بی جے پی ایم پی تیجسوی سوریہ اور دیگر قائدین کو سوشل میڈیا ٹرولنگ کا سامنا؛ سیلاب کے دوران دوسہ سے لطف اندوز ہونے کا الزام

Source: S.O. News Service | Published on 8th September 2022, 11:33 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،8؍ستمبر (ایس او نیوز؍ پی ٹی آئی ) بنگلورو ساؤتھ سے لوک سبھا رکن  اسمبلی تیجسوی سور یہ پر سوشل میڈ یا صارفین کے ایک گوشہ نے تنقید کر تے ہوۓ الزام عائد کیا کہ ایک ایسے وقت جب شہر کے کئی حصے موسلا دھار بارش اور سیلاب کی زد میں تھے، وہ دوسہ سے لطف اندوز ہوتے ہوۓ اپنے حلقہ کی ایک ہوٹل کی تشہیر کر رہے تھے ۔

40 سیکنڈ کے وائرل ویڈیو میں بی جے پی یووا مورچہ کے قومی صدر کو پدمنا بھا نگر کی ہوٹل میں’’ بٹر مسالہ دوسہ اور’’اُپما‘‘  کھاتے اور اس کے معیار اور ذائقہ کی ستائش کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔ انہوں نے عوام سے وہاں آ کر غذا کا ذائقہ لینے کی سفارش کی ۔اس بات کا کوئی تذکرہ نہیں کہ یہ ویڈیو کلیب  کا ہے۔

تاہم کانگریس کی قومی سوشل میڈ یا رابطہ ار لا و نیا بلال نے کہا کہ ویڈ یو5 رستمبر کا بتا یا جا تا ہے جب شہر کے بیشتر سیلاب کی زد میں تھے۔ بلال نے ٹوئٹ کیا کہ 5 ستمبر کا ویڈیو۔ جب بنگلورو ڈوب رہا تھا تیجسوی سور یہ ناشتہ کا لطف دے رہے تھے ۔ کیا انہوں نے سیلاب سے متاثرہ ایک بھی علاقہ کا دورہ کیا ؟“ ایک او رٹوئٹ میں انہوں نے کہا کہ کیا کسی نے تیجسوی سور یہ اور ان کے رفقاء کا کوئی بیان سنا؟ کیا وہ بنگلورو میں ہیں؟ کئی ٹوئٹر صارفین بشمول اداکارہ و سابق کانگریس ایم پی رامیا نے سور یہ  کا ویڈیو آن لائن شیئر کیا۔

ایک ٹوئٹر صارف نے کہا کہ فوڈ بلاگر تیجسو   ی سوریہ اگر آپ دیگر ہوٹلوں کی بھی تشہیر کر نا چاہتے ہیں تو او آر آر پر کافی پر ملاقات کرتے  ہیں ۔ بنگلورو ساؤتھ کے آپ کے راۓ دہندے وہاں آپ کا انتظار کر رہے ہیں ۔‘آپ لیڈر پرتھوی ریڈی نے کہا کہ جب روم جل رہا تھا ، نیرو بانسری بجارہا تھا۔ جب بنگلورو ڈوب گیا تیجسوی سور  یہ میں نے دوسہ کھا یا اور ان تمام لوگوں کا مذاق اڑایا جنہوں نے انہیں ووٹ دے کر اقتدار دیا ۔ ‘‘

سور  یہ  کونشانہ بناتے ہوۓ ایک صارف نے کہا کہ ایم پی کا نام : تیجسوی سور یہ۔ حلقہ : بنگلوروساؤتھ ۔ تین دنوں کے دوران کجریوال پر 240 ٹوئٹس ۔ راہول گاندھی پر 17 ٹوئٹس ۔ اندرا گاندھی اور نہرو پر 55 ٹوئٹس ۔ مودی کی تعریف میں 137 ٹوئٹس کیے۔ بنگلورو کے سیلاب پر صفر ٹوئٹس ۔‘ کچھ نے ” سور یہ گمشدہ بھی ٹوئٹ کیا۔ بلا وجہ وہ کانگریس زیراقتدار ریاستوں میں جائیں گے مگر اب جبکہ ان کی اپنی ریاست بدترین مرحلوں سے گزررہی ہے وہ لا پتا ہیں ۔

