت کی طرف سے قائم کلیمس کمیشن کے بارے میں سرینواس مورتی نے کہا کہ جسٹس کیمپنا کی قیادت میں کمیشن نے اپنا کام شروع کردیا ہے۔

افسوس کی بات ہے کہ اب تک اس کمیشن کے سامنے نقصان کی صرف تین ہی شکایتیں درج کروائی گئی ہیں۔ سرینواس نے علاقے میں ان لوگوں سے جن کے املاک اور گاڑیوں وغیرہ کو تشدد کے دوران نقصان پہنچا ہے گزارش کی ہے کہ وہ اس کلیمس کمیشن کے سامنے تفصیلات پیش کریں تاکہ ان کے نقصان کے عوض حکومت کی طرف سے مناسب معاوضہ مل سکے۔

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ میں خواتین کی فلاح پر خصوصی  تو جہ ، ترقیاتی کاموں کے لئے فنڈ فراہم کرنے کی کوشش: و زیر اعلیٰ ایس ایڈی یورپا 

و زیر اعلیٰ ایس ایڈی یورپا نے کہا ہے کہ 8 ؍مارچ کو عالمی یوم خواتین کے موقع پر ریاستی اسمبلی میں جو سالانہ بجٹ پیش ہونے جا رہا ہے اس میں خواتین کی فلاح و بہبود پر خصوصی توجہ دی جائے گیا۔ 

2؍مارچ سے دوبارہ بس ہڑتال کا اندیشہ،ٹرانسپورٹ ملازمین یونین کی طرف سے  بنگلورو کے فریڈم پارک میں احتجاج

کرناٹک  میں ایک بار پھر اس ہڑتال شروع ہونے کے آثار کافی نمایاں نظر آرہے ہیں ۔ کے ایس آر ٹی کی اور پی ایم ٹی کی ملازمین نے حکومت کی طرف سے ان کی مانگوں پر اب تک کوئی کارروائی نہ کئے جانے پر برہمی کا اظہار کر تے ہوئے ایک بار پھر احتجاجی  تحریک شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پریش میستا کی موت میں ہو سکتا ہے بی جے پی کا ہاتھ۔ ڈی کے شیو کمار نے ظاہر کیا شبہ

اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کانگریس کے ریاستی صدر ڈی کے شیو کمار نے شبہ ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ ہوناور میں پریش میستا کی جو مشتبہ موت واقع ہوئی تھی اس کے پیچھے بی جے پی والوں کا ہی ہاتھ ہوسکتا ہے، جس کا ثبوت یہ ہے کہ  وہ لوگ اس معاملے پر پردہ ڈالنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

شکایت کنندہ کامکمل نام اور پتہ کی تصدیق کے بعد ہی سرکاری ملازمین کے خلاف جانچ کارروائی

ریاستی حکومت نے سرکاری ملازمین کےخلاف موصول ہونے والی گمنام و انجان شکایتوں پرجانچ  کارروائی نہ کرنے کا فیصلہ لیا ہے۔ سرکاری ملازمین کے خلاف گمنام وانجان شکایات کرتےہوئے قانون کاغلط استعمال کئے جانےکی وجہ سے یہ فیصلہ لئے جانےکا ریاستی حکومت نے بتایا ہے۔