بنگلورو کے کے آر مارکیٹ اور خلاصی پالیم مارکیٹ کو سیل ڈاؤن کئے جانے سے ترکاری اور گل فروشوں پر راست اثر،کسان اور کاشتکار کافی پریشان

Source: S.O. News Service | Published on 27th June 2020, 6:43 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،27؍جون(ایس او نیوز) بنگلورو شہر کے اہم اور سب سے بڑے مارکیٹ کو سیل ڈاؤن کئے جانے کے بعد ترکاری اور گل فروشوں پر اسکا راست اثر پڑا ہے-

اطلاع کے مطابق شہر میں کورونا وائرس کے بڑھتے معا ملات کی وجہ سے کے آر مارکیٹ،خلاصی پالیم مارکیٹ سیل ڈاؤن کئے جانے سے کسان ترکاری،پھل اور پھولوں کو مارکیٹ لے جانے کترا رہے ہیں،اور مضافاتی روڈ کے قریب فٹ پاتھ تاجروں اور درمیانی افراد کو ہی کم قیمت پر فروخت کر نے کے لئے مجبور دکھائی دے رہے ہیں -

بتا یا جا تا ہے کہ روزانہ رام نگرم، بڑدی،کنکا پور،دیونہلی، کولار،چکبا لا پور، دابس پیٹ،ٹمکورو دیگر علاقوں سے باغبانی فصلیں مارکیٹ میں فروخت کے لئے لائی جا تی تھیں - لیکن مارکیٹ سیل ڈاؤن ہو نے سے درمیان میں ہی دلالوں کے ذریعہ فروخت کی جارہی ہیں -

بتا یا جا تا ہے کہ کسانوں کو ان کی مصنوعات کی مناسب قیمت نہیں مل رہی ہے-فی الوقت ٹماٹر فی کلو 20 روپئے، پیاز20 روپئے، مرچ 30، بیگن30 روپئے،گاجر35روپئے، بینس 40 روپئے، ککڑی 20 روپیوں میں فروخت ہو رہی ہیں جس سے کسانوں کو نقصان ہو رہا ہے -

خلاصی پالیم مارکیٹ کے ایک ہو ل سیل تاجر گریش نے بتا یا کہ بنگلور کے اطراف واکناف علاقوں میں بہتر بارش کی وجہ سے کثیر مقدار میں ترکاری،پھل اور پھو ل بنگلور لائے جارہے ہیں لیکن شہر میں کورونا وائرس کے معا ملات میں اضافہ کی وجہ سے کسان بنگلور آنے سے کترا رہے ہیں -

انہوں نے کہا کہ اگر صورتحال ایسی ہی رہی تو شہرمیں ترکاری کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا- بڑدی کے ایک کسان رامنا نے بتا یا کہ پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ کی وجہ سے دیہی علاقوں سے ترکاری کو شہر لے جانے کے لئے آٹو رکشا دوگناکرایہ طلب کر رہے ہیں -

پیاز- آلو تاجراں تنظیم کے ایک عہدیدار ادئے شنکر نے بتا یا کہ بیرونی ریاستوں سے پیاز اور آلو درآمد نہیں کئے جارہے ہیں کیونکہ ریاست میں ہی اگا کر فروخت کئے جا رہے ہیں -انہوں نے بتا یا کہ حکومت نے داسنا پورہ میں فروخت کر نے کی اجازت دی ہے لیکن کورونا وائرس کی وجہ سے مشکلات کا سامنا ہے-

ایک نظر اس پر بھی

کورونا سے متاثر ہو کرمرنے والوں کی تدفین میں رکاوٹ درست نہیں، لاک ڈاؤن ہو یا نہ ہو اپنے آپ احتیاط برت کر وائرس سے بچنے کی کوشش کریں: ضمیر احمد خان

شہر بنگلورو میں کورونا وائرس کے کیسوں کی تعداد میں جس طرح کا بے تحاشہ اضافہ ہو رہا ہے اسی رفتار سے اس مہلک وباء کی زد میں آکر مرنے والوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہو تا جارہا ہے۔ اس وباء کا شکار ہو کر مرنے والے افراد کی تدفین اور دیگر آخری رسومات کے لئے عالمی صحت تنظیم کی طرف سے جو ...

کوروناروک تھام اورکووڈطبی آلات کی خریداری میں 2,200کروڑروپے کا غبن

عالمی وباکوروناوائر س کی روک تھام اورمتاثرین کے علاج ومعالجہ کے لیے درکارطبی آلات کی خریداری میں 2,200کروڑروپے کابڑامالی گھوٹالہ ہواہے۔یہ گمبھیرالزام اپوزیشن لیڈروسابق وزیراعلیٰ سدارامیا نے عائدکیاہے۔

کوروناکاقہر جاری،کرناٹک میں ایک ہی دن 21اموات، 24گھنٹوں کے دوران بنگلورومیں 994سمیت جملہ 1694کووڈکاشکار

ریاست میں آج ایک ہی دن کوروناوائرس کی زدمیں آکر21مریض ہلاک ہوگئے جبکہ 1694 کووڈمعاملات کا پتہ چلاہے۔ کرناٹک میں بھی کوروناوائر س کاخوفناک پھیلاؤ رکنے اورتھمنے کا نام نہیں لے رہاہے،ہرگزرتے لمحے اوردن کے ساتھ کوروناوائرس کے نئے معاملات میں اضافہ ہی ہوتاجارہاہے،