بیشتر ٹوئٹس میں اگر چیکہ سور یہ  کونشانہ بنایا مگر چندصارفین نے سوال کیا کہ بنگلورو کے دیگر دو ایم پیز سدانند گوڑا ( نارتھ ) اور پی سی موہن (سنٹرل)  جن کا تعلق بھی بی جے پی سے ہے نے بنگلور میں بارش کے قہر سے متعلق کوئی ٹوئٹ کیوں نہیں کیا؟“ دیگر کئی ٹوئٹس میں شہر کے ارکان اسمبلی اور سیاسی طبقہ کو اس تباہی کے لیے ذمہ دار ٹھہرایا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں بی جے پی حکومت کے دوران ہندوؤں کا سب سے زیادہ قتل ہوا، یہی ان کا اصلی چہرہ ہے: سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا

کرناٹک کے سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس لیڈر ایس سدارامیا نے منگل کے روز ریاست میں برسراقتدار بی جے پی پر زوردار حملہ کیا۔ انھوں نے بی جے پی پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں بی جے پی حکومت میں سب سے زیادہ ہندوؤں کا قتل کیا گیا۔ انھوں نے کہا کہ ہمارے دور میں نہ صرف ہندو، ...

بی جے پی کے ریاستی صدر نلین کمار کٹیل کی بھٹکل آمد؛ آنے والے انتخابات کو لے کر کٹیل نے کہا؛ ساورکر اور ٹیپو نظریات کے درمیان ہوگا الیکشن

اس بار ریاستی انتخابات کانگریس اور بی جے پی کے بجائے ساورکر اور ٹیپو  نظریات کے درمیان ہوں گے۔ یہ بات  بی جے پی ریاستی یونٹ کے صدر نلین کمار کٹیل نے کہی۔ شرالی میں منعقدہ بی جے پی پروگرام میں شریک ہوتے ہوئے  کٹیل نے سوال کیا کہ آپ کو محب وطن ساورکرچاہئے  یا جنونی ٹیپو  چاہئے ...

 اڈانی کمپنی کے خُرد بُرد معاملہ پر کانگریس کا بنگلورو میں احتجاج

ریاست کرناٹک کے دارلحکومت بنگلورو کے میسور بینک سرکل پر کانگریس کی جانب سے اڈانی کمپنی سے جڑے معاملات پراحتتجاج کیاگیا جس میں پارٹی کے رہنما و کارکنان شریک تھے۔ احتجاج کے دوران کانگریس کے رہنماؤں نے کہا کہ راہل گاندھی نے پہلے ہی اس معاملہ سے متعلق پیشن گوئی کی تھی۔

منگلورو: نیشنل ایجوکیشن پالیسی 'ہندوتوا راشٹرا' بنانے کا ٹوُل کِٹ ہے؛ ماہر تعلیم ڈاکٹر نرنجنارادھیا 

کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا کی آل انڈیا یوتھ فیڈریشن (اے آئی وائی ایف) جنوبی کینرا و اڈپی، سمدرشی ویدیکے منگلورو، کرناٹکا تھیولوجیکل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ منگلورو کے اشتراک سے 'نیشنل ایجوکیشن پالیسی (این ای پی) اور اسکولی تعلیم' کے عنوان پر شہر میں منعقدہ  سیمینار میں اپنے خیالات کا ...

پتور: آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کو شکست دینے کے لئے متحد ہوجائیں - کانگریس پارٹی کارکنان سے لیڈروں کی اپیل 

کانگریس پارٹی لیڈران نے  پتور کے نیلیاڈی سے  ملناڈ اور ساحلی علاقے کے لئے اپنی 'پرجا دھونی یاترا' کا دوسرا مرحلہ شروع کرتے ہوئے اپنی کارکنان کو آواز دی کہ وہ آپسی اختلافات بھول کر بی جے پی کی  "بد عنوان، غیر فعال، غیر مخلص، غیر موثر اور عوام سے دور" حکومت کو ہٹانے کے لئے متحد ...