چامراج پیٹ عیدگاہ میدان‘ بنگلورو بلدیہ کی جائیداد نہیں ہے،چیف کمشنر بی بی ایم پی تشار کا اعتراف

Source: S.O. News Service | Published on 23rd June 2022, 11:33 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،23؍جون (ایس او نیوز؍ایجنسی)  بنگلورو عیدگاہ میدان تنازعہ نے چہارشنبہ کے دن نیا موڑ لے لیا۔ بلدیہ (بروہت بنگلورو مہانگر پالیکے/ بی بی ایم پی) نے اپنے موقف سے یوٹرن لے کر اعلان کردیا کہ عیدگاہ میدان اس کی جائیداد نہیں ہے۔ چیف کمشنر بی بی ایم پی تشار گریناتھ نے چہارشنبہ کے دن کہا کہ چامراج پیٹ میں واقع عیدگاہ میدان بی بی ایم پی کا نہیں ہے۔

 انہوں نے یہ بھی کہا کہ بی بی ایم پی کو کوئی اختیار حاصل نہیں ہے کہ وہ اس میدان پر یوم ِ آزادی منانے کی اجازت دے۔ گریناتھ نے واضح کیا کہ وقف بورڈ نے سپریم کورٹ کے احکام بی بی ایم پی کے علم میں لائے کہ یہ میدان بی بی ایم پی کی ملکیت نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ شہری حدود کا جس وقت سروے کیا گیا تھا اس وقت عیدگاہ میدان کی ملکیت کا دعویٰ کرنے کے لئے کوئی بھی آگے نہیں آیا تھا لہٰذا یہ میدان بی بی ایم پی کے قبضہ میں آگیا تھا۔ وقف بورڈ‘ ملکیت کے سلسلہ میں درخواست دے سکتا ہے۔ کاغذات کی جانچ کے بعد ضروری کارروائی کی جائے گی۔

بی بی ایم پی کے چیف کمشنر کے بیان کا خیرمقدم کرتے ہوئے صدرنشین کرناٹک اسٹیٹ وقف بورڈ مولانا شفیع سعدی نے کہا کہ بورڈ‘ ملکیت کا دعویٰ کرنے کے لئے درخواست پہلے ہی داخل کرچکا ہے۔ ہم بی بی ایم پی سے اجازت ملنے کے بعد عیدگاہ میدان کے اطراف کمپاؤنڈ وال تعمیر کرادیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ میدان میں بچوں کے کھیلنے یا یوم آزادی /  یوم جمہوریہ تقاریب منانے پر کوئی اعتراض نہیں ہے۔ ہندو کارکنوں کو ملکیت پر اختلاف ہے۔ وہ چاہتے ہیں کہ بی بی ایم پی اس میدان کو اپنے کنٹرول میں لے لے۔

انہوں نے یوم آزادی کے علاوہ ہندو تہوار اس میدان پر منانے کی اجازت مانگی تھی۔ مسئلہ کی حساس نوعیت کے مدنظر چیف منسٹر کرناٹک بسواراج بومئی نے کہا کہ وہ اس سلسلہ میں بی بی ایم پی کمشنر تشار گریناتھ سے بات کریں گے اور تفصیلات طلب کریں۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلور میں کانگریس لیڈر ضمیراحمد خان کے مکان اور دفتر پر اے سی بی کے دھاوے؛ کانگریس نے کہا؛ سب انسپکٹرس بھرتی اسکیم سے عوام کی توجہ ہٹانے کی کوشش

کرناٹک اینٹی کرپشن بیوروکے عہدیداروں نے منگل کے دن غیرمتناسب اثاثوں کی انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ(ای ڈی) رپورٹ پر کانگریس رکن اسمبلی بی زیڈ ضمیر احمد خان کے 5 مقامات پر بہ یک وقت دھاوے کئے۔

بھٹکل: ساحلی کرناٹکا کے علاوہ دیگر 6 اضلاع میں بھی موسلا دھار بارش  -طالبہ سمیت 2 ہلاک ۔ ندیاں پار کر گئیں خطرے کا نشان ؛ کاروار کے قریب انموڈ گھاٹ پر چٹان کھسک گئی

ریاست کے ساحلی علاقہ کے شمالی کینرا، اُڈپی اور  جنوبی کینرا کے علاوہ کوڈاگو، چکمگلورو اور شیموگہ جیسے اضلاع  زبردست بارش کی زد میں آ گئے ہیں ۔  جس کے نتیجے میں کئی علاقوں سے نقصانات کی خبریں بھی موصول ہورہی ہیں، جبکہ  بارش کے نتیجے میں اب تک  دو لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے۔

کولار میں شانِ رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی بے حرمتی کے واقعے پر بھٹکل تنظیم کی سخت مذمت؛ خاطیوں کے خلاف سخت کاروائی کا مطالبہ

کولار میں  جمعہ کے روز اُدے پور واقعے  کو لے کر منعقدہ  احتجاج  میں  ہندو تنظیموں کی طرف سے  پھر  ایک بار شان رسالتؐ میں گستاخی اور قرآن شریف کی کھلے عام بے حرمتی کا معاملہ سامنے آنے پر مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل نے سخت تشویش کا اظہار کیا ہے اور نوپور شرما  کی حمایت کرتے ہوئے  کی ...