بیلتنگڈی : ریاست میں لگی ہے غیر اعلان شدہ ایمرجنسی ۔ کانگریسی لیڈر وسنت بنگیرا کا الزام

Source: S.O. News Service | Published on 25th September 2021, 1:23 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بیلتنگڈی، 25؍ستمبر (ایس او نیوز) مندروں کو منہدم کرنے کی ریاستی  پالیسی کے خلاف احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے سابق ایم ایل اے اور کانگریسی لیڈر وسنت بنگیرا نے الزام لگایا کہ حکومت کی طرف سے  ریاست میں غیر معلنہ ایمرجنسی نافذ کی گئی ہے جس کے چلتے احتجاجی مظاہرے منعقد کرنے میں رکاوٹ پیدا کی جارہی ہے ۔

وسنت بنگیرا نے کہا کہ عوام کی ناراضی سے گھبرائی ہوئی حکومت کی طرف سے مظاہرے کے لئے مائک استعمال کرنے کی اجازت دینے سے انکار کردیا ۔ لیکن اس عوام دشمن حکومت کے خلاف مسلسل احتجاج جاری رہے گا ۔ انہوں نے کہا کہ اس سے قبل لائیل وینکٹرمنا مندر اور کنیاڈی شری رام کشیترا کے معاملہ میں بھی بی جے پی والوں نے مخالفانہ سیاست کی تھی ۔ اس وقت میں نے ہی ڈٹ کر مقابلہ کیا تھا اور ان مندروں کو بچایا تھا ۔ اب بھی تعلقہ کے کسی بھی مندر کو چھونے کی کوشش کی جائے گی تو اسے روکنے کے لئے  میں آگے بڑھوں گا۔

بلاک کانگریس صدر رنجن جی گوڈا اور شئیلیش کمار کی قیادت میں منعقدہ اس مظاہرے میں کانگریسی لیڈران اور کارکنان نے لائیل وینکٹرمنا مندر سے سنتے کٹَے آئیپا گوڈی تک جلوس نکالا جس میں حکومت کے خلاف نعرے بازی کی گئی ۔ مظاہرین نے کانگریس پارٹی کے جھنڈوں کے ساتھ زعفرانی جھنڈے بھی اٹھا رکھے تھے ۔ اس موقع پر سابق وزیر گنگا دھر گوڈا نے بھی مظاہرین سے خطاب کیا ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل کے اعلیٰ افسران کے خلاف ہتک ذات مقدمہ درج ہونے کا معاملہ : سرکاری ملازمین سنگھا کی کڑی مذمت

18اکتوبر کو بھٹکل میونسپالٹی کے دکانوں کی نیلامی میں شریک ہوئے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر، تحصیلدار اور چیف آفیسر کے خلاف بغیر کسی وجہ کے ، غیرقانونی طورپر ہتک ذات کا معاملہ درج کئےجانے کی کرناٹکا ملازمین سنگھ بھٹکل شاخ نے مذمت کی ہے۔

کاروار: طلبا اور روزگار وں کےلئے تعلقہ ، ضلعی ، ریاستی اور قومی سطح کا تقریری مقابلہ : 18سے 29سال کی عمر والے توجہ دیں؛ قومی سطح پر اول آنے پر دولاکھ روپیہ انعام

یوتھ اینڈ اسپورٹس وزارت کے تعاون سے نہرو یوا کیندر کی جانب سے تعلقہ ، ضلع، ریاستی اور قومی سطح پر ہندی اور انگریزی زبانوں میں  تقریری مقابلوں کا انعقاد کئے جانے نہرو یوا کیندر کے ذمہ داروں نے پریس ریلیز کے ذریعے جانکاری دی ہے۔

بھٹکل جماعت اسلامی ہند اور سدبھاؤنا منچ بھٹکل کے اشتراک سے’حضرت محمد  ﷺ مثالی رہنما‘ کے عنوان پر پروگرام کا انعقاد

آخری نبی حضرت محمد ﷺ کی تعلیمات کو ریاستی عوام کے سامنے پیش کرنےکی غرض وغایت لے کر جماعت اسلامی ہند کرناٹکا کی طرف سے 17سے 26اکتوبر تک منائی جارہی ’سیرتؐ مہم ‘ کی مناسبت سے بھٹکل کے دعوت سنٹر میں 26اکتوبر بروزمنگل کو  منعقدہ سیرت پروگرام میں مقررین نے اپنے خیالات کا اظہار ...

بھٹکل ہیبلے گرام پنچایت انتظامیہ پر رشوت خوری کا الزام : خصوصی میٹنگ میں الزام ثابت کرنے کا مطالبہ

تعلقہ کے ہیبلے گرام پنچایت کے چند ممبران نے گرام پنچایت انتظامیہ  پر رشوت خوری کا الزام عائد کئےجانےکو لےکر ہیبلے پنچایت ہال میں پنچایت ممبران کی  خصوصی میٹنگ منعقد ہوئی ۔

گلبرگہ: پولیس میں بھرتی کے امتحانات میں بد عنوانی و نقل   نویسی کرنے کے الزام میں 9امیدوار گرفتار

 محکمہ پولیس میں بھرتی سے متعلق منعقد کئے گئے امتحانات میں مائیکرو چپ اور بلیو ٹوتھ آلات کا استعمال کرکے بدعنوانی و نقل کرنے والے 9امیدواروں کو پولیس نے گرفتار کرلیا ہے۔یہ افراد اتوار کے دن محکمہ پولیس میں سیول پولیس کانسٹیبل کی جائیدادوں پر بھرتی کے لئے منعقد کئے جانے والے ...

گلبرگہ میں جہیز ہراسانی سے متاثرہ خاتون کی آگ لگا کر دو بچوں کے ساتھ خودکشی

ایک عورت نے پیر کے دن  پنچ شیل نگر، جیورگی روڈ گلبرگہ میں اپنے مکان میں پنے آپ کو اور اپنے بچوں کو آگ لگادی جس کے نتیجہ میں یہ عورت اوراس کی ایک لڑکی جل کر ہلاک ہوگئے جب کہ اس عورت کا تین سالہ بچہ شدید جھلس گیا  تھا اور اسے ہسپتال میں شریک کروادیا گیا تھا  لیکن آج وہ بھی اپنے ...

بھٹکل : کرناٹک میں پیر سے پہلی تا پانچویں جماعت کے کلاسوں کا ہوا آغاز؛ ریاست میں 90 فیصد اور اُترکنڑا میں 93 فیصد طلبہ کی حاضری؛ زیادہ تر والدین میں خوشی کی لہر

ریاست کرناٹک میں کووڈ لاک ڈاون کی وجہ سے  20  ماہ سے بند  پرائمری اسکولس پیر سے دوبارہ کھل گئے جس کے ساتھ ہی اکثر والدین میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے۔ ریاست میں    پہلے دن  90 فیصد طلبہ حاضر رہے،اسی طرح ضلع اُترکنڑا میں  طلبہ کی حاضری 93.26 فیصددرج کی گئی۔ 

منگلورو پولس فائرنگ؛ ریاستی حکومت نے پولس کو دی کلین چٹ، کہا؛ کسی بھی پولس اہلکار سے غلطی نہیں ہوئی

ریاست کی برسر اقتدار بی جے پی حکومت نے ہائی کورٹ کو بتایا ہے کہ منگلورو میں شہریت قانون (سی اے اے ،این آر سی) مخالف ترمیمی قانون کے احتجاج کو روکنے کےلئےپولس اہلکاروں کی طرف سے کی گئی فائرنگ میں پولس   سے  کوئی غلطی نہیں ہوئی ہے۔