بریکنگ نیوز

ووٹر ڈاٹا چوری معاملہ: 4 بی بی ایم پی افسروں سمیت اب تک11افراد گرفتار

Source: S.O. News Service | Published on 28th November 2022, 12:33 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 28؍نومبر(ایس او  نیوز)ووٹرلسٹوں میں مبینہ ہیراپھیری،چھیڑ چھاڑ اور چیلومے نامی ادارے کے کارکنوں کو سرکاری عہدیداروں کا فرضی شناختی کارڈ دینے کے معاملے کی سختی سے جانچ کرتے ہوئے شہر کی پولیس نے اب تک اس کیس میں 11 افراد کو گرفتار کیا ہے - تازہ گرفتاریوں میں بی بی ایم پی کے4 سینئر افسراور ایک ایجنٹ شامل ہے -لیکن ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکاہے کہ ووٹروں کے ڈاٹاچوری میں کون لوگ شامل ہیں؟کیا اس طرف بڑھنے کی کوشش پولیس کررہی ہے؟اگراس کے تاربی جے پی حکومت سے جاملتے ہیں تو کیا اس کے خلاف بھی کارروائی ہوسکتی ہے؟ اس معاملہ کی جانچ میں لگی شہر کی پولیس نے کل بی بی ایم پی کے چار افسروں کو اس الزام میں گرفتار کر لیا کہ ان کی طرف سے چیلومے کا کارکنوں کو شناختی کارڈ جاری کئے جانے کے واضح ثبوت پولیس کے ہاتھ لگے ہیں - گرفتار شدہ افسروں میں شیواجی نگر اسمبلی حلقہ کے ریٹرننگ آفیسر سہیل احمد، چک پیٹ اسمبلی حلقہ کے ریٹرننگ آفیسروی بی بھیما شنکر، مہادیو پورہ کے ریوینیو آفیسر کے چندرا شیکھر، اور راجہ راجیشوری نگر اسمبلی حلقہ کے ریوینیو آفیسر مہیش شامل ہیں -ان چاروں آفیسروں کو پہلے پوچھ گچھ کیلئے شہر کے السو ر گیٹ پولیس تھانے طلب کیا گیا اور پھر ان کو گرفتار کر لیا گیا- ان ریٹرننگ آفیسروں اور چیلومے کے درمیان رابطہ کے طور پر کام کرنے والے ایک ایجنٹ کو بھی پولیس نے گرفتار کر لیا ہے-ابتدائی جانچ کے ذریعے یہ سامنے آیا ہے کہ ان آفیسروں کو چیلومے کے ذریعے رشوت کے طور پر بھاری رقم دی گئی ہے-

پیسہ کہاں سے آیا؟: پولیس نے چیلومے کے ذریعے مقرر کئے گئے ہزاروں کارکنوں کی تنخواہوں کیلئے رقم کے ذرائع کی جانچ شروع کر دی ہے - بتایا جاتا ہے کہ اس ادارے کے پیچھے کن سیاستدانوں کا ہاتھ تھا ان کے بارے میں بھی جانچ کی جا رہی ہے - چیلومے کی طرف سے جو ووٹر ڈاٹا غیر قانونی طریقے سے یکجا کیا گیا اس کے استعمال کیلئے اسے کس کس کو فروخت کیا گیا ہے اس کی بھی جانچ کافی تیزی سے کی جا رہی ہے - چیلومے کے ٹھکانوں پر چھاپے مار کر جو کمپیوٹرس اور لیپ ٹاپ وغیرہ برآمد کرلئے گئے ان تمام کی جانچ کمپیوٹر کے ماہرین کی مدد سے کی جا رہی ہے -

الیکشن کمیشن کی سخت نگرانی: پولیس کی طرف سے اس معاملہ میں جانچ کافی سختی اس لئے ہو رہی ہے کہ اس جانچ کی نگرانی کیلئے مرکزی الیکشن کمیشن کی طرف سے اپنے سینئر آفسروں کو اس کام کیلئے مقرر کیا ہے اور پولیس سمیت دیگر ایجنسیاں جو اس معاملے کی تحقیق سے جڑی ہوئی ہیں ان سے کہا گیا ہے کہ وہ جانچ کی پیشرفت کے ہر مرحلہ سے ا ن افسروں کو باخبر رکھیں -

بڑے سیاسی رہنما شامل: جانچ کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ شہر کے متعدد بڑے سیاستدا ن جو کسی ایک مخصوص سیاسی جماعت سے وابستہ ہیں انہوں نے اپنے اپنے اسمبلی حلقوں میں ووٹروں کے ڈاٹا کی چیلومے کے ذریعے جانچ کروائی ہے اور اس سے ووٹر لسٹوں میں مبینہ چھیڑ چھاڑ کی خدمت بھی حاصل کی ہے - ان تمام زاویوں کی پولیس جانچ کرنے میں لگی ہوئی ہے-

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹکا اردو چلڈرنس اکادمی کا یادگار مشاعرہ

سہ روزہ جشن اطفال کی اگلی کڑی کل ہند مشاعرہ ۲۶؍جنوری ۲۰۲۳ء؁ کی شب میں منعقد ہوا۔ لطف کی بات یہ ہوئی کہ مشاعرے کے باضابطہ آغاز سے پہلے ایک افتتاحی نشست ہوئی جس میں پروفیسر ارتضیٰ کریم، پروفیسر اعجاز علی ارشد، پروفیسر دبیر احمد، پروفیسر مشتاق عالم قادری، ڈاکٹر مشتاق حیدر، ...

مینگلور: منشیات کے استعمال کے کیس میں میڈیکل کالج سے وابستہ 13 ملزم کو عدالت سے ملی ضمانت

میڈیکل کالجوں سے وابستہ جن ڈاکٹروں اور طلبہ کو سٹی پولیس نے گانجہ نوشی / فروشی کے الزام میں گرفتار کیا تھا ان میں سے 13 ملزمین کو پرنسپل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنس جج اور این ڈی پی ایس ایکٹ میں گرفتار کیے گئے ملزمین کے لئے خصوصی جج راگھویندرا ایم جوشی نے ضمانت پر رہا کرنے کا حکم سنایا  ہے۔

منڈیا میں گو بیک آراشوک: بی جے پی کارکنان کی برہمی میں ہورہا ہے اضافہ

ریاست کرناٹک میں اسمبلی انتخابات کے دن جیسے جیسے قریب آرہےہیں، بی جے پی کے اندر ہی کارکنان میں بی جے کے ارکان اسمبلی اور وزراء کے خلاف ناراضگی میں اضافہ دیکھا جارہا ہے۔ تازہ واردات منڈیا میں پیش آئی جہاں کابینی وزیر آراشوک کے خلاف گو بیک کی تحریریں دیکھی گئی ہیں۔ میڈیا میں ...

کرناٹک کے وزیراعلیٰ بومئی نے مسلمانوں کے تعلق سے کہا؛ بی جے پی کے اتنے برے دن نہیں کہ مسلمانوں کی خوشامد کرے

وزیر اعلیٰ بسواراج بومئی نے مسلمانوں کے تئیں اپنے تعصب کا ایک بار پھر کھل کر اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی کو مسلمانوں کی خوشامد کرنے کی کوئی ضرورت نہیں - مسلمانوں کو سرپر بٹھا کر ناچنے کا کام کانگریس کر رہی ہے وہ چاہے تو اس کام کو جاری رکھے، بی جے پی یہ سب کرنے والی نہیں -